کرناٹکا اسمبلی انتخابات2018- ایک لاکھ سے زائد ووٹ حاصل کرنے والے امیدواروں کی تفصیل

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 17th May 2018, 11:18 AM | ریاستی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

رام نگرم،16؍مئی (ایس او نیوز) اسمبلی انتخابات 2018 کیلئے ہوئی پولنگ میں ایک لاکھ سے زائد ووٹ حاصل کرنے والے امیدواروں کی تفصیل اس طرح ہے۔ رام نگرم ضلع کے کنکاپورہ اسمبلی حلقہ سے کانگریس ٹکٹ پر انتخاب لڑنے والے ریاستی وزیر برائے توانائی ڈی کے شیوکمار نے 1,27,522ووٹ حاصل کئے ہیں، میسور ضلع کے چامنڈیشوری اسمبلی حلقہ سے بطور جے ڈی ایس امیدوار وزیر اعلیٰ سدارامیا کو شکست دینے والے سابق ریاستی وزیر جی ٹی دیوے گوڈا نے 1,21,325 ووٹ حاصل کئے ہیں۔یلہنکا اسمبلی حلقہ کے بی جے پی امیدوار ایس آر وشواناتھ نے 1,16,196 ووٹ حاصل کئے ہیں۔ بنگلور شہر کی حدود میں آنے والے بیاٹرائن پورہ اسمبلی حلقہ کے کانگریس امیدوار ریاستی وزیر برائے زراعت کرشنا بائرے گوڈا نے 1,14,964 ووٹ حاصل کر کے جیت درج کرائی ہے۔ ان قریبی حریف بی جے پی امیدوار روی نے بھی 1,09,293ووٹ حاصل کر کے بھی شکست کھائی ہے۔یشونت پورا اسمبلی حلقہ کے کانگریس امیدوار ایس ٹی سوم شیکھر نے 1,15,273 ووٹ حاصل کر کے جیت درج کرائی ہے۔ یہاں بھی ان کے قریبی حریف جے ڈی ایس امیدوار جو رائے گوڈا کو 1,04,562 ووٹ کر کے بھی شکست کا منہ دیکھنا پڑا ہے۔اس طرح ناگمنگل کے جے ڈی ایس امیدوار سریش گوڈا نے 1,12,396 ووٹ حاصل کئے ہیں۔ شراونا بیلگولہ کے جے ڈی ایس امیدوار سی این بال کرشنا 1,05,516 ووٹ حاصل کئے ہیں۔ ہولے نرسی پورہ کے جے ڈی ایس امیدوار سابق ریاستی وزیر ایچ ڈی ریونا نے 1,08,541 ووٹ حاصل کر کے مسلسل پانچویں مرتبہ جیت درج کرائی ہے۔ شیموگہ اسمبلی حلقہ کے بی جے پی امیدوار نے سابق نائب وزیر اعلیٰ کے ایس ایشورپا نے بھی 1,04,027 ووٹ حاصل کر کے کامیابی درج کرائی ہے۔کنداپورہ اسمبلی حلقہ سے ہالا ڈی سرینواس شیٹی نے بطور بی جے پی امیدوار 1,03,434 ووٹ حاصل کئے ہیں۔مہادیوپورہ اسمبلی حلقہ کے بی جے پی امیدوارسابق ریاستی وزیر اروند لمباولی نے سب سے زیادہ یعنی 1,41,682 ووٹ حاصل کر کے ریکارڈ قائم کیا ہے جبکہ ان کے قریبی حریف کانگریس امیدوار اے سی سرینواس نے بھی 1,23,898 ووٹ حاصل کئے ہیں۔آنیکل کے کانگریس امیدوار بی شیونا نے 1,13,894ووٹ حاصل کئے ہیں جبکہ ان کے قریبی حریف بی جے پی امیدوار سابق وزیر اے نارائن سوامی نے بھی 1,05,267ووٹ حاصل کئے ہیں۔ماگڑی اسمبلی حلقہ کے جے ڈی ایس امیدوار منجو نے 1,19,492 ووٹ حاصل کئے ہیں۔ ملولی کے جے ڈی ایس امیدوار انادانی نے 1,03,038 ووٹ حاصل کئے ہیں اور مدور کے جے ڈی ایس امیدار ڈی سی تمنا نے بھی 1,09,239 ووٹ حاصل کئے ہیں۔بیلگاوی دیہی اسمبلی حلقہ کی کانگریس امیدوار لکشمی ہیبالگر نے 1,02,040 ووٹ حاصل کئے ہیں۔سورا پور کے بی جے پی امیدوار نرسمہا نائک نے بھی 1,04,426 ووٹ حاصل کر کے کامیابی درج کرائی ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

مڈبھیڑ میں مارے گئے سی آر پی ایف جوان امیش مہانگ کی لاش رشتہ داروں کے حوالے

نائب وزیراعلیٰ ڈاکٹر جی پرمیشور نے کہا ہے کہ بلگاوی کے متوطن سی آر پی ایف جوان امیش مہانگ نے جس دلیری کے ساتھ دہشت گردوں کا مقابلہ کرتے ہوئے موت کو گلے لگایا ہے ریاستی حکومت اس جوان کی قربانی کو سلام کرتی ہے،

متحدہ جدوجہد سے رام نگرم اور منڈیا میں کامیابی ممکن، کانگریس اور جے ڈی ایس کارکنوں سے کمار سوامی اور ڈی کے شیوکمار کا خطاب

وزیر اعلیٰ ایچ ڈی کمار سوامی اور وزیر برائے آبی وسائل ڈی کے شیوکمار نے آنے والے ضمنی انتخابات میں رام نگرم اسمبلی حلقے سے جے ڈی ایس امیدوار انیتا کمار سوامی اور منڈیا پارلیمانی حلقے سے جے ڈی ایس امیدوار ایل آر شیورامے گوڈا کو کامیاب بنانے کے لئے دونوں پارٹیوں کی طرف سے متحد ...

یکم نومبر سے سرکاری کام کاج صرف کنڑا میں : کمار سوامی

وزیر اعلیٰ ایچ ڈی کمارسوامی نے سخت ہدایت جاری کی ہے کہ یکم نومبر 2018سے ریاست کا تمام سرکاری کام کاج کنڑا میں ہوگا۔ کسی بھی فائل کو جو منظوری کے لئے سرکاری محکموں میں رہے گی کنڑا زبان میں ہی آگے بڑھایا جائے گا

مودی قومی رہنماؤں کو سیاسی فائدے کے لئے استعمال نہ کریں:ملیکارجن کھرگے

لوک سبھا میں کانگریس کے لیڈر ملیکارجن کھرگے نے کہاہے کہ جیسے جیسے انتخابات قریب آرہے ہیں وزیر اعظم مودی سردار ولبھ بھائی پٹیل ، سبھاش چندر بوس اور دیگر قائدین کا نام لے کر ملک کے عوام کو گمراہ کرنے کی کوشش میں لگے ہوئے ہیں۔

کے سی وینو گوپال کے خلاف جنسی ہراسانی کیس میں ایف آئی آر،اے آئی سی سی عہدے سے برطرف کرنے بی جے پی کامطالبہ

اے آئی سی سی جنرل سکریٹری اور کرناٹک میں کانگریس امور کے انچارج کے سی وینو گوپال کے خلاف جنسی ہراسانی کے ایک کیس میں کیرلا پولیس کی کرائم برانچ نے مقدمہ درج کرلیا ہے۔

ضلع شمالی کینرا میں جے ڈی ایس کا وجود نہیں ہے۔ آئندہ لوک سبھا میں کانگریس کا ہی امیدوار ہوگا۔ دیشپانڈے کا بیان

ریوینیو اور ضلع انچارج وزیر آر وی دیشپانڈے نے کہا ہے کہ ضلع شمالی کینرا میں جنتا دل ایس کا کوئی وجود نہیں ہے، بلکہ کانگریس پارٹی ضلع میں پوری طرح مستحکم ہے۔ اس لئے آئندہ لوک سبھا انتخاب میںیہاں سے کانگریس کا امیدوار ہی میدان میں اتارا جائے گا۔

کمٹہ: پجاری وشویشورا بھٹ کے قتل کی سازش پہلے بھی رچی گئی تھی؛ پولس کی تحقیقات جاری

حال ہی میں کمٹہ مندر کے پجاری وشویشورا بھٹ کے قتل سے متعلق تحقیقات کے دوران یہ بات سامنے آئی ہے کہ اپنے خون کے رشتے دار پر بھروسہ ہی ان کے قتل کا سبب بنا ہے، کیونکہ انہیں نئی خریدی گئی زمین کی شدھی کرنے کی پوجا انجام دینے کے بہانے مرور کی طرف بلاکر لے جانے والا کوئی اجنبی نہیں ...

بھٹکل میں طبی سہولیات کا ایک جائزہ؛ تنظیم میڈیا ورکشاپ میں طلبا کی طرف سے پیش کردہ ایک رپورٹ

مجلس اصلاح و تنظیم بھٹکل کی جانب سے منعقدہ پانچ روزہ میڈیا ورکشاپ میں جو طلبا شریک ہوئے تھے، اُس میں تین تین اور چار چار طلبا پر مشتمل الگ الگ ٹیموں کو شہر بھٹکل کے مختلف مسائل کا جائزہ لینے اور اپنی رپورٹ پیش کرنے کی ہدایت دی گئی تھی، اس میں سے ایک  ٹیم جس میں  حبیب اللہ محتشم ...