کانگریس نے بی جے پی ہائی کمانڈ پر لگایا کرناٹک میں اقتداراُلٹنے کی کوشش کا الزام: ارکان اسمبلی ان کے کھوٹے سکوں پر بکنے والے نہیں

Source: S.O. News Service | By Jafar Sadique Nooruddin | Published on 9th February 2019, 11:33 PM | ریاستی خبریں | ملکی خبریں |

نئی دہلی:9 /فروری (ایس اونیوز /آئی این ایس انڈیا)’ کرناٹک میں ارکان  اسمبلی کو رقم پیش کی جاتی ہے ، سے منسلک بی جے پی کے سینئر لیڈر بی ایس یدی یورپا کی گفتگو پر مبنی آڈیو ٹیپ سامنے آنے کے بعد کانگریس نے سنیچر کو الزام لگایا کہ وزیر اعظم نریندر مودی، بی جے پی صدر امت شاہ اور یدی یورپا ریاست میں ایچ ڈی کمار سوامی کی قیادت والی حکومت کا  تختہ پلٹنے کی کوشش کر رہے ہیں۔

پارٹی نے یہ بھی کہا کہ یہ مسئلہ پیر کو پارلیمنٹ میں اٹھایا جائے گا۔ کانگریس کے مطابق  اس معاملے میں سپریم کورٹ کو بھی نوٹس لینا چاہئے کیونکہ’’ ٹیپ‘‘ میں اس کا ذکر کیا گیا ہے۔صوبائی کانگریس کے سیکرٹری جنرل اور کرناٹک انچارج کے سی وینو گوپال نے صحافیوں کو بتایا کہ:’ کرناٹک سے کل جو خبر آئی ہے اس سے پورا ملک سکتہ کی حالت میں ہے ۔ وزیر اعلیٰ کمار سوامی نے آڈیو ٹیپ جاری کرکے ریاست کی منتخب حکومت کو غیر مستحکم کرنے کی مودی اور بی جے پی صدر کی کوششوں کی قلعی کھول کر رکھ دی ہے ۔ انہوں نے دعویٰ کیا کہ :’ میں نے آڈیو کلپس کی سماعت بھی کی ہے ‘۔ یدی یورپا ایک ایک ممبر اسمبلی کو 10 کروڑ روپے دینے کی پیشکش کر رہے ہیں۔ ایک رکن اسمبلی کو وزیر کے عہدے اور کچھ بورڈس کی ذمہ داری پیش کرنے کی بات کرر ہے ہیں ، وہ خو د مودی اور امت شاہ کا حوالہ دے رہے ہیں۔ وینو گوپال نے پوچھا کہ :’ بی جے پی کس طرح کی سیاست پر اتر آئی ہے؟ ممبران اسمبلی کو دینے کے لئے بی جے پی کے پاس سینکڑوں روپے کہاں سے آئے ہیں؟ انہوں نے کہا کہ:’ایسا کوئی پہلی بار نہیں ہوا ہے۔ماضی میں بھی بی جے پی خرید و فروخت کے ذر یعہ حکومت کو غیر مستحکم کرنے کی کوشش کر چکی ہے۔ اس طرح کی سیاست کی سخت مذمت کرنی چاہئے‘۔ انہوں نے کہا کہ چاہے کچھ ہو جائے، ہمیں پورا یقین ہے کہ کرناٹک کی حکومت برقرار رہے گی، کوئی ممبر اسمبلی ان کے ہاتھوں فروخت ہونے والا نہیں ہے ۔انہوں نے کہا کہ ہم پوچھنا چاہتے ہیں کہ وزیر اعظم اس معاملے میں کارروائی کریں گے یا نہیں ؟ پارٹی کے مرکزی ترجمان رندیپ سرجے والا نے الزام لگایا کہ مودی ، امت شاہ اور یدی یورپا سمیت تینوں نے ملک میں آئین اور جمہوریت کو روندکر رکھ دیا ہے ،یہ گینگ آف تھری بن گئے ہیں جن کا کسی طرح اقتدار حاصل کرنا ہی واحد مقصد ہے۔ انہوں نے کہا کہ اس ٹیپ کے ذر یعہ اب مودی اور امت شاہ کا سیاسی کردار سامنے آ گیا ہے ۔ گینگ آف تھری کرناٹک کی چنی ہوئی حکومت کو گرانا چاہتے ہیں۔ 200 کروڑ روپے میں 20 ممبران اسمبلی کو خریدنے کی کوشش کی گئی ہے،حتیٰ کہ سپریم کورٹ کو بھی مینج کرنے کی بات ہو رہی ہے۔انہوں نے سوال کیا کہ :’کیا سی بی آئی اور ای ڈی کی چھاپہ ماری یدی یورپا پر کروائیں گے؟‘ سر جے والا نے کہا کہ :’کیا ملک کے سپریم کورٹ کو ازخود سے نوٹس لے کر مودی ، بی جے پی صدر، یدی یورپا اور دوسرے متعلقہ لیڈروں کو نوٹس جاری نہیں کرنی چاہئے‘ ۔ 

ایک نظر اس پر بھی

کرناٹک: بی ایس پی ارکان اسمبلی کمارسوامی کے حق میں ووٹ کریں گے:مایاوتی

کرناٹک میں کانگریس اورجے ڈی ایس کی مخلوط حکومت رہے گی یا جائے گی اس کا فیصلہ آج ہو جائے گا ۔ برسر اقتدار اتحاد کے ارکان اسمبلی کو بی جے پی ٹوڑنے کی کوشش کر رہی ہے لیکن اس بیچ بی ایس پی سپریموں نے کہا ہے کہ اس کی پارٹی کے ارکان اسمبلی کمارسوامی حکومت کے حق میں ہی ووٹ ڈالیں گے ۔ یہ ...

مخلوط حکومت کی بقا کا سسپنس برقرار آج بھی اسمبلی میں تحریک اعتماد پر ووٹنگ کا امکان،باغیوں کو واپس لانے کیلئے سدارامیا کو وزیر اعلیٰ بنانے کی پیش کش

ریاست میں کانگریس جے ڈی ایس مخلوط حکومت کوبچانے کے لئے اتحادی جماعتوں کے قائدین کی کوششوں کا سلسلہ جاری ہے تو دوسری طرف اپوزیشن بی جے پی اس کوشش میں ہے کہ کسی طرح پیر کے روزتحریک اعتماد پر اسمبلی میں ووٹنگ ہو جائے لیکن خدشات ظاہر کئے جارہے ہیں