اترکینرا کے رکن پارلیمان عوام کو ملے نہ ملے، لیکن کم سے کم ان کا دفتر تو کھلا رہے : دفتر بند دیکھ کر یمونا گاؤنکر مایوس

Source: S.O. News Service | By Abu Aisha | Published on 10th January 2018, 9:04 PM | ساحلی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

 کاروار:10/ جنوری (ایس اؤنیوزدکشن کنڑا آنگن واڑی ملازمین سنگھا کی ضلع صدر یمونا گاؤنکر نے پریس ریلیز کے ذریعے جانکاری دی ہے کہ ہم لوگ یعنی آنگن واڑی ملازمین سنگھا کےعہدیداران اور ممبران اپنی مانگوں کو لےکر جب مرکزی اسکل اینڈ ڈیولپمنٹ وزیر اننت کمار ہیگڈے کی کاروار میں واقع آفیس پہنچے تو دفتر کے دروازے پر قفل دیکھ کر تعجب ہوا اور سخت افسوس بھی ہوا کیونکہ  پتہ چلا کہ  پچھلے 15دنوں سے دفتر بند پڑا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ہمیں بالاخر  اپنی  مانگوں کو دروازے کےنیچے سے اندر پھینک کرواپس لوٹنا پڑا۔

گاؤنکر نے بتایا  کہ سنگھا کی طرف سے اب سرسی دفتر جا کر اس اپیل کی رسیوڈ کاپی لانے کا فیصلہ کیا گیا ہے، ساتھ ہی ساتھ ہم نے سوچا ہے کہ ضلعی مرکز میں قائم وزیر کے دفتر میں کارگزاری کی درخواست دے کر آئیں گے۔

انہوں نے کہا کہ اُترکنڑا  علاقہ کے عوام کو مرکزی وزیر نہیں ملتے ہیں، یہ عام شکایتیں پہلے سے  تھیں، مگر  کم سے کم ان کادفتر کھلا رہنا چاہئے تھا، مگر وہ بھی بند پڑا ہے۔ انہوں نے مزید بتایا کہ ہم مطالبہ کریں گے کہ دفتر کو ہمیشہ کھلا رکھا جائے۔

یموناگاؤنکر نے اپنی مانگوں کےمتعلق جانکاری دیتےہوئے بتایا کہ ہماری مانگ ہے کہ آنگن واڑی ملازمین کو مرکز سے ملنے والی امداد بر وقت  ملے، مستفیدین کو راست نقد منتقلی اور پاکٹ غذا نہیں چاہئے ، لوک سبھا میں وزارت خواتین و اطفال کی طرف سے کہاگیا ہے کہ آنگن واڑی ملازمین کے مشاہیرہ میں اضافہ کیا گیا ہے، جس کو ہم نہیں مانتے ، موصوف وزیر سے درخواست ہے کہ وہ آنگن واڑی ملازمین کی طرف سے لوک سبھا میں مدعا پیش کرے، جس کے لئے ہم 17جنوری کو ان کے گھر پہنچ کر اپنے مانگوں کی لسٹ درخواست کی صورت میں دیں گے۔ اس دن ہماری درخواست قبول کرنے کے لئے دعوت دینے آج یہاں پہنچے ہوئے تھے تو دیکھتے ہیں کہ دفتر کا دروازہ ہی بند ہے۔ اس موقع پر آنگن واڑی ملازمین سنگھا کی ریاستی جنرل سکریٹری سنندا ایچ ایس، موہنی نمسیکر، للتا ہیگڈے ، لکشمی سدی ، شالنی کلمنے وغیرہ موجود تھے۔

ایک نظر اس پر بھی

سرسی میں پرکاش رائے کے خطاب کردہ اسٹیج کوبی جے پی نے گائے کے پیشاب سے کیاپاک !

’ہمارا دستور ہمارا فخر‘کے موضوع پر اداکار دانشور پرکاش رائے نے سرسی میں جس اسٹیج سے خطاب کیا تھااس مقام کو اور راگھویندرامٹھ کلیان منٹپ کے احاطے کو بی جے پی کارکنان نے گائے کے پیشاب سے پاک کرنے کی کارروائی انجام دی۔

مرڈیشور سرکاری ماڈل پرائمری اسکول میں سالانہ جلسہ

خانگی اسکولوں کی مقابلہ آرائی کے زمانےمیں بھی مرڈیشور کی سرکاری ماڈل ہائر پرائمری اسکول جس ترقی کی راہ پر گامزن ہے وہ قابل ستائش ہے۔اسکول میں سائنسی نمائش کا اہتمام، مختلف ثقافتی مقابلہ جات اور شاندار طریقے سے سالانہ جلسے کا انعقاد اسکول کے اساتذہ اور طلبا کی محنتوں کا نتیجہ ...

شمالی کینرا میں سیاسی تماشے کا ایک اور سین : کانگریس کے بعد آنند اسنوٹیکر نے بی جے پی کو بھی کیا الوداع۔ اب تھاماجے ڈی ایس کا دامن

ضلع شمالی کینرا میں آئندہ چند مہینوں میں درپیش اسمبلی الیکشن کے ڈرامے کا ایک اور سین سامنے آیا ہے۔ موصولہ رپورٹ کے مطابق کاروار انکولہ حلقے میں ٹکٹ کے ایک مضبوط دعویدار سمجھے جانے والے آنند اسنوٹیکرنے بھارتیہ جنتا پارٹی سے مستعفی ہوکر جنتا دل سیکیولر کا دامن تھام لیا ہے۔

حضرت ڈاکٹر علی ملپا مرحوم پر نقوش طیبات کے خصوصی شمارہ کا دار العلوم ندوۃ العلماء میں مولانا رابع حسنی ندوی کے ہاتھوں رسم اجراء

معھد الإمام حسن البناء شھید (بھٹکل) کی طرف سے نکلنے والا دو ماہی رسالہ نقوش طیبات نے اس بار  بانی و سابق صدر جامعہ اسلامیہ بھٹکل حضرت ڈاکٹر علی ملپا رحمۃ اللہ علیہ کی حیات و خدمات پرخصوصی شمارہ شائع کیا ہے، جس کا اجراء لکھنو میں  دارالعلوم ندوۃ العلماء لکھنو   کے ناظم ...

بھٹکل سرکاری اسپتال میں ایک بھی ڈاکٹر ڈیوٹی پر موجود نہ ہونے پر عوام اور مریض سخت برہم؛ احتجاج کی دھمکی کے بعددوسرے اسپتال کا ڈاکٹر پہنچا اسپتال

آج صبح سے بھٹکل سرکاری اسپتال میں ایک بھی ڈاکٹر موجود نہ ہونے کو لے کر مقامی عوام جو مریضوں کو لے کر اسپتال پہنچے تھے، سخت برہم ہوگئے اور اسپتال پر موجود نرس سمیت دیگر اسٹاف پر اپنا غصہ اُتارنے کی کوشش کی۔ اس موقع پر ڈیوٹی پر موجود نرس کو عوام نے آڑے ہاتھوں لیتے ہوئے  دس منٹ ...

سرسی میں پرکاش رائے کے خطاب کردہ اسٹیج کوبی جے پی نے گائے کے پیشاب سے کیاپاک !

’ہمارا دستور ہمارا فخر‘کے موضوع پر اداکار دانشور پرکاش رائے نے سرسی میں جس اسٹیج سے خطاب کیا تھااس مقام کو اور راگھویندرامٹھ کلیان منٹپ کے احاطے کو بی جے پی کارکنان نے گائے کے پیشاب سے پاک کرنے کی کارروائی انجام دی۔

بھٹکل سرکاری اسپتال میں ایک بھی ڈاکٹر ڈیوٹی پر موجود نہ ہونے پر عوام اور مریض سخت برہم؛ احتجاج کی دھمکی کے بعددوسرے اسپتال کا ڈاکٹر پہنچا اسپتال

آج صبح سے بھٹکل سرکاری اسپتال میں ایک بھی ڈاکٹر موجود نہ ہونے کو لے کر مقامی عوام جو مریضوں کو لے کر اسپتال پہنچے تھے، سخت برہم ہوگئے اور اسپتال پر موجود نرس سمیت دیگر اسٹاف پر اپنا غصہ اُتارنے کی کوشش کی۔ اس موقع پر ڈیوٹی پر موجود نرس کو عوام نے آڑے ہاتھوں لیتے ہوئے  دس منٹ ...