جاؤرا سیمی مقدمہ:باعزت بری کیے گے ملزمین کے خلاف داخل اپیل سماعت کے لیئے منظور

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 10th June 2018, 11:33 PM | ملکی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

جمعیۃ علماء جبل پور ہائی کورٹ میں ملزمین کا دفاع کرے گی:گلزاراعظمی
ممبئی10جون(ایس او نیوز؍پریس ریلیز ) مدھیہ پردیش کے شہر جاؤرا سے تعلق رکھنے والے چار ملزمین جن پر ممنوع تنظیم سیمی کے رکن ہونے اور دہشت گردانہ کارروائیاں انجام دینے کے لیئے بینک لوٹنے کے الزامات عائد کیئے گئے تھے کو نچلی عدالت نے ناکافی ثبوت کی بنیاد پر مقدمہ سے باعزت بری کردیا تھا جس کے خلاف ریاستی سرکار نے ہائی کورٹ میں اپیل داخل کی تھی جس کا نمبر 2625/2016 ہے جسے ہائی کورٹ نے سماعت کے لیئے منظور کرتے ہو ئے ملزمین کو نوٹس جاری کیاہے۔

اس معاملے کے تین ملزمین محمد ساجد عبدالستار، ابو فضل خان محمد عمران خان اور محمد اقرا عبدالراؤف نے جمعیۃ علما ء مہاراشٹر (ارشد مدنی) قانونی امداد کمیٹی سے قانونی امداد طلب کی ہے اور اس تعلق سے انہوں نے مقامی وکیل محرم علی کے توسط سے ان کے خلاف داخل اپیل کی نقول اور دیگر دستاویزات دفتر جمعیۃ علماء ارسال کیئے ہیں ۔

جمعیۃ علماء قانونی امداد کمیٹی کے سربراہ گلزار اعظمی نے تینوں مسلم نوجوانوں کی جانب سے ارسال کی گئی قانون امداد کی درخواست کی تصدیق کی ہے اور کہا کہ جمعیۃ علماء جبلپور ہائی کورٹ میں ملزمین کا دفاع کریگی اور اس تعلق سے سینئر وکلاء سے صلاح ومشورہ کیا جارہا ہے۔

گلزاراعظمی نے کہا کہ مقدمہ کا فیصلہ ۲۸؍ اگست ۲۰۱۴ء میں بھوپال ڈسٹرکٹ جج بی ایس بھدوریہ نے دیا تھا اور تمام ملزمین کو تعزیرا ت ہند کی دفعات 395,511,397 اور غیر قانونی سرگرمیوں کی روک تھام والے قانون کی دفعات 13,16نیز دھماکہ خیز مادہ کے قانون کی دفعات 28(1-B) (B) 27 سے ناکافی ثبوت وشواہدکی بنیاد پر باعزت بری کردیا تھا لیکن دو سال کا طویل عرصہ گذر جانے کے بعد ریاستی حکومت نے نچلی عدالت کے فیصلہ کو ہائی کورٹ میں چیلنج کردیا جس سے ملزمین اور ان کے اہل خانہ کی پریشانی میں اضافہ ہوگیا ہے۔

گلزار اعظمی نے کہا کہ ملزمین محمد ساجد عبدالستار، ابو فضل عمران خان اور محمد اقرار عبدالراؤف کے اہل خانہ کی جانب سے موصول قانونی امداد کی درخواست پر کارروائی شروع کردی گئی ہے اور مقامی وکیل محرم علی کو ہدایت دی ہیکہ وہ ریاستی حکومت کی اپیل کا جواب دینے کے لیئے سینئر وکلاء سے گفتگو کریں ۔

ایک نظر اس پر بھی

مالیگاؤں ۲۰۰۸ ء بم دھماکہ معاملہ،زخمیوں کا علاج کرنے والے ڈاکٹروں کی گواہی کا سلسلہ جاری، ڈاکٹر سعید فیضی نے گواہی بھتہ پبلک ویلفئر فنڈ میں عطیہ کردیا

مالیگاؤں ۲۰۰۸ ء بم دھماکہ معاملے میں خصوصی این آئی اے عدالت میں بم دھماکوں میں زخمی ہونے والوں کا علاج کرنے والے ڈاکٹروں کی گواہی بددستور جاری ہے جس کے دوران آج مالیگاؤں کے مشہور و سینئر ڈاکٹر سعید فیضی کی گواہی عمل میں آئی

دواؤں کا معیار اور نوجوانوں کو روزگار انتہائی اہم مسئلہ: پروفیسر عبداللطیف، آل انڈیا یونانی طبّی کانگریس (اسٹوڈنٹس وِنگ) کی تشکیل

آل انڈیا یونانی طبّی کانگریس کی ایک میٹنگ آج ابن سینا اکیڈمی، دودھ پور، علی گڑھ میں منعقد ہوئی، جس کی صدارت پروفیسر عبداللطیف (قومی نائب صدر، آل انڈیا یونانی طبّی کانگریس، اکیڈمک وِنگ) نے کی۔ جبکہ نظامت کے فرائض ڈاکٹر سنبل رحمن (قومی صدر، آل انڈیا یونانی طبّی کانگریس، خواتین ...

سکھ فسادات: میرے خلاف نہ کوئی ایف آئی آر اور نہ ہی چارج شیٹ، کمل ناتھ نے کہا،بی جے پی جھوٹ پھیلارہی ہے

مدھیہ پردیش کے وزیراعلیٰ کمل ناتھ نے 1984 کے سکھ فسادات پر اٹھ رہے سوالوں پر جواب دیاہے۔کمل ناتھ نے کہاہے کہ 1984 کے سکھ فسادات میں ان کے خلاف کوئی بھی ایف آئی آر یا چارج شیٹ نہیں ہے۔انہوں نے کہا کہ اب اس مسئلے کواٹھانے کے پیچھے صرف سیاست ہے۔انہوں نے کہاکہ جس وقت میں کانگریس کا جنرل ...

بریلی: ایک ساتھ 58 ہندو، مسلم اور سکھ لڑکیوں کی شادی

اجتماعی شادیوں کے بارے میں تو آپ بہت سن لیں گے لیکن یوپی کے بریلی میں ایک منفرد شادی دیکھنے کوملی ہے۔بریلی میں منعقد ایک پروگرام میں ایک ساتھ ہندو، مسلم اور سکھ کمیونٹی کی غریب لڑکیوں کی شادی کرائی گئی۔ایک ساتھ جب گھوڑی پر بیٹھ کر 58 دولہا نکلے تو ہر کوئی اس منفرد بارات کو ...

1984-1993-2002فسادات: اقلیتوں کو نشانہ بنانے میں سیاسی رہنماؤں اور پولیس کی ملی بھگت تھی : ہائی کورٹ

دہلی ہائی کورٹ نے 1984سکھ مخالف فسادات معاملے کے فیصلے میں دوسرے فسادات کولے کر بھی بے حد سخت تبصرہ کیاہے ۔ جسٹس ایس مرلی دھر اور جسٹس ونود کوئل کی بنچ نے پیر کو سجن کمار کو فسادات پھیلانے اور سازش رچنے کا مجرم قرار دیتے ہوئے عمر قید کی سزا سنائی ۔ کورٹ نے کہا کہ سال 1984 میں نومبر کے ...

مینگلور: پولیس کے خوف سے سائڈلیتے وقت ٹرک الٹ گیا۔ کلینر کی موت۔ برہم عوام نے کیا راستہ روک کر احتجاج

منگلورو شہر کے مضافات تھوکٹو میں پولیس نے گاڑی روکنے کے لئے کہاتوکیرالہ کی طرف جانے والے ایک ٹرک کے ڈرائیور نے اپنی گاڑی سائڈ میں لے جانے کی کوشش کی جس کے دوران گاڑی الٹ گئی اوراس کے نتیجے میں وسنت کمار (25سال) نامی کلینر ہلاک ہوگیا، جو کہ شکاری پور کا رہنے والا تھا۔ 

چامراج نگر مندر حادثے کے ذمہ داروں کو بخشا نہ جائے: جی پرمیشور

باگلکوٹ ضلع کے ایک نجی شکر کے کارخانے میں بائلر پھٹنے کی وجہ سے ہلاک افراد کے ورثاء کو ریاستی حکومت کی طرف سے پانچ لاکھ روپیوں کا معاوضہ دینے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ یہ بات آج ریاستی اسمبلی میں نائب وزیراعلیٰ ڈاکٹر جی پرمیشور نے بتائی۔

سکھ فسادات: میرے خلاف نہ کوئی ایف آئی آر اور نہ ہی چارج شیٹ، کمل ناتھ نے کہا،بی جے پی جھوٹ پھیلارہی ہے

مدھیہ پردیش کے وزیراعلیٰ کمل ناتھ نے 1984 کے سکھ فسادات پر اٹھ رہے سوالوں پر جواب دیاہے۔کمل ناتھ نے کہاہے کہ 1984 کے سکھ فسادات میں ان کے خلاف کوئی بھی ایف آئی آر یا چارج شیٹ نہیں ہے۔انہوں نے کہا کہ اب اس مسئلے کواٹھانے کے پیچھے صرف سیاست ہے۔انہوں نے کہاکہ جس وقت میں کانگریس کا جنرل ...

ممبئی کے اندھیری اسپتال میں زبردست آگ؛ چھ لوگ زندہ جھلس گئے؛ پچاس سے زائد زخمی

 ممبئی کے ESIC کامگار  ہسپتال میں آگ لگنے سے  سے چھ لوگوں کی موت واقع ہوگئی وہیں پیر کی شام کو ہوئے اس حادثے میں 50 سے زائد لوگ  زخمی ہوگئے  ہیں.جائے وقوع پر فائر بریگیڈ پہنچ گئی ہے اور بچاؤ کا کام تیزی سے چل رہا ہے. گراونڈ فلور سے بھڑکی آگ تیزی سے اوپر کی طرف  پھیلتی چلی  گئی. آگ پر ...

ہندوسماج اتسوا کے بعد کاسرگوڈ میں فرقہ وارانہ تشدد۔ پولیس نے کیا لاٹھی چارج

اتوار کے دن یہاں منعقدہ ہندوسماج اتسوا میں شرکت کے بعدواپس لوٹنے والوں پر سنگ باری کا الزام لگاتے ہوئے شرپسندوں نے مختلف مقامات پرموٹر گاڑیوں پر پتھراؤ شروع کیا جس کے بعد پولیس نے مداخلت کرتے ہوئے لاٹھی چارج کیااور صورتحال پر قابو پالیا۔