علی انور انصاری جدیو کے پارلیمانی بورڈ سے معطل، اپوزیشن جماعتوں کی میٹنگ میں شرکت کی

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 12th August 2017, 12:57 PM | ملکی خبریں |

پٹنہ / نئی دہلی11/اگست(ایس او نیوز/آئی این ایس انڈیا)بہار میں جے ڈی یواوربی جے پی کی مخلوط حکومت کی سب سے پہلے مخالفت کرنے والے جے ڈی یو ایم پی علی انور پر پارٹی کی گاج گری ہے اورانہیں پارلیمانی بورڈسے معطل کر دیاگیاہے۔ جے ڈی یو کے سیکرٹری جنرل کے سی تیاگی نے جمعہ کو کہا کہ ایم پی علی انور کو پارٹی سے معطل کر دیاگیاہے۔ انہوں نے کہاکہ علی انورانصاری کانگریس صدرسونیاگاندھی کی طرف سے بلائی گئی اپوزیشن پارٹیوں کی میٹنگ میں شامل ہوئے تھے اوراسی وجہ سے پارٹی نے ان پرکارروائی کی ہے۔قابل ذکر ہے کہ علی انورانصاری نے بہار کے وزیر اعلی نتیش کمار کی طرف مہاگٹھ بندھن چھوڑ بی جے پی کے ساتھ حکومت بنانے کی مخالفت کی تھی۔ انہوں نے کہاتھا کہ بہار کے عوام نے مہاگٹھ بندھن کی حکومت کے لیے ووٹ دیاتھا۔ انور نے کہا تھا کہ وہ پارٹی فورم میں اس بارے میں بات کریں گے۔ انور کے ساتھ ہی جے ڈی یو کے سابق صدر شرد یادو نے بھی نتیش کے اس قدم کی مخالفت کی تھی۔ کچھ دن پہلے جے ڈی یو سے ایسے اشارے مل رہے تھے کہ پارٹی باغی لیڈروں کے خلاف کارروائی کر سکتی ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

اروندر سنگھ لولی کی کانگریس میں واپسی، بی جے پی میں نظریاتی طور پر ’’بے میل ‘‘تھا :اروندسنگھ لولی

دہلی کانگریس کے سابق صدر اروندرسنگھ لولی کی آج کانگریس میں’’ گھر واپسی‘‘ ہو گئی۔ کچھ ماہ قبل پارٹی چھوڑ کر بی جے پی میں شامل ہوئے لولی نے کہا کہ وہ نے کہا کہ وہاں وہ ’’ نظریاتی طور پر بے میل ‘‘ تھے۔

گورکھپوراورپھول پور لوک سبھا ضمنی الیکشن کے لیے کانگریس نے امیدواروں کے نام کااعلان کیا

کانگریس نے گورکھپور اور پھول پورلوک سبھا سیٹوں پر ضمنی انتخابات کے لیے اپنے امیدواروں کااعلان کر دیاہے۔اتر پردیش کانگریس کے ترجمان وریندر مدان نے بتایا کہ پارٹی نے ڈاکٹر سرہیتا کریم کو گورکھپور اور منیش مشرا کو پھول پور لوک سبھاسیٹ پر ضمنی انتخاب کے لیے امیدواربنایاہے۔

تری پورہ اسمبلی الیکشن کے لئے تمام تیاریاں مکمل؛کل ہوگی ووٹنگ

تری پورہ میں اسمبلی کے انتخابات کے لیے تمام تیاریاں مکمل ہو چکی ہیں۔جمعہ کو انتخابی مہم ختم ہونے کے بعد،اتوار کے روز سب کی نگاہیں اب ووٹنگ پرہیں۔دراصل، تری پورہ میں کل یعنی اتوار کو انتخابات ہونے ہیں اور بھارتیہ جنتا پارٹی ان انتخابات میں حکمران بائیں محاذ کے سامنے اہم ...