خدمہ فاونڈیشن ریاض کا سالانہ اجلاس اور تفریحی پروگرام

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 1st May 2017, 12:37 PM | خلیجی خبریں |

ریاض یکم مئی (ایس او نیوز)ریاض سعودی عربیہ سے موصولہ ایک رپورٹ کے مطابق خدمہ فاونڈیشن کی ریاض (سعودی عربیہ) یونٹ کا چوتھا سالانہ اجلاس و تفریحی پروگرام 4؍مئی کو Al Rushd Isterha,ریاض کےExit 8,میں منعقد ہوگا۔ جو شب ۸ بجے سے صبح ۳ بجے تک چلے گا۔

بتایا گیا ہے کہ اس پروگرام کے دوران بچوں ، مر دا ور خواتین کے لئے بہت سارے انڈور اور آؤٹ ڈور گیمس ہونگے۔اس کے علاوہ لکّی ڈرا اور بمپر ڈرا بھی ہونگے جو حاضرین کی دلچسپی کا باعث ہونگے۔اس موقع پر بھٹکل کیٹررس کی طرف سے تیار کیے گئے لذیذکھانوں سے حاضرین کی مہمان نوازی کی جائے گی۔

خدمہ فاونڈیشن کے بارے میں کہا جاتا ہے کہ یہ ایک غیر سرکاری ادارہ ہے جومسلمانوں کے پچھڑے ہوئے طبقے اور دیگر طبقات کے ضرورتمندوں کی فلاح و بہبودکے لئے قائم کیا گیا ہے۔اس کا ہیڈکوارٹر ریاض سعودی عربیہ میں ہے اور اس کی شاخیں دمام (سعودی) کے علاوہ ہندوستان میں موجود ہیں۔نوجوان نسل کی تعلیم وتربیت، طبی امداد، مکانات کی تعمیر،قدرتی آفات اور ہنگامی صورتحال میں ریلیف ورک،حاجتمندوں کے لئے مکانات کی تعمیر جیسے معاملات میں خدمہ فاونڈیشن کی طرف سے اپنی خدمات پیش کی جاتی ہیں۔اس کے علاوہ خدمہ فاونڈیشن کی جانب عوامی بیداری مہمات اور طبی کیمپ کا بھی انعقاد کیا جاتا ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

شارجہ میں ابناء علی گڑھ مسلم یونیورسٹی کی خوبصورت تقریب؛ یونیورسٹی میں میڈیکل تعلیم صرف 60 ہزار میں ممکن!

علی گڈھ مسلم یونیورسٹی جسے بابائے قوم مرحوم سر سید احمد خان نے دو سو سال قبل قائم کیا تھا آج تناور درخت کی شکل میں ملک میں تعلیم کی روشنی عام کررہا ہے۔اس یونیورسٹی میں میڈیکل کے طلبا کے لئے پانچ سال کی تعلیمی فیس صرف 60,000 روپئے ہے، حالانکہ دوسری یونیورسیٹیوں میں میڈیکل کے طلبا ...

متحدہ عرب امارات میں حفظ قرآن جرم، حکومت کی منظوری کے بغیر کوئی شخص قرآن حفظ نہیں کرسکتا، مساجد میں مذہبی تعلیم اور اجتماع پر بھی پابندی

مشرقی وسطیٰ کے مختلف ممالک میں داخل اندازی اور عرب کی اسلامی تنظیموں کو دہشت گرد قرار دینے کے بعد متحدہ عرب امارات قانون کے ایسے مسودہ پر کام کررہا ہے جس کی رو سے حکومت کی منظوری کے بغیر قرآن شریف کا حفظ بھی غیرقانونی ہوگا۔