جناردھن ریڈی ڈیل معاملے کی امبیڈنٹ کمپنی نے بھٹکل والوں کو لگایا100کروڑ روپیوں سے زائد کا چونا

Source: S.O. News Service | By Abu Aisha | Published on 8th November 2018, 2:05 AM | ساحلی خبریں |

بھٹکل:7؍نومبر (ایس او نیوز)ریاست بھر میں موضوع بحث بنے  سابق وزیر جناردھن ریڈی ڈیل معاملہ کی امبیڈنٹ مارکیٹنگ پرائیویٹ لمیٹیڈ کمپنی نے اسلام کے نام پر بھٹکل کے عوام کو بھی سینکڑوں کروڑ روپیوں کا چونا لگانے کی اطلاعات موصول ہوئی ہیں۔

ذرائع سے ملی اطلاع کے مطابق 4مہینوں کی سرمایہ کاری اور اس کے منافع  کو جتا کر بھٹکل کے عوام کے 100کروڑ سے زائد روپیوں کی ٹوپی پہنانے کی اطلاعات عوام میں گردش کررہی ہیں۔ عوام کی مانیں تو 10-12مہینے پہلے کمپنی کی حمایت میں بھٹکل کے  ایک ٹھگی امیر نے پرائیویٹ ہوٹل  میں میٹنگ کرتےہوئے گاہکوں کو رقم لگانے کی ترغیب دی تھی۔ سننے میں آیا ہے کہ  اکثر عوام اس کی فریبی  باتوں پر بھروسہ کرتےہوئے جال میں پھنس گئے۔ ایک اطلاع کے مطابق بھٹکل اور آس پاس کے قریب 1000 لوگوں نے  کمپنی میں سرمایہ کاری کئے ہیں۔ بتایا گیا ہے کہ دو تین لاکھ روپئے سرمایہ لگانے والے گاہکوں کو کمپنی نے شروع شروع میں اصل کے ساتھ  منافع  بھی دیا تھا، مگر  لالچ میں آکر کئی لوگوں نے  ملی ہوئی رقم کو دوبارہ سرمایہ کاری کیا اور  دھوکہ کھاگئے ۔

چونکہ اسلام میں سود ی لین دین کو حرام قرار دیا  گیا  ہے اسی لئے اکثر اقلیتی لوگ امبیڈنٹ  کمپنی کی اصلیت اور سچائی جانےبغیر منافع  حاصل کرنے کے نام  پر دھوکہ کھاگئے ۔ ان واقعات کے بعد اقلیتی لیڈران بھی پریشان ہیں۔کہا جارہا ہے کہ  دھوکہ کھائے  ہوئے کئی لوگ اس تعلق سے  کھلے عام کچھ نہیں بول رہے ہیں، البتہ اندر ہی اندر  گھٹ رہے ہیں۔

بعض لوگوں کا کہنا ہے کہ   امبیڈنٹ کمپنی کے ساتھ تعلق رکھنے والے کچھ ہائی پروفائل  ٹھگوں کا الگ الگ سطح کے پولس افسران کے ساتھ اچھے تعلقات ہیں اور وہ پولس کے اعلیٰ حکام کو  سنبھالنے  کی قوت رکھتے ہیں اسی لئے دھوکہ کھائے ہوئے لوگ چیخ پکار کرنے کے بجائے  خاموش رہنے کو ترجیح دے رہے ہیں۔

اب امبیڈنٹ کمپنی کے ساتھ سابق وزیر جناردھن ریڈی کانام بھی جڑجانے سے بنگلورو سی سی بی پولس گرفتاری کے لئے جال بچھائے جانے کاواقعہ بھٹکل میں گرما گرم بحث کا موضوع بنا ہوا ہے۔ اسلام کے نام پر مسلمان ہی مسلمانوں کو دھوکہ دینے والے پے درپے واقعات پیش آنے سے  عوا م سخت پریشانی میں مبتلا ہیں۔

یاد رہے کہ حال ہی میں  ’’فلا لیس ‘‘ نامی کمپنی میں سرمایہ کاری کے بعد دھوکہ کھائے ہوئے  بھٹکل کے  لوگوں نے سخت احتجاج کیا تھا، اسی طرح  ہیرا گولڈ میں بھی بھٹکل کے اکثر مسلمانوں نے سرمایہ کاری کررکھی ہے اور ہیرا گولڈ کی مالکین کی گرفتاری کے بعد  وہ لوگ بھی الگ سے  پریشان ہیں۔

ایک نظر اس پر بھی

دارالعلوم اسلامیہ عربیہ تلوجہ میں علمائے شوافع کی جانب سے فقہی سمینار کا آغاز؛ علماء فقہائے شوافع نے حقیقتاً حدیث اور فقہ میں بہت نمایاں کام کیاہے: خالد سیف اللہ رحمانی 

بروز سنیچر 19؍ جنوری مجمع الامام الشافعی العالمی کی جانب سے دو روزہ پہلے فقہی سمینار کا آغاز کیا گیا اس سمینار کا افتتاحی جلسہ صبح 10؍ بجے جامعہ دارالعلوم اسلامیہ عربیہ تلوجہ ممبئی میں منعقد کیا گیا

بھٹکل: ریاست کے مشہور سد گنگامٹھ کے شری کمار سوامی جی کی وفات پر رابطہ ملت اترکنڑا کا اظہار تعزیت

ریاست کے قدآور ، معروف سد گنگا مٹھ کے شری کمار سوامی جی کے دارِ فانی سے کوچ کر جانے پر رابطہ ملت اترکنڑا ضلع کے عہدیداران نے اظہار تعزیت کرتے ہوئے کہا ہے کہ سوامی جی ملک کی ایک قوت کی مانند تھے۔

گنگولی کے آراٹے ندی میں غرق ہوکر لاپتہ ہونے والے ماہی گیر کی نعش آج برآمد

یہاں آراٹے ندی میں غرق ہوکر کل رات ایک ماہی گیر لاپتہ ہوگیا تھا، جس کی نعش آج متعلقہ ندی سے برآمد کرلی گئی ہے۔ ماہی گیر کی شناخت آراٹے کڑین باگل کے رہنے والے  کرشنا موگویرا (50) کی حیثیت سے کی گئی ہے۔

کنداپور میں ہوئی چوری کی واردات کے بعد پولس نے گھر میں نوکری کرنے والے میاں بیوی کوکیا گرفتار

کنداور دیہات کے سٹپاڑی کے ایک گھرمیں ہوئی  چوری کے معاملے میں کنداپور دیہی پولس نے فوری کارروائی کرتے ہوئے اسی گھر میں کام کرنےو الے میاں بیوی کو صرف دو دنوں میں ہی گرفتار کر کے معاملے کو حل کرنے میں کامیابی حاصل کرلی  ہے۔

ہوناور قومی شاہراہ پرگزرنےو الی بھاری وزنی لاریوں سے سڑک خستہ؛ میگنیز کی دھول اور ٹکڑوں سے ڈرائیوروں اور مسافروں کو خطرہ

حکومت عوام کو کئی ساری سہولیات مہیا کرتی رہتی ہے، مگر ان سہولیات سے استفادہ کرنےو الوں سے زیادہ اس کاغلط استعمال کرنے والے ہی زیادہ ہوتے ہیں، اس کی زندہ مثال  فورلین میں منتقل ہونے والی  قومی شاہراہ 66پر گزرنے والی بھاری وزنی لاریاں  ہیں۔