اترکنڑا ضلع میں بندوق برداروں کی تعداد صرف ایک فی صد: لائسنس کی تجدید کو لے کر اکثر بے فکر

Source: S.O. News Service | By Abu Aisha | Published on 8th October 2017, 8:54 PM | ساحلی خبریں | اسپیشل رپورٹس |

کاروار:8/ اکتوبر (ایس اؤنیوز)اترکنڑا ضلع جغرافیائی وسعت اور جنگلات سے گھراہواہے اس کی آبادی میں بھی خاصی اضافہ ہواہے لیکن ضلع میں صرف ایک فی صد لوگ ہی بندوق رکھتے ہیں،ضلع میں فصل کی حفاظت کے لئے 8163اور خود کی حفاظت کے لئے 930سمیت جملہ  9093لوگ ہی لائسنس والی بندوقیں رکھتے ہیں۔

اترکنڑا ضلع میں چند ہی کسان اپنی فصل کی نگرانی اور حفاظت کے لئے مجبوری میں لائسنس والی بندوق رکھتے ہیں بقیہ کسانوں کو لائسنس کے متعلق کچھ زیادہ جانکاری نہیں ہے۔ اور نئی بندوق لائسنس کے لئے درخواست دینے والوں کی تعداد نہیں کے برابر ہے ۔ فصل کی حفاظت کے لئے 79اور خود کی حفاظت کے لئے 8سمیت صرف 87لوگ ہی لائسنس کے انتظارمیں ہیں۔ امکان ہے کہ ضلع میں ایسے بہت سارے لوگ ہوں گے جو لائسنس کے بغیر بندوق رکھتے ہیں لیکن پتہ چلا ہے کہ ضلعی عوام کو بندوق کے متعلق زیادہ  معلومات نہیں ہے۔

ویسے اترکنڑا ضلع ریاست میں گن داروں کی فہرست میں دوسرے نمبر پرہے ، ضلع کے جغرافیائی وسعت اور آبادی کی شرح کے مطابق بندوق دھاریوں کی تعداد اپنےحساب سے ہے، لیکن جو لوگ لائسنس رکھتےہیں قانون کے تحت اس کی تجدید کو لے کر کہا جاسکتاہے کہ اس سلسلے میں عوام زیادہ بیدار نہیں ہیں۔ اس کا سبب یہی ہےکہ ضلع کے 9093لائسنس والی بندوق رکھنے والوں میں 3910لوگوں نے  اپنے بندوق کے لائسنس کی تجدید نہیں کرائی ہے۔فصل کی نگرانی کے 3522بندوق بردار اور 388خود کی حفاظت کے لئے بندوق رکھنے والے لائسنس تجدید کے متعلق کچھ زیادہ فکر مند نظر نہیں آتے۔ جس میں یلا پور تعلقہ میں تحفظِ فصل کی 937اور خود حفاظتی کے 22سمیت کل 959اور سرسی تعلقہ میں تحفظ فصل 864اور خود حفاظتی کے 94جملہ 958لوگوں نے  اپنے لائسنس کی تجدید نہیں کی ہے۔ بقیہ تعلقہ جات میں بندوق لائسنس کی تجدید نہ  کرانے والوں کی تعداد اتنی زیادہ تو نہیں ہے لیکن لائسنس والی بندوق خریدنے کے بعد لائسنس کی تجدید کی طرف دھیان نہیں دینےکا پتہ چلاہے۔

ضلع کے دیگر تعلقہ جات کے بالمقابل بھٹکل تعلقہ میں بندوق برداروں کی تعداد کم ہے، بھٹکل تعلقہ میں فصل کی حفاظت کے لئے صرف 467 لوگ بندوق رکھتے ہیں تو خود کی حفاظت کے لئے 153 سمیت صرف 620 لوگوں کے پاس ہی لائسنس کی بندوق  ہیں۔ بھٹکل کے بالمقابل سرسی اور یلاپور تعلقہ جات میں سب سے زیادہ لائسنس والے بندوق بردار ہیں۔

ایک نظر اس پر بھی

جنوری 21 کو ہوگا انجمن حامئی مسلمین بھٹکل کا سالانہ جلسہ؛ ممبران سے بھاری تعداد میں شرکت کی اپیل

بھٹکل کا قومی تعلیمی ادارہ انجمن حامئی مسلمین کا سالانہ جلسہ مورخہ 21 جنوری بروز اتوار صبح 10:30 بجے انجمن جوکاکو شمس الدین میموریل بلڈنگ میں منعقد کیا گیا ہے جس میں سالانہ آڈٹ شدہ حسابات برائے سال 2016 / 2017 پر مشتمل سالانہ رپورٹ پیش کیا جائے گا۔ جلسہ میں ممبران کو انجمن کی ...

بھٹکل سرکاری اسپتال کی بدنظمی کے متعلق میڈیا میں رپورٹ شائع ہونےکے بعد ضلعی میڈیکل آفیسر کا اسپتال دورہ : تعلقہ میڈیکل آفیسر پر الزامات کی بوچھار

بھٹکل سرکاری اسپتال میں 9ڈاکٹرس خدمات پر مامور ہونے کے باوجود پیر کے دن کوئی بھی ڈاکٹر حاضر نہیں ہونے کی میڈیا میں رپورٹ میں شائع ہونے کے بعد ضلع میڈیکل آفیسر ڈاکٹر اشوک کمار تعلقہ اسپتال کا دورہ کرتے ہوئے اسپتال کا معائنہ کیا اور اسپتال کی بد نظمی کے متعلق تعلقہ میڈیکل آفیسر ...

ہوناور میں ایک کالج طالبہ کی عصمت دری کی کوشش؛ عوام نے نوجوان کو پکڑ کر کیا پولس کے حوالے

یہاں سے قریب 38 کلو میٹر دور ہوناور میں پولس نے ایک  کالج طالبہ کی  عصمت دری کرنے کی کوشش کے الزام میں ایک 26 سالہ نوجوان کو گرفتار کرلیا ہے جس کی شناخت  ہوناور کے النکّی کے رہنے والے  گرو راما گوڈا کی حیثیت سے کی گئی ہے۔

بھٹکل انجمن ہائی اسکول کے ہونہار طلبہ کو گولڈ میڈلس؛ محمد عمر کو ملا ’وقار اسلامیہ ‘ اور امیر معلم نے حاصل کیا ’وقارِ انجمن‘ ایوارڈ

15جنوری برو ز پیر کو انجمن میدان میں منعقدہ اسلامیہ اینگلو اردو ہائی اسکول اور انجمن بائز ہائی اسکول کے 78واں سالانہ جلسہ میں اسلامیہ ہائی اسکول کے محمد عمر ابن جیلانی اکرمی کو ’وقار ِاسلامیہ ‘ اور انجمن بائز ہائی اسکول کے امیر ابن منیر محی الدین معلم کو’وقار ِ انجمن ‘ایوارڈ ...

مقتول الیاس کی بیوی کاپیغام پولیس کے نام۔ انصاف نہیں ملا تو جان دے دوں گی!

حال ہی میں قتل کیے گئے بدنام زمانہ ٹارگٹ گروپ کے گُرگے الیا س کی بیوی فرزانہ نے پولیس کے نام کھلے خط میں اپنے لئے انصاف دلانے کا مطالبہ کیاہے اور کہا ہے کہ اگر الیاس کے قاتلوں کو گرفتار کرکے اس کے ساتھ انصاف نہیں کیاگیا تو وہ اپنی جان دیدے گی۔

ریاست کرناٹک کو بھگوارنگ میں رنگنے کی کوشش

2014 کے لوک سبھا انتخابات میں زبردست کامیابی کے بعد راشٹریہ سویم سیوک سنگھ (آر ایس ایس) اوربھارتیہ جنتاپارٹی (بی جے پی) کے حوصلے ابھی تک اس لئے بھی بلند ہیں کہ ریاستوں کے اسمبلی اور کارپوریشن انتخابات میں بھی انہوں نے کامیابی حاصل ہے ۔

تین طلاق پر غیر متوازن سزا ......آز: حضرت مولانا محمد ولی صاحب رحمانی

اندازہ ہے کہ ۲۸؍دسمبر ۲۰۱۷ء کو مرکزی وزیر قانون روی شنکر پرشاد پارلیمنٹ میں وہ بل پیش کردینگے، جسکا تعلق تین طلاق سے ہے ایوان زیریں کے ٹیبل پر رکھے جانیوالے اس بل کا نام دی مسلم ومن (پروٹیکشن آف رائٹس آن مریج) بل ۲۰۱۷ء ہے اس کا تعلق ایک ساتھ تین طلاق دینے سے ہے ۔۔۔۔ سپریم کورٹ نے ...

تنازعات کو جنم دینے والی اننت کمار ہیگڈے کی زبان کے دام لگے ایک کروڑ روپے !

ہبلی عید گاہ میدان کے تنازعے کے دوران وہاں بھگوا جھنڈا لہرا کر ہندوؤں کے دلوں کو متاثر کرنے اور پانچ بار رکن پارلیمان بننے والے اننت کمار ہیگڈے اب تک گمنامی رہنے کے بعد وزیر بنتے ہی اخباروں کی سرخیوں اور لوگوں کی بحث کا موضوع بن گئے ہیں۔

سر پرکبھی ٹوپی تو ماتھے پہ تِلک ۔کاگیری کاہے یہ بھی ناٹک ! (خصوصی رپورٹ)

سیاست کا دوسرا نام سوائے ناٹک بازی کے اور کچھ نہیں ہے۔ اور جب بھی انتخابات قریب آتے ہیں تو پھرسیاست کے نت نئے بہروپ سامنے آنے لگتے ہیں، جو اپنے اپنے ووٹ بینک کو متاثر کرنے کے لئے کرتب بازیاں شروع کرتے ہیں۔

گجرات نے جنگ آزادی کی قیادت کی ہے ،فرقہ پرست طاقتوں کو آگے بڑھنے سے روکنا بھی اس کی اہم ذمہ داری ۔۔۔۔۔۔۔۔۔ نقطہ نظر : ڈاکٹر منظور عالم

گجرات انتخابات کی تاریخ قریب آچکی ہے ،ممکن ہے جس وقت آپ یہ مضمون پڑھ رہے ہوں اس کے ایک دن بعد گجرات میں رائے شماری کا سلسلہ شروع ہوجائے ،9 اور 14 دسمبر کو دو مرحلوں میں ووٹنگ ہونی ہے جبکہ 18 دسمبر کو نتائج کا اعلان کیا جائے گا ۔گجرات کے رواں انتخابات پر پورے ہندوستان کی نظر ہے ،خاص ...

انقلابی سیرت سے ہم کیوں محروم ہیں؟ .................آز: مولانا سید احمد ومیض ندوی

سیرتِ رسول آج کے مسلمانوں کے پاس بھی پوری طرح محفوظ ہے، لیکن ان کی زندگیوں میں کسی طرح کے انقلابی اثرات نظر نہیں آتے، آخر وجہ کیا ہے؟ موجودہ دور کے ہم مسلمان صرف سیرت کے سننے اور جاننے پر اکتفاء کرتے ہیں، سیرتِ رسول سے ہمارا تعلق ظاہری اور بیرنی نوعیت کا ہے۔حالانکہ س سیرت کی ...