ایران فرقہ وارانہ دہشت گردی کو ہوا دے رہا ہے:سعودی عرب;مقبوضہ فلسطین اور وادی گولان پر اسرائیل ناجائز قابض ہے

Source: S.O. News Service | Published on 21st April 2017, 7:30 PM | عالمی خبریں |

واشنگٹن،21اپریل(ایس او نیوز/آئی این ایس انڈیا)اقوام متحدہ میں سعودی عرب کے مستقل مندوب عبداللہ المعلمی نے شام میں اسدی فوج کی جانب سے نہتے شہریوں پر کیمیائی حملے کی شدید مذمت کی ہے۔ ان کا کہنا ہے کہ لبنانی دہشت گرد تنظیم حزب اللہ شام میں نہتے شہریوں کا گھیراؤ کر کے ان کا قتل عام کررہی ہے۔ شام میں حزب اللہ کی موجودگی عالمی معاہدوں کی خلاف ورزی ہے۔ سعودی سفیر نے ان خیالات کا اظہار سلامتی کونسل کے مشرق وسطیٰ سے متعلق خصوصی اجلاس سے خطاب میں کیا۔ انہوں نے کہا کہ ایران فرقہ وارانہ دہشت گردی کو ہوا دے رہا ہے۔ ایران کی کوشش ہے کہ جہاں جہاں ممکن ہوسکے لبنانی حزب اللہ کے انڈے بچے پھیلائے جائیں۔انہوں نے شام میں امریکی میزائل حملوں کی مکمل تائید کی اور کہا کہ سعودی عرب دہشت گردی کے خلاف جنگ میں اپنے اتحادیوں کے ساتھ مل کر کام کرتا رہے گا۔
سلامتی کونسل کیاجلاس سے خطاب کرتے ہوئے شام کے لیے اقوام متحدہ کے خصوصی ایلچی اسٹیفن دی میستورا نے کہا کہ شام کے بحران کے حل کا بہتر روڈ میپ جنیوا 1 میں طے کردیا گیا ہے۔ پہلے جنیوا اجلاس میں شام میں عبوری حکومت کی تشکیل کو مسئلے کے حل کا بنیادی نکتہ قرار دیا گیا ہے۔
سعودی عرب کے مندوب نے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے فلسطین اور اسرائیل کے درمیان تنازع کے جلد حل کی ضرورت پر زور دیا۔ انہوں نے کہا کہ سعودی عرب تمام مقبوضہ فلسطینی علاقوں اور وادی گولان سے اسرائیل کے قبضے کے خاتمے کا مطالبہ کرتا رہے گا۔ انہوں نے کہا کہ فلسطینی ریاست سے متعلق سعودی عرب کا موقف واضح ہے اور ہم ایک آزاد اور مکمل طور پر خود مختار فلسطینی مملکت کا مطالبہ کرتے رہیں گے۔
 

ایک نظر اس پر بھی

جرمنی: میونخ میں چاقو سے حملہ، 4 افراد زخمی

جرمنی میں پولیس نے ہفتے کے روز اعلان کیا ہے کہ میونخ شہر میں چاقو سے وار کر کے چار افرد کو زخمی کر دیا گیا۔پولیس کا کہنا ہے کہ نامعلوم شخص کی جانب سے کیے جانے والے حملے کی وجوہات ابھی تک معلوم نہیں ہو سکیں۔

کرکوک پر کنٹرول کے باوجود متنازع علاقوں کی حیثیت تبدیل نہیں ہوئی: امریکا

امریکی وزارت خارجہ نے شمالی عراق میں پرشدد واقعات پر اپنی تشویش کا اظہار کرتے ہوئے عراقی حکومت سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ کرکوک کے نزدیک اپنی نقل و حرکت پر روک لگائے جو بغداد اور عراقی کردستان کی حکومتوں کے درمیان متنازع علاقہ ہے۔

نئی امریکی پابندیاں ایران اور حزب اللہ کی راہ دیکھ رہی ہیں

امریکی ایوانِ نمائندگان میں ریپبلکن رہ نماؤں نے انکشاف کیا ہے کہ آئندہ چند روز میں ایوان میں ایرانی بیلسٹک میزائل پروگرام اور تہران نواز لبنانی ملیشیا حزب اللہ پر نئی پابندیاں عائد کرنے کے لیے رائے شماری ہو گی۔