نوٹ بندی کی مخالفت میں کاروار میں مہیلا کانگریس کا مرکزی حکومت کےخلاف زبردست احتجاج

Source: S.O. News Service | By Abu Aisha | Published on 11th January 2017, 12:14 AM | ساحلی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

کاروار:10/جنوری(ایس او نیوز) مرکزی حکومت کی طرف سے کی گئی نوٹ بندی کے خلاف اترکنڑا ضلع مہیلا کانگریس ، یوتھ کانگریس اور این ایس یو آئی کے اشتراک سے ڈی سی دفتر کے سامنےسخت احتجاج کرتے ہوئے ڈی سی دفتر کا گھیراؤ کرنے کی کوشش کی، جبکہ نوٹ بندی سےعوام کو ہورہی تکالیف کی مذمت میں مرکزی حکومت کے خلاف وزیراعظم کے نام ڈپٹی کمشنر کے ذریعےمیمورنڈم پیش کیاگیا۔

شہر کے مترا سماج کے صحن میں جمع ہوئے مہیلاکانگریس کے کارکنان نے مرکزی حکومت کے خلاف نعرے بازی کی، یوتھ کانگریس اور این ایس یو آئی نے احتجاج کی بھرپور حمایت کرتے ہوئے احتجاج میں شامل ہوئے۔ متراسماج میدان سے نکلی احتجاجی ریلی شہر کے اہم راستوں سے ہوتے ہوئے ڈی سی دفتر پہنچی ، راستے بھر مودی حکومت کے خلاف نعرے بازی کی گونج رہی۔ ڈی سی دفترکے سامنے بھی نوٹ بندی کے بعد ہورہی لاقانونیت سے عوام کو جن دشواریوں کا سامنا کرنا پڑر ہاہے اس کی مذمت کرتے ہوئے مودی حکومت کے خلاف جم کر نعرہ بازی کی گئی ۔

کمٹہ کی رکن اسمبلی اور ساحلی ترقی بورڈ کی صدر شاردا شٹی نے احتجاجیوں سے  خطاب کرتے ہوئے کہا کہ نوٹوں کو چلن سے باہر کردینے کے بعد عوامی زندگی اجیرن بن کر رہ گئی ہے، عوام کو روزمرہ کے اشیاء کی خریداری کے لئے دشواریاں پیش آرہی ہیں، اے ٹی ایم کے سامنے لمبی قطاریں معصوم عوام کی دکھ بھری کہانی سناتی ہیں، قطاروں میں ہونے والی اموات حقائق کو بیان کررہی ہیں، مرکزی حکومت کے کانوں پر جوں تک نہیں رینگ رہی ہے ، انہوں نے سوال کیا کہ آخر نوٹ بندی کا مقصد کیا تھا ؟

 ضلع مہیلا کانگریس صدر تارا گوڈا نے بھی اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے کہاکہ بی جے پیحکومت نے نوٹ بندی کے ذریعے عوام کی معاشی آزادی کو چھین لیا ہے، غریبوں، معصوموں کو اپنے کمائی ، مزدوری کا پیسہ لینے کے لئے بینکوں کے سامنے کئی کئی دنوں تک انتظار کرنا پڑرہاہے، گویا مرکزی حکومت نے عوام کی تکالیف پر کوئی توجہ نہیں دی جس کی وجہ سے اس طرح کے حالات پید اہوئے ہیں۔ ریاستی  مہیلا کانگریس کی نائب صدر ششما ریڈی نے بھی خطاب کرتے ہوئے مرکزی حکومت اور بی جے پی لیڈران پر جم کر تنقید کی۔

ڈی سی دفترکے سامنے احتجاج کررہے مہیلا کانگریس کارکنان نے میمورنڈم حاصل کرنے کےلئے ڈی سی کے حاضری کی مانگ کی۔ کچھ دیر تک ڈی سی نہیں آئے تو احتجاجیوں نے دفتر میں گھسنے کی کوشش کی ، مگرسکیورٹی کے لئے تعینات پولس نے انہیں روک لیا۔ اس کے بعد جب ڈی سی ، ایس ایس نکول میمورنڈم لینے پہنچے تو مہیلا کا رکنان نے ڈی سی کے خلاف بھی نعرے بازی کی۔ اس موقع پر مہیلا کانگریس کے لیڈران گایتری ، کے  پی سی سی ممبر کلاوتی، اے آئی سی سی کے نگراں کار وشنو پرساد ، یوتھ کانگریس کے شری پد ہیگڈے ، سنتوش شٹی، اشرف، این ایس یو آئی کے انمول سرسیکر، کاروار بلاک کانگریس صدر دیپک وینگنکر، سنتوش گرومٹھ سمیت کئی ایک احتجاج میں شامل تھے۔

ایک نظر اس پر بھی

بھٹکل میونسپالٹی عمارت پر پتھرائو کے معاملے میں بی جے پی کارکنوں کی گرفتاری پر ناراضگی؛ کل سنیچر صبح نکالی جائے گی ریلی

 بھٹکل ٹائون میونسپالٹی عمارت پر پتھرائو اور توڑپھوڑ کے معاملے میں بی جے پی کارکنوں اور لیڈروں کی گرفتاری پر ناراض بھٹکل بی جے پی  نے کل سنیچر کو شرالی سے بھٹکل تحصیلدار دفتر تک ایک خاموش احتجاجی ریلی نکالنے کا فیصلہ کیا ہے۔

بهٹکل مسلم جماعت قطر کے لئے عہدیداران کا انتخاب؛ مولانا محمد یحیٰ برماور ندوی صدر اور زُبیر خلیفہ سکریٹری منتخب

کل جمعرات 21 ستمبر رات 10 بجے جناب محمد يحیٰ  برماور ندوی صاحب کی رہائش گاہ پر بهٹکل مسلم جماعت قطر کی پہلی انتظامیہ کی میٹنگ منعقد ہوئی جس میں 1439 - 1440 کیلئے  مولانا محمد یحیٰ برماور ندوی صدر اور جناب محمد زبیر خلیفہ سکریٹری منتخب ہوئے۔

بھٹکل میونسپالٹی عمارت پر پتھرائو کا معاملہ؛ گیارہ گرفتار شدگان کو ملی ضمانت

 14 ستمبر کو بھٹکل میونسپالٹی عمارت پر ہوئے پتھرائو اور پولس عملے پر حملے کے بعد پولس نے اب تک جن 15 لوگوں کو گرفتار کیا تھا، اُس میں سے 11 لوگوں کی ضمانت آج جمعرات کو بھٹکل جوڈیشیل میجسٹریٹ فرسٹ کلاس عدالت نے  منظوری دے دی ہے۔

بھٹکل میونسپالٹی عمارت پر توڑ پھوڑ کا معاملہ؛ سنگھ پریوار کے کارکنوں کی گرفتاری کے خلاف انکولہ میں احتجاج۔ بھٹکل چلو ریالی کا اعلان

بھٹکل میں بلدیہ عمارت پر حملے کے بعد توڑ پھوڑ اور سرکای عمارت کو نقصان پہنچانے کے الزام میں جہاں ایک طرف پولیس متعلقہ افراد کو گرفتار کررہی ہے، وہیں پر ضلع کے مختلف مقامات پر اسے ہندو مسلم تفرقہ کا رنگ دیتے ہوئے پولیس پر الزام لگایا جارہا ہے کہ وہ بلاوجہ ہندوؤں کو ہراساں کررہی ...

بھٹکل میونسپالٹی عمارت پر پتھرائو کے معاملے میں بی جے پی کارکنوں کی گرفتاری پر ناراضگی؛ کل سنیچر صبح نکالی جائے گی ریلی

 بھٹکل ٹائون میونسپالٹی عمارت پر پتھرائو اور توڑپھوڑ کے معاملے میں بی جے پی کارکنوں اور لیڈروں کی گرفتاری پر ناراض بھٹکل بی جے پی  نے کل سنیچر کو شرالی سے بھٹکل تحصیلدار دفتر تک ایک خاموش احتجاجی ریلی نکالنے کا فیصلہ کیا ہے۔

بهٹکل مسلم جماعت قطر کے لئے عہدیداران کا انتخاب؛ مولانا محمد یحیٰ برماور ندوی صدر اور زُبیر خلیفہ سکریٹری منتخب

کل جمعرات 21 ستمبر رات 10 بجے جناب محمد يحیٰ  برماور ندوی صاحب کی رہائش گاہ پر بهٹکل مسلم جماعت قطر کی پہلی انتظامیہ کی میٹنگ منعقد ہوئی جس میں 1439 - 1440 کیلئے  مولانا محمد یحیٰ برماور ندوی صدر اور جناب محمد زبیر خلیفہ سکریٹری منتخب ہوئے۔

مسلم دوست کے ساتھ چائے کی چسکیاں لینے پر بی جے پی لیڈر نے تمانچے رسید کئے

ایک ویڈیو جو وائیرل ہورہا ہے جس میں بی جے پی ویمن وینگ علی گڑ کی لیڈر سنگیتا وارشانی بتایاجارہا ہے کہ ایک لڑکی کو تمانچے رسید کررہے ہیں جس کا تعلق ہندوکمیونٹی سے ہے اور وہ سوال پوچھ رہی ہے لڑکی کے مسلم دوست سے رشتہ کے متعلق۔

بھٹکل میونسپالٹی عمارت پر پتھرائو کا معاملہ؛ گیارہ گرفتار شدگان کو ملی ضمانت

 14 ستمبر کو بھٹکل میونسپالٹی عمارت پر ہوئے پتھرائو اور پولس عملے پر حملے کے بعد پولس نے اب تک جن 15 لوگوں کو گرفتار کیا تھا، اُس میں سے 11 لوگوں کی ضمانت آج جمعرات کو بھٹکل جوڈیشیل میجسٹریٹ فرسٹ کلاس عدالت نے  منظوری دے دی ہے۔

بھٹکل میونسپالٹی عمارت پر توڑ پھوڑ کا معاملہ؛ سنگھ پریوار کے کارکنوں کی گرفتاری کے خلاف انکولہ میں احتجاج۔ بھٹکل چلو ریالی کا اعلان

بھٹکل میں بلدیہ عمارت پر حملے کے بعد توڑ پھوڑ اور سرکای عمارت کو نقصان پہنچانے کے الزام میں جہاں ایک طرف پولیس متعلقہ افراد کو گرفتار کررہی ہے، وہیں پر ضلع کے مختلف مقامات پر اسے ہندو مسلم تفرقہ کا رنگ دیتے ہوئے پولیس پر الزام لگایا جارہا ہے کہ وہ بلاوجہ ہندوؤں کو ہراساں کررہی ...