کرناٹک اسمبلی انتخابات انتخابی کمیشن وفد کی ریاستی افسروں سے ملاقات

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 10th January 2018, 12:34 PM | ریاستی خبریں |

بنگلورو،9؍جنوری(ایس او نیوز) ریاست کرناٹک میں اسمبلی انتخابات منعقد کرنے تیاریوں سے متعلق مرکزی انتخابی کمیشن کے وفد نے حکومت کرناٹک کے متعلقہ افسروں کے ساتھ آج تبادلہ خیال کیا۔ سینئر ڈپٹی انتخابی کمشنر امیش سنہا کی قیادت میں ریاست کرناٹک کے دورہ پر آئے 7رکنی وفد نے ریاست کی چیف سکریٹری کے رتنا پربھا اور ریاست کے دیگر سینئر افسروں سے ملاقات کرکے ان سے بات چیت کی۔ ریاست کے 3 روزہ دورہ کے دوران وفد کل 10 جنوری کو بھی سرکاری افسروں کے ساتھ تبادلہ خیال کرے گا ۔بروز جمعرات 11 جنوری انتخابی کمیشن کا وفد شہر میں سیاسی پارٹیوں سے ملاقات کرے گا۔ ذرائع کے مطابق ریاست میں اسمبلی انتخابات کی کارروائی ماہ مئی کے آخر تک مکمل ہوجانی چاہئے ۔ مئی 2013 میں کرناٹک میں ہوئے اسمبلی انتخابات میں کانگریس نے اکثریت حاصل کرکے اقتدار سنبھالا تھا۔کہا جارہا ہے کہ ریاست میں مئی کے پہلے ہفتہ میں اسمبلی انتخابات کے لئے پولنگ ہوگی ۔اعلیٰ انتخابی کمشنر کرناٹک کے دورہ پر آنے کے بعد انتخابات کی تاریخ طے ہوگی ۔ اعلیٰ انتخابی کمشنر کی آمد سے قبل وفد تیاریوں کا جائزہ لے کر رپورٹ انتخابی کمیشن کو پیش کرے گا ۔اس کے بعد ہی اعلیٰ انتخابی کمشنر تاریخ کا اعلان کریں گے لیکن ماہ مئی میں انتخابات ہونا طے ہے۔ کل 10 جنوری کو مختلف اضلاع کے ڈپٹی کمشنروں اور متعلقہ افسروں کے ساتھ کمیشن کا وفد تبادلۂ خیال کرے گا۔ ریاست میں منصفانہ انتخابات کو یقینی بنانے کمیشن نے متعلقہ افسروں کو چند ضروری ہدایات دی ہیں۔

ایک نظر اس پر بھی

اننت کمار ہیگڈے بیت الخلاء کی بدبو کی مانند

قومی شاعر کوئمپو کے خلاف دئے جانے والا مرکزی وزیر اننت کمار ہیگڈے کا بیان انتہائی مذموم ہے۔ اب وہ معاف کئے جانے کے بھی قابل نہیں رہے۔ یہ باتیں کانگریس کے ریاستی نگراں کا روینوگوپال نے کہیں ۔

جماعت اسلامی ہند کی’’حق وانصاف ‘‘ سہ روزہ کانفرنس

جماعت اسلامی ہند بنگلورو سٹی کے صدر وسہ روزہ کانفرنس کے کنوینر ڈاکٹربلگامی محمد سعد،سکریٹری شیخ ہارون اور بورڈآف اسلامک ایجوکیشن (بی آئی ای ) کے سکریٹری ریاض احمد نے مشترکہ اخباری کانفرنس کے دوران بتایا کہ جماعت اسلامی ہند بنگلورو میٹرو کے زیر اہتمام19؍تا 21؍جنوری سہ روزہ ...

کیا آنگن واڑی کارکن تمہارے گھر کے کتے سے بھی گئے گزرے ہیں؟ بنگلورو میں مرکزی وزیر اننت کمار کے دفتر کے سامنے احتجاج

نریندر مودی کی زیر قیادت مرکزی بی جے پی حکومت بیٹی بچاؤ،بیٹی پڑھاؤ کا نعرہ لگاتی ہے۔ ان دونوں منصوبوں کو حقیقی طور پر عملی شکل دینے والے آنگن واڑی،آشا اور مڈ ڈے میل کے کارکن ہیں۔اس کے باوجود ان کارکنوں کو نظرانداز کیا جارہاہے۔