سعودی سفیر برائے ہند سعود الساطی کی وزیراعلیٰ سے ملاقات، بنگلورو میں سعودی قونصل خانے کے قیام کے لئے حکومت تعاون کرے گی: کمار سوامی

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 5th December 2018, 1:10 AM | ریاستی خبریں |

بنگلورو۔4؍دسمبر(ایس او نیوز) سعودی عرب کے سفیر برائے ہند ڈاکٹر محمد سعود الساطی نے آج شہر میں وزیراعلیٰ ایچ ڈی کمار سوامی سے ملاقات کی اور مختلف امور پر تبادلۂ خیال کیا۔

سینئر کانگریس رہنما ورکن اسمبلی جناب روشن بیگ کے ہمراہ ڈاکٹر سعود الساطی نے دفتر وزیر اعلیٰ پہنچ کر وزیراعلیٰ ایچ ڈی کمار سوامی سے یہ ملاقات کی۔ اس ملاقات کے دوران سعودی سفیر نے کرناٹک اور سعودی عرب کے درمیان دیرینہ تجارتی اور روایتی مراسم کے بارے میں تبادلۂ خیال کیا۔ بات چیت کے دوران بنگلور میں سعودی عرب کی طرف سے ایک قونصل خانے کے قیام کی تجویز کے بارے میں بھی گفتگو ہوئی۔

سعودی سفیر نے بتایاکہ کافی عرصے سے جناب روشن بیگ اس بات کے لئے کوشاں ہیں کہ بنگلور میں سعودی سفارت خانے کی ایک شاخ قونصل دفتر کی شکل میں قائم کی جائے تاکہ مکہ اور مدینہ کے مقامات مقدسہ تک پہنچنے کی آرزو رکھنے والے زائرین اور تجارت وملازمت کے لئے سعودی عرب کا رخ کرنے والے امیدواروں کو سعودی ویزا حاصل کرنے میں آسانی ہوسکے۔ حالانکہ جناب روشن بیگ کی اس کوشش کو کافی حد تک کامیابی مل چکی ہے اور سعودی سفیر برائے ہند نے بنگلور میں قونصل خانہ قائم کرنے پر کافی عرصے پہلے ہی اتفاق کرلیا ہے۔سعودی وزارت خارجہ کی منظوری کے فوراً بعد بنگلور میں یہ قونصل خانہ قائم کردیا جائے گا۔

وزیراعلیٰ کمار سوامی کے علم میں جب یہ تفصیلات لائی گئیں تو وزیراعلیٰ نے اس قونصل خانے کے قیام کے لئے ریاستی حکومت کی طرف سے ہر ممکنہ تعاون کا تیقن دیا اور کہاکہ سعودی قونصل خانے کے بنگلور میں قیام کی بدولت کرناٹک کے شہریوں کو جو فائدہ ہوگا اس کے لئے ریاستی حکومت سعودی حکام کی شکر گزار رہے گی۔ اور یہ کوشش کی جائے گی کہ قونصل خانے کے قیام کے لئے بہتر سے بہتر سہولتیں ریاستی حکومت کی طرف سے مہیا کرائی جائیں۔

اس موقع پر سعودی سفیر نے وزیراعلیٰ کو یقین دلایا کہ بنگلور میں سعودی قونصل خانے کے قیام کے لئے وہ پوری کوشش کریں گے اور اس بات کو یقینی بنائیں گے کہ جلد ازجلد شہریان بنگلور کا دیرینہ خواب کہ یہاں پر سعودی عرب کا قونصل خانہ قائم ہو شرمندۂ تعبیر ہوجائے۔ اس موقع پر ڈاکٹر سعود الساطی نے حجاج کرام کی سہولت کے لئے سعودی حکومت کی طرف سے کئے جانے والے انتظامات اور ان کو بہتر بنانے کے لئے وہاں کی حکومت کی سعی کے بارے میں بھی وزیراعلیٰ سے بات چیت کی اور کہاکہ ہندوستان سے سالانہ تقریباً دیڑھ لاکھ حجاج حج کی سعادتوں سے سرفراز ہوتے ہیں جبکہ زیارت وعمرہ کا سفر سال بھر چلتا رہتاہے، اس حساب سے سالانہ لاکھوں کی تعداد میں زائرین ہندوستان سے سعودی عرب کا سفر کرتے ہیں۔ خاص طور پر بنگلور میں بڑی تعداد میں زائرین عمرہ کی روانگی کو دیکھتے ہوئے یہاں پر ویزوں کے اجراء کے لئے ایک مرکز کی ضرورت کافی شدت سے محسوس کی جارہی ہے۔ اس سلسلے میں جناب روشن بیگ کی طرف سے متعدد بار نمائندگی ہوئی ہے، اور اس ضمن میں سعودی سفیر نے جناب روشن بیگ کے خدمات کی ستائش کی اور کہاکہ وہ چاہتے ہیں کہ جلد از جلد جناب روشن بیگ کی اس کوشش کو کامیابی ملے۔

وزیراعلیٰ نے بھی توقع ظاہر کی کہ سعودی حکومت کی طرف سے جلد ہی بنگلور میں قونصل خانے کا قیام کیا جائے گا۔ 

ایک نظر اس پر بھی

توہم پرستی کے مخالفین کومذہب دشمن قراردیاجارہاہے: ملیکارجن کھرگے

پارلیمان میں کانگریسی رہنما ملیکارجن کھرگے نے کہاکہ آج سماج میں توہم پرستی کی مخالفت کرنے والوں کومذہب کے دشمن کے طورپر پیش کیاجارہاہے ،یہاں کونڈجی بسپاہال میں اکھل بھارت شرن ساہتیہ پریشد اورماچی دیواسمیتی کی جانب سے اشوک دوملور کی تین مختلف زبانوں میں تحریرکردہ کتابوں ...

22دسمبر کو کابینہ میں ضرور توسیع ہوگی: دنیش گنڈو راؤ

پردیش کانگریس کمیٹی ( کے پی سی سی ) صدر دنیش گنڈو راؤ نے بتایا کہ 22دسمبر کوریاستی کابینہ میں توسیع ضرور ہوگی۔کے پی سی سی دفتر میں نامہ نگاروں سے انہوں نے کہا کہ کابینہ میں توسیع سے متعلق وزیراعلیٰ ایچ ڈی کمار سوامی ،نائب وزیراعلیٰ ڈاکٹر جی پرمیشور سمیت دونوں پارٹیوں کے لیڈروں ...

بی جے پی الزام عائد کرنے سے پہلے سی اے جی رپورٹ کاجائزہ لے: سدرشن

کے پی سی سی نائب صدر قانون سازکونسل کے سابق چیرمین وی آر سدرشن نے کہاکہ بی جے پی رہنما ؤں کو سابق وزیراعلیٰ سدارامیا کے دورمیں 35ہزار کروڑ روپئے کاگھپلہ ہونے کالزام لگانے سے پہلے سی اے جی رپورٹ کاجائزہ لینا چاہئے ۔

بلگام :پروفیسر خواجہ فرازؔبادامی کو  کرناٹکا یونیورسٹی دھارواڑ سے فن عروض کے موضوع پر پی ایچ ڈی کی سند تفویض  

گوکاک  جے ایس ایس ڈگری کالج کے شعبہ اردو کے صدر پروفیسر خواجہ بندہ نواز انڈیکر فرازؔبادامی کو کرناٹکا یونیورسٹی دھارواڑ کی طرف سے  ’’اردو عروض اور ہندی پنگل کا تقابلی مطالعہ ‘‘کے موضوع پر ڈاکٹر آف فلاسفی (پی ایچ ڈی ) کی سند تفویض کی گئی ہے۔

بنگلور میں منعقدہ APCR کارگاہ میں دہشت گردی کے نام پر بے گناہوں کی گرفتاریوں پر سخت تشویش؛سابق چیف جسٹس اور معروف وُکلا نے کی، یو اے پی اے کی سخت مخالفت

اسوسی ایشن فور پروٹیکشن آف سیول رائٹس (اے پی سی آر) کرناٹک چاپٹر کے زیراہتمام ریاستی سطح کے ورکشاپ میں دہشت گردی کے نام پر بے گناہ مسلمانوں کی گرفتاریوں پر سخت تشویش کااظہار کیا گیا اور سابق چیف جسٹس آف انڈیا مسٹر وینکٹ چلیّا سمیت معروف وُکلاء نے یو اے پی اے اسپیشل قانون کی سخت ...