طرابلس کو دہشت گردوں کے رحم و کرم پرنہیں چھوڑسکتے: جنرل حفتر

Source: S.O. News Service | By Sheikh Zabih | Published on 17th May 2017, 7:39 PM | عالمی خبریں |

طرابلس، 17مئی(ایس او نیوز/آئی این ایس انڈیا)لیبیا کی سرکاری فوج کے سربراہ جنرل خلیفہ حفتر نے کہا ہے کہ طرابلس کو دہشت گردوں کی پناہ گاہ نہیں بننے دیں گے۔ ان کا کہنا ہے کہ فوج اور تمام قومی قوتوں کو دہشت گردی کے خلاف ایک صف میں کھڑا ہونا پڑے گا۔ فوج کی نئی پاسنگ آؤٹ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے جنرل خفتر نے کہا کہ ہمیں اپنی ذاتی رنجشیں اور عناد پس پشت ڈال کر یہ ثابت کرنا ہوگا کہ ہماری طاقت دہشت گردی کے فتنے سے زیادہ ہے۔انہوں نے لیبی فوج کی مدد کرنے والے ممالک کا بھی شکریہ ادا کیا۔ انہوں نے کہا کہ لیبیا کے دشمنوں نے داعش کی مدد کی اور لیبی فوج کو اسلحہ کی فراہمی میں رکاوٹیں کھڑی کیں۔ طرابلس لیبیا کا دارالحکومت رہے گا، اسے دہشت گردوں کی چراگاہ نہیں بننے دیا جائے گا۔

ایک نظر اس پر بھی

ISنے کیا شفیع ارمارکے شام میں مارے جانے کا اعلان؛ پہلے بھی عام ہوئی تھی مرنےکی خبر

کچھ عرصے پہلے میڈیا میں یہ خبر عام ہوئی تھی کہ بھٹکل سے تعلق رکھنے والے شفیع ارمار کو شام میں سرگرم دہشت گرد تنظیم اسلامک اسٹیٹ کا اہم ترین ایجنٹ ہونے کی وجہ سے امریکہ نے اسے دنیا کامطلوب ترین دہشت گرد global terrorist قرار دیا ہے۔

جرمن سیاستدان انٹرپول پر برہم

انٹر پول کے ہاتھوں جرمن ادیب دوگان آخانلی کی عارضی گرفتاری پر جرمن سیاستدانوں نے بین الاقوامی پولیس کے خلاف اقدامات کا مطالبہ کیا ہے۔