کلیجہ منہ کو آتا ہے ........................ از:محمد ولی اللہ ابن محمد زبیر تیسی مدہوبنی 

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 16th December 2016, 6:53 PM | اسپیشل رپورٹس | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

آج عالم اسلام سنگینی حالات سے دوچار ہے ، پوری دنیا کے مسلمان مختلف مصائب میں گرفتار ہے ،باطل قوتوں کی طرف سے امت محمدیہ صلی اللہ علیہ وسلم پر زندگی تنگ کی جا رہی ہے ،ہرچہار جانب سے مسلمانوں کو گھیرا جا رہا ہے ،برما سے لیکر شام تک ،عراق سے لیکر افغانستان تک اور ادلب سے لیکر حلب تک مسلمانوں کے خون سے ہولی کھیلی جا رہی ہے،مسلم بہنوں کی عصمت کو پامال کیا جا رہا ہے -

عائشہ رضی اللہ عنہا کی بیٹیاں چیخ چیخ کر مسلم حکمرانوں سے مدد طلب کر رہی ہیں ،فاطمہ رضی اللہ عنہا کی بہنیں رو رو کر اپنے بھائیوں کو مدد کے لئے بلا رہی ہیں ،ننھے ننھے معصوم بچے اپنے چچاؤں سے تعاون کی ونتی کر رہے ہیں ،معصوم بچیاں اپنے رب سے چچا صلاح الدین ایوبی کو مانگ رہی ہیں ،مادر رحم میں مقیم معصوم کلیاں دارفانی میں قدم سے رکھنے سے پناہ مانگ رہے ہیں -

شام سے آنے والی خوفناک خبریں اور بربادی کی تصویریں انتہائی دل فگار اور المناک اور کربناک ہے -اس وقت شام عالمی سپر پاور طاقتوں کے لئے اپنی طاقت کی نمائش کی آماجگاہ بن چکا ہے -ایک طرف روس کا خبطی صدر ہے جو طاقت کے نشے میں اس قدر چور ہے کہ وہ ہر نئی صبح الٹے پلٹے بیانات کے ذریعہ انسانیت کو شرمسار کرتا ہے تو دوسری طرف امریکہ ہے جو اپنی بقاء کی جنگ لڑ رہا ہے اور اپنی چودھراہٹ جتانے کی کوشش کر رہا ہے وہیں شام کا ظالم و جابر صدر بشارالاسد اپنے ہی ہاتھوں اپنے ملک کے عوام کے نسل کشی کا مرتکب ہو رہا ہے اپنے ملک کو تباہ و برباد کر رہا ہے ،آج عالم یہ ہیکہ شام کے مختلف شہر کھنڈروں میں تبدیل ہو چکے ہیں ،ہزاروں کی تعداد میں بچے یتیم ہو چکے ہیں ،لاکھوں عورتوں کا سہاگ اجڑ چکا ہے بلکہ شام کی حالت اس سے کہیں زیادہ خطرناک اور ڈراؤنی ہے کہ جسے دیکھ اور سن کر کلیجہ منہ کو آ جاتا ہے اور روح کانپ اٹھتی ہے -

افسوس صد افسوس حقوق انسانی کی برساتی مینڈکوں کو سانپ سونگھ گیا اور اقوام متحدہ اندھی ہو گئی یا یہ کہ گونگی بہری ہو گئی  کہ وہ خاموش تماشائی ہے -یہ دنیا اور اسکے حکمراں اس قدر دوغلے ہو چکے ہیں کہ ایک طرف تو جانوروں کے حقوق کی باتیں کرتے ہیں ،دوسری طرف انسانیت دم توڑتی ہے اور بچے بلبلاتے ہیں  ،عورتیں بلکتی اور بوڑھے کہراتے ہیں لیکن حقوق انسانی کے نام نہاد علمبرداروں  کی کانوں پر  جوں تک نہیں رینگتی-طرفہ تماشہ ہیکہ عالمی سپر پاور طاقتیں شام میں ہر ممکن طاقتوں کا استعمال کر رہی ہیں اسکے بعد بھی وہ امن کی چمپئن اور عملبردار ہیں، لیکن مسلم حکمراں اس قیامت نما ہولناک منظر کو ایک فلمی ڈرامہ کی طرح دیکھ رہے ہیں -

چند مہینہ قبل فرانس پر خودکش حملہ کیا ہوا تھا مسلم تنظیمیں اور انسانیت کے علمبرداروں نے اس پر سوگ منایا تھا لیکن آج وہ تنظیموں کے قائدین اور نام نہاد علمبردار لحاف میں گھسے پڑے ہیں کیونکہ یہ ظلم انسانیت کے خلاف نہیں بلکہ اسلام کے خلاف ہے ،نام نہاد دہشت گردی کے خلاف ہے-

مگر یہ یاد رکھئے!!! اللہ کے یہاں دیر ہے اندھیر نہیں

ایک نظر اس پر بھی

مرحوم حضرت مولانا محمد سالم قاسمی کے کمالات و اوصاف ۔۔۔۔۔۔۔۔ بہ قلم: خورشید عالم داؤد قاسمی

دار العلوم، دیوبند کے بانی امام محمد قاسم نانوتویؒ (1832-1880) کے پڑپوتے، ریاست دکن (حیدرآباد) کی عدالتِ عالیہ کے قاضی اور مفتی اعظم مولانا حافظ محمد احمد صاحبؒ (1862-1928) کے پوتے اور بیسویں صدی میں برّ صغیر کےعالم فرید اور ملت اسلامیہ کی آبرو حکیم الاسلام قاری محمد طیب صاحب قاسمیؒ ...

اردو میڈیم اسکولوں میں نصابی  کتب فراہم نہ ہونے  سے طلبا تعلیم سے محروم ؛ کیا یہ اُردو کو ختم کرنے کی کوشش ہے ؟

اسکولوں اور ہائی اسکولوں کی شروعات ہوکر دو مہینے بیت رہے ہیں، ریاست کرناٹک کے 559سرکاری ، امدادی اور غیر امدادی اردو میڈیم اسکولوں اور ہائی اسکولوں کے لئے کتابیں فراہم نہ  ہونے سے پڑھائی نہیں ہوپارہی ہے۔ طلبا ، اساتذہ اور والدین و سرپرستان تعلیمی صورت حال سے پریشان ہیں۔

بھٹکل کڑوین کٹّا ڈیم کی تہہ میں کیچڑ اور کچرے کا ڈھیر۔گھٹتی جارہی ہے پانی ذخیرہ کی گنجائش

امسال ریاست میں کسی بھی مقام پر برسات کم ہونے کی خبرسنائی نہیں دے رہی ہے۔ عوام کے دلوں کو خوش کرنے والی بات یہ ہے کہ بہت برسوں کے بعد ہر جگی ڈیم پانی سے لبالب ہوگئے ہیں۔لیکن اکثریہ دیکھا جاتا ہے کہ جب برسات کم ہوتی ہے اور پانی کا قحط پڑ جاتا ہے تو حیران اور پریشان ہونے والے لوگ ...

سعودی عربیہ سے واپس لوٹنے والوں کو راحت دلانے کا وعدہ ؛ کیا وزیر اعلیٰ کمارا سوامی کو کسانوں کا وعدہ یاد رہا، اقلیتوں کا وعدہ بھول گئے ؟

انتخابات کے بعد سیاسی پارٹیوں کو اقتدار ملنے کی صورت میں کیے گئے وعدوں کو پورا کرنا بہت اہم ہوتا ہے۔ جنتادل (ایس) کے سکریٹری کمارا سوامی نے بھی مخلوط حکومت میں وزیرا علیٰ کا منصب سنبھالتے ہی کسانوں کا قرضہ معاف کرنے کا انتخابی وعدہ پورا کردیااور عوام کی امیدوں پر پورا اترنے کا ...

کورگ میں بارش کی بھاری تباہی ، تین اموات،زمین کھسکنے کے متعدد واقعات 

جنوبی ہند کا کشمیر کہلانے والے ریاست کے کورگ ضلع میں بارش نے زبردست تباہی مچادی ہے۔ ایک طرف بارش کا سلسلہ رکنے کا نام نہیں لے رہا ہے تو دوسری طرف پڑوسی ریاست کیرلا میں طوفانی بارش کے سبب وہاں کی ندیوں کا پانی بھی کرناٹک کی طرف بہادیا گیا ہے،

مہادائی ٹریبونل کے فیصلے کا چیلنج کرنے ریاستی حکومت تیار

ریاستی وزیر برائے آبی وسائل ڈی کے شیوکمار نے کہاکہ شمالی کرناٹک کے بعض اضلاع کو پینے کے پانی کی فراہمی کا واحد ذریعہ مہادائی کے پانی کی تقسیم کے سلسلے میں حال ہی میں ٹریبونل نے جو فیصلہ صادر کیا ہے ریاستی حکومت اس کا سپریم کورٹ میں چیلنج کرے گی۔

بھٹکل میونسپل پارک کی تجدیدکاری میں بدعنوانی کا الزام۔ ڈپٹی کمشنر کے نام میمورنڈم

بھٹکل بلدیہ کے حدود میں بندر روڈ پر واقع سردار ولبھ بھائی پٹیل پارک کی تجدید کاری میں بدعنوانی کا الزام لگاتے ہوئے  آسارکیری کے عوام  نے بلدیہ انجینئر کو پارک میں طلب کرکے ڈپٹی کمشنر کے نام میمورنڈم دیا جس میں مطالبہ کیا گیا ہے کہ یہاں ہورہی بدعنوانی کی تحقیقات کروائی جائے۔