کاروار:معطل پولس عملہ کی طرف سے حملہ اور ہراسانی :ایس پی کو سونپی شکایت

Source: S.O. News Service | By Abu Aisha | Published on 18th May 2017, 6:37 PM | ساحلی خبریں |

کاروار:18/مئی (ایس اؤنیوز)کمٹہ تعلقہ گوکرن کے ہیرے گتی کے مکین شانتارام پربھو نے ضلع ایس پی دفتر میں شکایت سونپتے ہوئے مطالبہ کیا ہے کہ ’’محکمہ کی طرف سے حملہ کے الزام میں معطل کئے گئے 2پولس والے دوبارہ ہم پر زور زبردستی اورحملہ کی کوشش کررہے ہیں ہمیں اس سلسلے میں تحفظ فراہم کیا جائے ‘‘۔

گوکرن ہیرے گتی کا پولس عملہ وہاں کے ٹول ناکہ پر رات کے اوقات میں سواریوں کو روک دستاویزات کی جانچ کرتے ہیں ، سواریوں کے تمام معاملے کی تفصیل یوں ہے کہ شکایت کردہ شانتا رام پربھو نے 9اپریل کو ٹول ناکہ پر پولس ہراسانی کو لے کر پولس کنٹرول روم 100سے رابطہ کرکے شکایت درج کی تھی کہ ٹول ناکہ پر کاغذات ٹھیک ہونے کے باوجود رقم کے لئے ستایا جاتاہے۔اطلاع پاتے ہی کنٹرول روم عملے نے راست طورپر ٹول ناکہ پر رقم وصول کرنےو الے پولس عملےسے رابطہ کرکے شانتارام پربھوسے فون پر ہوئی بات چیت کی تفصیل بتائی ۔ ٹول ناکہ پولس کو اس کی اطلاع ملتے ہی پولس عملہ موہن گوڈا، نتیا، 108ایمبولنس کے ڈرائیور اور ایک فاریسٹ عملہ نے راتوں رات شانتارام کے گھرپہنچ کر انہیں، ان کے والد ، بیوی پر حملہ کرتے ہیں۔ شانتارام ناممکن کو ممکن میں بدل کراپنی کوششوں سے پولس تھانے میں پولس عملے کے خلاف شکایت درج کرتے ہیں، کیس کے مطابق پولس موہن گوڈا اور نتیا کو معطل کیا جاتاہے۔ واقعہ کے ایک ماہ بعد پھر ایک بار گھر پہنچ کر آپسی رضامندی کی بات کہتے ہوئے کیس واپس لینے کی اپیل کرتے ہیں۔ پولس عملے کی بات سے جب گھر والے انکار کئے تو مشتعل پولس عملہ نے گھر کے بلب وغیرہ توڑ پھوڑکرکے گالی گلوج کرتےہوئے بے عزت کرنے کے متعلق شکایت دی تھی۔ بدھ کو ایس پی دفتر میں دی ہوئی شکایت میں شانتا رام پربھو اور ان کی بیوی نے کہا ہے کہ معطل شدہ پولس عملہ موہن گوڈا اور نتیاسے ہماری جان کو خطرہ ہےہمین روزانہ ان سے خوف محسوس ہورہاہے، اس لئے ان کی فوری گرفتاری ہو اگر انہیں گرفتار نہیں کیا گیا تو ہم خود اپنے آپ کو ہلاک کرلیں گے ۔ اس موقع پر اس جوڑے کا کاروار کے سماجی کارکن مادھو نایک نے ان کا تعاون کیا اور ضلع ایس پی دفتر پہنچ کر ڈی وائی ایس پی، جی ٹی نائک کو شکایت دی۔

جی ٹی نائک انہیں تیقن دیا کہ وہ ان کی شکایت اعلیٰ افسران تک پہنچائیں گے اور سماجی کارکن مادھو نایک نے وہیں سے ایڈیشنل ایس پی اور آئی جی پی کو فون سے رابطہ کرتے ہوئے کارروائی کی اپیل کی۔

ایک نظر اس پر بھی

بھٹکل رکن اسمبلی کی کار روک کر بی جےپی کارکنان نے کی نعرے بازی

پیر کو جب دوحریف سیاسی پارٹیوں کے امیدوار پرچہ نامزدگی داخل کرنےکے دوران کچھ انہونی واقعات پیش آئے ۔ کانگریس امیدوار منکال وئیدیا اے سی دفتر میں پہلے پہنچ کر اپنا پرچہ داخل کرنےمیں مصروف تھے تو اسی وقت بی جے پی امیدوار سنیل نایک بھی اپنےلیڈران کے ساتھ پرچہ داخل کرنے کے لئے ...

بھٹکل بی جےپی میں عدم اطمینانی کا دور : امیدوار کے پرچہ نامزد گی کے دوران اہم اور سنئیر لیڈران غائب

پیر کو بی جے پی امیدوار سنیل نائک جب پرچہ نامزدگی کے لئے ہزاروں حمایتوں کے ساتھ روڈ شو کرتے ہوئے نکلے تو سابق وزیر اور بی جے پی لیڈران شیوانند نائک، سابق رکن اسمبلی جے ڈی نائک، بھٹکل کے ہندو برانڈ لیڈر ،بی جےپی ضلع نائب صدر گوند نائک کا نظر نہیں آنااورپروگرام کے بالکل آخر میں ...

بھٹکل رکن اسمبلی منکال وئیدیا اور بی جے پی امیدوار سنیل نائک دونوں کروڑوں جائیداد کے مالک

ریاست کے مختلف مقامات پر وزراء اور ارکان اسمبلی کی جائیداد میں دوگنا ، تگنا اضافہ ہواہے تو بھٹکل کے رکن اسمبلی منکا ل وئیدیا اپنی ذاتی سواریوں ، ڈامبر پلانٹ، ٹپر ، ہٹاچی وغیرہ کو فروخت کرتے ہوئے اپنی جائیداد میں 57،85410 روپئے کا اضافہ کر لیا ہے۔

اننت کمارہیگڈے کو فون پر ملی جان سے مارنے کی دھمکی۔سرسی پولیس اسٹیشن میں شکایت درج

مرکزی وزیر برائے اسکل ڈیولپمنٹ اننت کمار ہیگڈے کو مبینہ طور پرکسی نے انجان نمبر سے فون کرکے جان سے مارنے کی دھمکی دی ، جس کے تعلق سے اننت کمار کے پرسنل اسسٹنٹ سریش شیٹی نے سرسی ٹاؤن پولیس اسٹیشن میں شکایت درج کروائی ہے۔

بھٹکل میں کانگریس کی طرف سے منکال وئیدیا اوربی جے پی کی طرف سے سنیل نائک نے داخل کیا پرچہ نامزدگی

کرناٹکا ودھان سبھا انتخابات کے لئے پرچہ نامزدگی داخل کرنے کے لئے آخری تاریخ 24/ اپریل ہے اور آج پیر کو دو اہم سیاسی حریف پارٹیوں کے طرف سے پرچہ نامزدگی داخل کی گئی ہے۔ کانگریس کی طرف سے آج منکال وئیدیا نے اپنا پرچہ نامزدگی داخل کیا تو بی جے پی کی طرف سے سُنیل نائک نے  سینکڑوں ...