اسمبلی کے لئے 59 نئے امیدواروں کا انتخاب بی جے پی کے 30، کانگریس کے 16 ، جے ڈی ایس کے 10اراکین اسمبلی منتخب

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 17th May 2018, 11:09 AM | ریاستی خبریں |

بنگلورو16 مئی (ایس او  نیوز) کرناٹک کے 15ویں اسمبلی کے لئے جو عام انتخابات ہوئے اس میں 59نئے اراکین اسمبلی کا انتخاب ہوا ہے ۔ پہلی مرتبہ یہ اراکین عوام کی خدمت کریں گے ۔ بی جے پی کے 104 امیدواروں میں سے 30نئے اراکین کا انتخاب ہوا ہے ۔ اسی طرح کانگریس سے 16، جے ڈی ایس سے 10 ، بی ایس پی سے ایک اور دیگر سے 2 اراکین اسمبلی پہلی مرتبہ منتخب ہوئے ہیں ۔ بتایا جارہا ہے کہ سابق وزیر اعلیٰ بی ایس ایڈی یورپا کے فرزند کو بی جے پی سے ٹکٹ نہ ملنے کے سبب وزیر اعلیٰ سدارامیا کے فرزند ڈاکٹر یتیندرا سدارامیا نے ورونا میں جیت حاصل کی ہے ۔ حیرت انگیز بات یہ ہے کہ جے ڈی ایس کا مضبوط قلعہ مانے جانے والے سابق وزیر اعظم ایچ ڈی دیوے گوڑا کے آبائی گاؤں ہاسن ضلع میں کئی سالوں کے بعد کنول کھلا ہے ۔ ہاسن سے نوجوان لیڈر پریتم گوڈا نے جیت حاصل کی ہے ۔ رکن پارلیمان کے ایچ منی اپا کی بیٹی روپا ششی دھر نے کامیابی حاصل کی ہے تو دوسری طرف سینئر آئی پی ایس افسر آئی جی پی ہیمنت نمبالکر کی بیوی انجلی نمبالکر نے خانہ پور اور سابق وزیر سرینواس پرساد کے داماد ہرش وردھن ننجن گڈھ حلقہ سے کامیابی حاصل کرکے پہلی مرتبہ ودھان سودھا میں داخل ہورہے ہیں۔ 

ایک نظر اس پر بھی

مڈبھیڑ میں مارے گئے سی آر پی ایف جوان امیش مہانگ کی لاش رشتہ داروں کے حوالے

نائب وزیراعلیٰ ڈاکٹر جی پرمیشور نے کہا ہے کہ بلگاوی کے متوطن سی آر پی ایف جوان امیش مہانگ نے جس دلیری کے ساتھ دہشت گردوں کا مقابلہ کرتے ہوئے موت کو گلے لگایا ہے ریاستی حکومت اس جوان کی قربانی کو سلام کرتی ہے،

متحدہ جدوجہد سے رام نگرم اور منڈیا میں کامیابی ممکن، کانگریس اور جے ڈی ایس کارکنوں سے کمار سوامی اور ڈی کے شیوکمار کا خطاب

وزیر اعلیٰ ایچ ڈی کمار سوامی اور وزیر برائے آبی وسائل ڈی کے شیوکمار نے آنے والے ضمنی انتخابات میں رام نگرم اسمبلی حلقے سے جے ڈی ایس امیدوار انیتا کمار سوامی اور منڈیا پارلیمانی حلقے سے جے ڈی ایس امیدوار ایل آر شیورامے گوڈا کو کامیاب بنانے کے لئے دونوں پارٹیوں کی طرف سے متحد ...

یکم نومبر سے سرکاری کام کاج صرف کنڑا میں : کمار سوامی

وزیر اعلیٰ ایچ ڈی کمارسوامی نے سخت ہدایت جاری کی ہے کہ یکم نومبر 2018سے ریاست کا تمام سرکاری کام کاج کنڑا میں ہوگا۔ کسی بھی فائل کو جو منظوری کے لئے سرکاری محکموں میں رہے گی کنڑا زبان میں ہی آگے بڑھایا جائے گا

مودی قومی رہنماؤں کو سیاسی فائدے کے لئے استعمال نہ کریں:ملیکارجن کھرگے

لوک سبھا میں کانگریس کے لیڈر ملیکارجن کھرگے نے کہاہے کہ جیسے جیسے انتخابات قریب آرہے ہیں وزیر اعظم مودی سردار ولبھ بھائی پٹیل ، سبھاش چندر بوس اور دیگر قائدین کا نام لے کر ملک کے عوام کو گمراہ کرنے کی کوشش میں لگے ہوئے ہیں۔

کے سی وینو گوپال کے خلاف جنسی ہراسانی کیس میں ایف آئی آر،اے آئی سی سی عہدے سے برطرف کرنے بی جے پی کامطالبہ

اے آئی سی سی جنرل سکریٹری اور کرناٹک میں کانگریس امور کے انچارج کے سی وینو گوپال کے خلاف جنسی ہراسانی کے ایک کیس میں کیرلا پولیس کی کرائم برانچ نے مقدمہ درج کرلیا ہے۔