نوٹ بندی کی مخالفت میں کاروار میں مہیلا کانگریس کا مرکزی حکومت کےخلاف زبردست احتجاج

Source: S.O. News Service | By Abu Aisha | Published on 11th January 2017, 12:14 AM | ساحلی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

کاروار:10/جنوری(ایس او نیوز) مرکزی حکومت کی طرف سے کی گئی نوٹ بندی کے خلاف اترکنڑا ضلع مہیلا کانگریس ، یوتھ کانگریس اور این ایس یو آئی کے اشتراک سے ڈی سی دفتر کے سامنےسخت احتجاج کرتے ہوئے ڈی سی دفتر کا گھیراؤ کرنے کی کوشش کی، جبکہ نوٹ بندی سےعوام کو ہورہی تکالیف کی مذمت میں مرکزی حکومت کے خلاف وزیراعظم کے نام ڈپٹی کمشنر کے ذریعےمیمورنڈم پیش کیاگیا۔

شہر کے مترا سماج کے صحن میں جمع ہوئے مہیلاکانگریس کے کارکنان نے مرکزی حکومت کے خلاف نعرے بازی کی، یوتھ کانگریس اور این ایس یو آئی نے احتجاج کی بھرپور حمایت کرتے ہوئے احتجاج میں شامل ہوئے۔ متراسماج میدان سے نکلی احتجاجی ریلی شہر کے اہم راستوں سے ہوتے ہوئے ڈی سی دفتر پہنچی ، راستے بھر مودی حکومت کے خلاف نعرے بازی کی گونج رہی۔ ڈی سی دفترکے سامنے بھی نوٹ بندی کے بعد ہورہی لاقانونیت سے عوام کو جن دشواریوں کا سامنا کرنا پڑر ہاہے اس کی مذمت کرتے ہوئے مودی حکومت کے خلاف جم کر نعرہ بازی کی گئی ۔

کمٹہ کی رکن اسمبلی اور ساحلی ترقی بورڈ کی صدر شاردا شٹی نے احتجاجیوں سے  خطاب کرتے ہوئے کہا کہ نوٹوں کو چلن سے باہر کردینے کے بعد عوامی زندگی اجیرن بن کر رہ گئی ہے، عوام کو روزمرہ کے اشیاء کی خریداری کے لئے دشواریاں پیش آرہی ہیں، اے ٹی ایم کے سامنے لمبی قطاریں معصوم عوام کی دکھ بھری کہانی سناتی ہیں، قطاروں میں ہونے والی اموات حقائق کو بیان کررہی ہیں، مرکزی حکومت کے کانوں پر جوں تک نہیں رینگ رہی ہے ، انہوں نے سوال کیا کہ آخر نوٹ بندی کا مقصد کیا تھا ؟

 ضلع مہیلا کانگریس صدر تارا گوڈا نے بھی اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے کہاکہ بی جے پیحکومت نے نوٹ بندی کے ذریعے عوام کی معاشی آزادی کو چھین لیا ہے، غریبوں، معصوموں کو اپنے کمائی ، مزدوری کا پیسہ لینے کے لئے بینکوں کے سامنے کئی کئی دنوں تک انتظار کرنا پڑرہاہے، گویا مرکزی حکومت نے عوام کی تکالیف پر کوئی توجہ نہیں دی جس کی وجہ سے اس طرح کے حالات پید اہوئے ہیں۔ ریاستی  مہیلا کانگریس کی نائب صدر ششما ریڈی نے بھی خطاب کرتے ہوئے مرکزی حکومت اور بی جے پی لیڈران پر جم کر تنقید کی۔

ڈی سی دفترکے سامنے احتجاج کررہے مہیلا کانگریس کارکنان نے میمورنڈم حاصل کرنے کےلئے ڈی سی کے حاضری کی مانگ کی۔ کچھ دیر تک ڈی سی نہیں آئے تو احتجاجیوں نے دفتر میں گھسنے کی کوشش کی ، مگرسکیورٹی کے لئے تعینات پولس نے انہیں روک لیا۔ اس کے بعد جب ڈی سی ، ایس ایس نکول میمورنڈم لینے پہنچے تو مہیلا کا رکنان نے ڈی سی کے خلاف بھی نعرے بازی کی۔ اس موقع پر مہیلا کانگریس کے لیڈران گایتری ، کے  پی سی سی ممبر کلاوتی، اے آئی سی سی کے نگراں کار وشنو پرساد ، یوتھ کانگریس کے شری پد ہیگڈے ، سنتوش شٹی، اشرف، این ایس یو آئی کے انمول سرسیکر، کاروار بلاک کانگریس صدر دیپک وینگنکر، سنتوش گرومٹھ سمیت کئی ایک احتجاج میں شامل تھے۔

ایک نظر اس پر بھی

امسال سفر حج کیلئے کرناٹک کے خوش نصیب عازمین کا قرعہ؛ 3331 فریشر عازمین، 5 اپریل تک رقم ادا کرنے کی مہلت

ریاستی حج کمیٹی کے ذریعہ سفر حج پر روانہ ہونے والے خوش نصیب عازمین حج کا انتخاب آج ممبئی میں حج کمیٹی آف انڈیا دفتر میں بذریعہ آن لائن قرعہ عمل میں آیا۔ امسال وزیر برائے شہری ترقیات و حج آر روشن بیگ کی مسلسل جدو جہدکے ذریعہ ریاست کے حج کوٹہ میں اضافہ ہوا، جس کے تحت کرناٹک کیلئے ...

گھرواپسی کے پروگرام کے لئے سوامی جی کی تصویر کا استعمال : بھٹکل کے شنکرنائک نے مانگی معافی

واٹس اپ ، سوشیل نیٹ ورک سمیت ایک اخبار اور مقامی ٹی وی چینل پر گھرواپسی پروگرام کی رپورٹ نشر کرنے کے دوران شری رام اکشھتر کے برہمانند سوامی جی کی تصویر غیر قانونی طریقے سے غلط استعمال کئے جانے پر میں سوامی جی سے معافی مانگتاہوں۔ شری رام سینا بھٹکل شاخ کے صدر شنکر نائک نے ...

بھٹکل میں آنگن واڑی ملازمین کا اپنے مسائل کے حل کے لئے احتجاج

سرکارکی سرکش پالیسی کی وجہ سے آنگن واڑی ملازمین کے منصفانہ مطالبات پورے ہوئے بغیر یوں ہی باقی ہیں، ریاستی گورنر مداخلت کرتے ہوئے حل کرنےکی مانگ لے کر جمعرات کی شام آنگن واڑی کارکنوں نے سی آئی ٹی یو لیڈر سبھاش کوپی کر کی قیادت میں بھٹکل اے سی کے ذریعے میمورنڈم سونپا۔

سرسی میں بائک کا ہارن بجانے پر ہنگامہ : ہندو تنظیموں کی طرف سے پولس تھانہ کا گھیراؤ

اترکنڑا ضلع کے ہر تعلقہ جات مقام پر لگاتار ہر چھوٹی ، معمولی اور عام نوک جھونک کو فرقہ وارانہ رنگ دے کر ہنگامہ خیزی کرنا، قوموں کے درمیان نفرت پید اکرکے سیاسی مفادحاصل کرنا معمول بنتا جارہاہے، پولس بھی معاملات کو وہیں عارضی طورپرہوں ہاں کے ذریعے نپٹا کر خاموش رہ جانے سے فرقہ ...

کمٹہ پہاڑی پر مِنی ایئر پورٹ کے لئے جگہ کی نشاندہی۔۔۔ تین کیلو میٹر لمبا اور تین سو میٹر چوڑا ہوگا رن وے

کچھ دن قبل ساحل آن لائن نے اپنے قارئین کو خبر دی تھی کہ ریاستی بجٹ میں اترکنڑا ضلع کو منطورکردہ ائیر اسٹریپ کمٹہ کے مورور پہاڑ میں تعمیرہوگا۔ اسی کے فالو اپ کے تحت ائیر اسٹریپ کی تعمیر ات کا جائزہ لینے کے لئے خصوصی افسران پر مشتمل ایک ٹیم مورو ر پہاڑ پہنچ کر جگہ کا معائنہ کیا ہے۔

کاروار میں ایک لاکھ سے زائد مالیت کی شراب ضبط؛ ڈرائیور کار چھوڑ کر فرار

مصدقہ خبر پر کارروائی کرتےہوئے ایکسائز محکمہ کے افسران نے غیر قانونی طورپر سپلائی کررہے 1لاکھ 16ہزارروپیوں کی قیمت والی گوا شراب ، فورڈ آئکان کار اور موبائیل سمیت کل 8لاکھ 18ہزار روپیوں کی ملکیت ضبط کئے جانے کا واقعہ تعلقہ کے ماجالی سرحد پر پیش آیاہے۔

اگر ایودھیا میں رام مندر تھا تو حمایت کریں مسلمان: مسلم راشٹریہ منچ

مسلم راشٹریہ منچ کے جوائنٹ کنوینر مہیرج دھون نے کہا کہ اگر یہ سچ ہے کہ ایودھیا میں بھگوان رام کا مندر تھا تو مسلمان اس کی حمایت کریں۔ مسلمان کسی کی پوجا میں خلل مت ڈالیں اور دوسرے کے دین کی عزت کریں۔ حضرت گنج میں واقع امبیڈکر مہاسبھا کے آڈیٹوریم میں ”آؤ ایودھیا ووادسلجھائیں“ ...

آنگن واڑی کارکنوں کے مسئلہ پر سدرامیا کے خلاف تحریک مراعات پیش،اسپیکر نے اپوزیشن کی تحریک پر اپنا فیصلہ محفوظ کرلیا

وزیر اعلیٰ سدرامیا کے خلاف آج ریاستی اسمبلی میں بی جے پی کی طرف سے تحریک مراعات پیش کرنے کی کوشش کو اسپیکر کے بی کولیواڈ نے مسترد کردیا۔ آنگن واڑی کارکنوں کو ماہانہ دئے جانے والے مشاہرہ کی رقم میں بی جے پی دور اقتدار میں اضافہ نہ کئے جانے کے متعلق وزیراعلیٰ سدرامیا کی طرف سے ...

گھرواپسی کے پروگرام کے لئے سوامی جی کی تصویر کا استعمال : بھٹکل کے شنکرنائک نے مانگی معافی

واٹس اپ ، سوشیل نیٹ ورک سمیت ایک اخبار اور مقامی ٹی وی چینل پر گھرواپسی پروگرام کی رپورٹ نشر کرنے کے دوران شری رام اکشھتر کے برہمانند سوامی جی کی تصویر غیر قانونی طریقے سے غلط استعمال کئے جانے پر میں سوامی جی سے معافی مانگتاہوں۔ شری رام سینا بھٹکل شاخ کے صدر شنکر نائک نے ...

احتجاجی ہڑتال میں خود بی جے پی لیڈران غائب

مسلم نوجوان کی طرف سے رام رتھ کو چپل دکھانے کا الزام لگا کر کمٹہ میں جو احتجاجی بند منایا گیا تھا، اس میں بعض بی جے پی لیڈران کے غائب رہنے کی رپورٹ موصول ہوئی ہے۔جس کے تعلق سے پارٹی کے اندر چہ میگوئیاں چل رہی ہیں۔