کاروار:ایس ایس ایل سی جوابی پرچوں کی جانچ شروع : ضلع سے 210اساتذہ غیر حاضر

Source: S.O. News Service | By Abu Aisha | Published on 21st April 2017, 9:21 PM | ساحلی خبریں |

کاروار:21/اپریل(ایس اؤنیوز)مارچ ، اپریل میں ہوئے ایس ایس ایل سی امتحانات کے جوابی پرچوں کی جانچ آج سے شروع ہوچکی ہے، جو اساتذہ پرچوں کی جانچ کے لئے حاضر نہیں ہوئے ہیں ان کے خلاف تعلیمات عامہ محکمہ کی طرف سےکارروائی کرنے کا حکم جاری کیا گیا ہے۔ جس کےنیتجےمیں اترکنڑا ضلع سے غیر حاضر ہوئے 210اساتذہ کے خلاف کارروائی کئے جانے کی اطلاعات موصول ہوئی ہیں۔

ایس ایس ایل سی پرچوں کی جانچ کا کام 20اپریل سے شروع ہوچکا ہے۔ تعلیمات عامہ محکمہ کی طرف سے جوابی پرچوں کی جانچ کے لئے اساتذہ کو لازماً حاضر ہونے کی تاکید کی گئی تھی اور بتایا گیا تھا کہ ضروری کاموں اور صحت کی خرابی سے کوئی حاضر نہیں ہورہے ہیں تو متعلقہ کام سے رعایت کی منظوری کے لئے دستاویزات کے ساتھ عرضی دینے کہا گیا ہے۔ بورڈ کی طرف سے اگر منظوری ملتی ہے تو ان کے خلاف کوئی کارروائی نہیں ہوگی۔

ایس ایس ایل سی کے جوابی پرچوں کی جانچ کے لئے اترکنڑا ضلع سے کل 824اساتذہ کو نامز د کیا گیا تھا جس میں سے 729حاضر رہ کر 95غیر حاضر ہیں تو اسی طرح سرسی تعلیمی ضلع سے نامزد 817اساتذہ میں 702حاضراور 115اساتذہ غیر حاضر ہیں۔ کاروار تعلیمی ضلع سے 6اساتذہ کو جوائنٹ چیف ایگزامنیر کے طورپر نامزد کیاگیا تھا وہ سب اپنے کام پر موجود ہیں لیکن اسسٹنٹ چیف ایگزامنیر کے طورپر نامزد 115میں سے 109 اساتذہ حاضر ہوئے ہیں تو 703ممتحن اساتذہ میں سے 614ممتحن حضرات شریک ہونے کی اطلاعات موصول ہوئی ہیں۔ جن اساتذہ نے رعایت کے لئے درخواست دی ہے اس کے ساتھ مناسب دستاویزات کا منسلک رہنا ضروری ہے، اگر ایسانہیں ہواتو قانون کے مطابق کارروائی کئےجانے کی بات کہی گئی ہے۔

اس سلسلے میں ڈی ڈی پی آئی کاروار پی کے پرکاش نے کہا ہے کہ جن اساتذہ کو ممتحن کے طورپر نامزد کیا گیا ہے وہ فوری حاضر ہوجائیں۔ کوئی مسائل کا سامنا ہے تو مناسب دستاویزات کے ساتھ درخواست دیں، ورنہ تعلیمات عامہ محکمہ کے قانون کے مطابق کارروائی کئے جانے کاانتباہ دیاہے۔

ایک نظر اس پر بھی

منگلورومیں لاڈجنگ میں چلائے جارہے جسم فروشی کے اڈے پر چھاپہ۔ بنگلہ دیشی لڑکیوں سمیت 6خواتین کو بچالیا گیا

منگلورو کے پمپ ویل علاقے میں واقع مشہور ہوٹل انّا پورنا لاڈجنگ میں چلائے جارہے جسم فروشی کے اڈے پر میسورو کی این جی او ’وڈاناڈی سمستھا‘ کے کارکنان اور کدری پولیس نے مشترکہ چھاپہ مارتے ہوئے بنگلہ دیشی لڑکیوں سمیت 6خواتین کو بچالیا ہے۔

بھٹکل میں بچہ کو جنم دینے کے بعد جواں سال خاتون جاں بحق؛ گھروالوں نے لگایا ڈاکٹر پر لاپرواہی کا الزام

بھٹکل کے ایک پرائیویٹ اسپتال میں ایک خاتون بچہ کو جنم دینے کے بعد انتقال کرگئی۔انا للہ و انا الیہ راجعون ۔ گھروالوں کا الزام ہے کہ اس خاتون کی موت ڈاکٹر کی لاپراہی سے ہوئی ہے، مگر اُدھر اسپتال کے ایک ذمہ دارکا کہنا ہے کہ یہ ایک حادثاتی موت  ہے اور ڈاکٹر کبھی لاپراہ نہیں ہوتے۔

اسمبلی انتخابات کے بعد بھٹکل میں ہوئی پہلی KDB میٹنگ؛ نو منتخب رکن اسمبلی سُنیل نائک نے لیا سبھی آفسران کا کلاس

بھٹکل تعلقہ پنچایت ہال میں جمعرات کو منعقدہ تعلقہ کی سہ ماہی KDB میٹنگ میں  پہلی بار منتخب ہونے والے رکن اسمبلی سنیل نائک نے شرکت کرتے ہوئے تعلقہ کے مختلف مسائل  کو جاننے کی کوشش کی اور پرانے مسائل  کا اب تک حل نہ نکلنے پر آفسران کو تاکید کی کہ  وہ ایمانداری کے ساتھ اپنی ذمہ ...

انکولہ میں ٹمپو نے دی ایک اسکوٹر کو ٹکر؛ چھ سالہ بچی ہوئی راہی جنت؛ والدین شدید زخمی

  ایک چھ سالہ معصوم بچی اُس وقت راہی جنت ہوگئی جب ایک تیز رفتار مہیندرا ٹمپو نے  ایک اسکوٹر کو روند ڈالا جس پر یہ بچی اپنے والدین کے ساتھ سفر کررہی تھی۔ حادثہ انکولہ  تعلقہ کے مادن گیری میں جمعرات کی شام کو پیش آیا۔