کاروار:ضلع کی 662مندروں نے سالانہ آڈیٹ رپورٹ نہیں سونپی :نئی کمیٹیوں کو پرانی کمیٹیاں اقتدار منتقل کرنے تیار نہیں

Source: S.O. News Service | By Abu Aisha | Published on 16th June 2017, 10:34 PM | ساحلی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

کاروار:16/جون (ایس اؤنیوز)ریاستی حکومت کے مجرائی محکمہ کے زیر نگرانی والے ضلع کے 662مندروں میں سے کسی مندر انتظامیہ نے اصول وضوابط کے مطابق اپنی سالانہ آمدنی اور بجٹ محکمہ کو نہیں سونپاہے، انہی وجوہات کی بنا انتظامیہ کمیٹی کی تشکیل کے لئے قدم اٹھایا گیا ہے، مندر کمیٹی اور انتظامیہ کمیٹی کے درمیان رسہ کشی شروع ہوگئی ہے ، مندر کمیٹی تشکیل کو لے کر بنواسی اور کمٹہ کانچیکا مندر کی پرانی انتظامیہ نے عدالت کا دروازہ کھٹکھٹانے کی تیاری میں ہیں۔

ضلع سے شائع ہونے والے کنڑا روزنامہ کے فرنٹ پیچ پر شائع ہوئی رپورٹ کے مطابق کرناٹکا ہندو دھارمک ادارے قانون ترمیم 2011کی دفعہ 35،36،37اور 38کے تحت مجرائی محکمہ کو ہر مندر کو اپنی سالانہ آمدنی اور بجٹ پیش کرنا لازمی ہے۔ اپنی آڈیٹ رپورٹ کے ساتھ سالانہ آمدنی کا 10فی صد حصہ حکومت کو اداکرنا ہے ۔ لیکن ضلع کے 662مندروں میں سے کسی مندر نے بھی ابھی اصول کے مطابق رپورٹ نہیں سونپنے کی اطلاع محکمہ کے افسران سے دی ہے۔ اسی کو بنیاد بنا کر سرکار مندر وں کے لئے انتظامیہ کمیٹی تشکیل دے رہی ہے، ضلع میں بی گریڈ کے 3مندروں کے لئے اب تک کمیٹیوں کی تشکیل کی جاچکی ہے۔ بی گریڈ کے 4اور سی گریڈ کے 8منادر کی کمیٹیوں کو تشکیل دینے کاکام جاری ہے۔ مندروں کی سالانہ آمدنی کےتحت اے ، بی اور سی گریڈ کے مطابق تقسیم کیا گیا ہے۔ ضلع میں سالانہ 25لاکھ روپیوں سے زیادہ آمدنی والے اے گریڈ کے 6مندر، 10لاکھ روپیوں سے زائداور25لاکھ روپیوں سے کم آمدنی والے بی گریڈکے 9مندر اور 10لاکھ روپیوں سے کم آمدنی والے سی گریڈکی 647 مندریں ہونے کی اطلاعا ت موصول ہوئی ہیں۔

سرکاری کی طرف سے مندر کی دیکھ بھال کے لئے تشکیل دی جانےو الی کمیٹیوں کے خلاف پرانی کمیٹیوں کے ممبران سخت ناراض ہیں، ضلع کچھ مندریں اپنا کام ٹھیک ٹھاک کرنے کے بعد بھی کمیٹی بنانے پر اعترا ض جتایا ہے۔ سرکاری قانون کے خلاف اتراکنڑا ضلع دھارمک مہا منڈل ہائی کورٹ میں رٹ داخل کرتے ہوئے کامیابی حاصل کی تو سرکارنے ہائی کورٹ فیصلے کے خلاف سرپم کورٹ میں رٹ داخل کی ہے جہاں سپریم کورٹ نے ہائی کورٹ کے فیصلے پر حکم امتناعی جاری کیاہے۔

معاملے کے سلسلے میں اترکنڑا ضلع ڈپٹی کمشنر اور ضلع دھارمک پریشد کے صدر ایس ایس نکول نے کہا ہے کہ ضلع کی ایک بھی مندر نے ابھی تک اپنی سالانہ رپورٹ نہیں سونپی ہے، بھگتوں کی طرف سے بھگوان کے لئے جو تحفے تحائف، عطیہ جات ادا کئے جاتے ہیں ان کا صحیح استعمال ہونا چاہئے، ان کا غلط استعمال نہ ہو۔ مندر انتظامیہ کی نگرانی کے خلاف جب شکایتیں موصول ہونے معاملے کی مکمل جانچ پڑتال کرنے کے بعد ہی انہی منادر کے لئے کمیٹیاں تشکیل دئیے جانے کی بات کہی۔

 

ایک نظر اس پر بھی

کاروار:ضلع میں اب تک کل 6امیدوار وں نے پرچہ نامزدگی داخل کی

اترکنڑا ضلع کے مختلف ودھان سبھا حلقوں سے جمعہ کے دن کل 6امیدواروں نے اپنا پرچہ نامزدگی داخل کیا۔ ضلع میں بی جےپی کی طرف سے 1، کانگریس 1اور جے ڈی ایس کی طر ف سے 1امیدوار نے اپنی نامزدگی کا پرچہ داخل کیاہے تو 3آزاد امیدواروں نے انتخاب لڑنے کےلئے پرچہ داخل کیا ہے۔

کاروار: انتخابات کے لئے نامزد عملہ کے لئے 22اپریل کو تربیت گاہ : شرکت لازمی ورنہ کارروائی : ڈی سی

ریاستی ودھان سبھا انتخابات2018 کے پیش نظرپولنگ بوتھ عملے کی نشاندہی کرتے ہوئے انہیں تقررنامہ ارسال کیاگیا ہے۔تقررشدہ افسران اور عملے کے لئے 22اپریل کو متعلقہ تعلقہ جات کےمراکز میں انتخابی تربیت گاہ میں حاضری لازمی قرار دی گئی ہے۔ اس سلسلے میں کوئی بھی عملہ غفلت نہ کرنے کی تاکید ...

بغاوت کی شدت کے دوران بی جے پی نے کمٹہ میں دیا دینکر شٹی کو ٹکٹ ؛ کمٹہ بی جے پی امیدوار کا مسئلہ بن گیا تھا اننت کمار کے پاؤں کی زنجیر

بھارتیہ جنتا پارٹی کے اندراسمبلی ٹکٹ کے مسئلے پر جو اندرونی بغاوت ہے وہ ضلع شمالی کینرا میں اب سڑک پر اترتی دکھائی دے رہی ہے۔ ضلع میں اپنی پسند کے امیدواروں کو ٹکٹ دلانے اور اپنی قیادت کا پرچم لہرانے کا منصوبہ بنائے ہوئے مرکزی وزیر اننت کمار ہیگڈے کے لئے کمٹہ اسمبلی سیٹ کا ...

بھٹکل ودھان سبھا حلقہ سے ایرا درگپا نائک نے آزادامیدوار کےطورپر پرچہ داخل کیا

20اپریل بروز جمعہ کو بھٹکل ودھان سبھا حلقہ سے چوتھنی کے مکین ایر ا درگپا نائک نے آزاد امیدوار کی حیثیت سے پرچہ نامزدگی داخل کئے۔ امیدوار ایرا نائک کی طرف سے اے سی دفتر میں داخل کئے افی ڈیوٹ کے مطابق تجارت سے منسلک ہیں اور ایس ایس ایل سی تک تعلیم حاصل کی ہے۔

بھٹکل: ایل ایس نائک نے لگایا کانگریس پر نظر اندازی کا الزام :پریس کانفرنس کے فوری بعد یوٹرن

گذشتہ کئی سالوں سے ہم لوگ کانگریس کے وفادار سپاہی کی طرف پارٹی استحکام میں جٹے ہوئے ہیں مگر حالیہ دنوں میں ہمیں نظر انداز کرتے ہوئے کام کئے جانے کا تعلقہ پنچایت سابق صدر ایل ایس نائک نے الزام لگایا ہے۔

بھٹکل: ایل ایس نائک نے لگایا کانگریس پر نظر اندازی کا الزام :پریس کانفرنس کے فوری بعد یوٹرن

گذشتہ کئی سالوں سے ہم لوگ کانگریس کے وفادار سپاہی کی طرف پارٹی استحکام میں جٹے ہوئے ہیں مگر حالیہ دنوں میں ہمیں نظر انداز کرتے ہوئے کام کئے جانے کا تعلقہ پنچایت سابق صدر ایل ایس نائک نے الزام لگایا ہے۔

رابطہ ملت نے کی، کٹھوعہ اور اناؤ اجتماعی آبروریزی اور قتل کی مذمت ؛ اُترکنڑا ڈپٹی کمشنر کو دیا گیا میمورنڈم

جموں کے کٹھوعہ میں خانہ بدوش قبیلہ کی 8سالہ کمسن معصوم بچی کی وحشیانہ آبروریزی اور قتل ، اترپردیش کے اناؤ میں خاتون کی اجتماعی عصمت دری کی کڑی مذمت کرتےہوئے متاثرین سے انصاف کرنے اورجمہوری نظام میں عوام کا اعتماد بحال رکھنے کےلئے ضروری اقدامات کا مطالبہ لے کر اترکنڑا ضلع ...