کاروار: ماہی گیر مشینی کشتیوں اور انجن کی جانچ :غیر حاضر ہونے پر رجسٹریشن منسوخ

Source: S.O. News Service | By Abu Aisha | Published on 11th October 2018, 7:02 PM | ساحلی خبریں |

کاروار:11/اکتوبر(ایس اؤ نیوز) اترکنڑا ضلع میں مچھلی شکار کے لئے رعایتی نرخ پر مٹی کا تیل (کیروسین)حاصل کرنے والے مشینی ماہی گیرکشتیوں کی 23اکتوبر کی صبح 9بجے سے شام 6بجے تک جانچ کئے جانے کے متعلق محکمہ ماہی گیر ی کے  نائب ڈائرکٹر کاروار نے اطلاع دی ہے۔

محکمہ کی طرف سے جاری کردہ پریس ریلیز میں کہا گیا ہے کہ ماہی گیر کشتی کے مالکان اپنی  ملکیت والی مشینی بوٹ اورکشتی کا انجن جانچ مرکز پر حاضر کرنا ہے، اگر کوئی حاضر نہیں ہوتاہے اور جن کی  کشتیاں بہتر حالت  میں نہیں ہیں ان کی رجسٹریشن اور رعایتی قیمت والے مٹی کا تیل کی منظوری رد کئے جانے کی بات کہی گئی ہے۔ ضلع میں جن مراکز پر کشتیوں کی جانچ ہوگی اس کی تفصیل اس طرح ہے۔

بھٹکل میں منڈلی بیچ۔ تنگنگنڈی بندرگاہ، مرڈیشور بیچ۔ہوناور میں ٹونکا کاسرکوڈ(بندر)، منکی (کوڈی /بیچ)۔ کاروار ماہی گیر نائب کمشنر کاروار دفتر کے سامنے والے بیچ، ماجالی بیچ(گوٹنی باگ)، مدگا(بیچ)۔ انکولہ میں ہارواڑ (سرکاری لوئر پرائمری اسکول کے سامنے والے بیچ)اورکمٹہ میں ونلی بیچ، تڈدی بندرگاہ ، الویدنڈے ،شنی ہلتومراکز پر مشینی کشتیوں اور انجن کی جانچ ہوگی۔ ا س سلسلے میں زائد معلومات کے لئے کاروار ماہی گیر دفتر ، انکولہ ، کمٹہ ، ہوناو ر اور بھٹکل میں ماہی گیر دفاترسے رابطہ کرنے کی اپیل کی گئی ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

ایران میں گرفتار اُترکنڑا کے ماہی گیروں کی فوری رہائی کا مطالبہ کرتے ہوئے کرناٹکا این آر آئی فورم کا دبئی میں ہندوستانی سفارت کار سے ملاقات

  ریاست کرناٹک کے ضلع اُترکنڑا کے 18 ماہی گیروں کی ایران میں گرفتاری کے بعد اُن کی رہائی کی کوششیں تیز ہوگئی ہیں۔ اس تعلق سے تازہ اطلاع یہ ہے کہ  دبئی میں موجود ماہی گیروں کے رشتہ داروں نے  کرناٹکا این آر فورم کے  اہم ذمہ دار اور قائد قوم جناب ایس ایم سید خلیل الرحمن صاحب سے ...