احمدی نژاد کے کاغذات نامزدگی مسترد، روحانی کے منظور

Source: S.O. News Service | Published on 21st April 2017, 5:13 PM | عالمی خبریں |

تہران،21اپریل(ایس او نیوز/آئی این ایس انڈیا)ایران کی دستوری کونسل نے سابق صدر محمود احمدی نڑاد کے صدارتی انتخابات کے لیے جمع کرائے کاغذات نامزدگی مسترد کردیے ہیں جب صدر حسن روحانی سمیت چھ اہم شخصیات کے کاغذات منظور کیے گئے ہیں۔ایران کے سرکاری ٹی وی نے الیکشن کمیشن اور دستوری کونسل کے ذرائع کے حوالے سیبتایا ہے کہ آئین کے آرٹیکل 60 کے تحت ملک میں 12 صدارتی انتخابات کے لیے امیدواروں کے کاغذات نامزدگی کی جانچ پڑتال جاری ہے۔دستوری کونسل امیدواروں کی اہلیت کی جانچ پڑتال کے بعد انہیں انتخابات کے لیے اہل یا نا اہل قرار دینے کا عمل جاری رکھے ہوئے ہے۔ گذشتہ روز چھ امیدواروں سد مصطفیٰ آقا میر سلیم، اسحاق جہانگیری کوشائی،حسن روحانی، ابراہیمی رئیسی ساداتی، محمد باقر قالیباف اور مصطفیٰ ھاشمی طبا کے کاغذات نامزدگی منظور کرلیے گئے ہیں۔دستوری کونسل نے سابق صدر محمود احمدی نڑاد، ان کے سابق نائب صدر حمید بقائی اور سابق صدر ہاشمی رفسنجانی کے بھائی محمد ہاشمی کے کاغذات نامزدگی مسترد کردئے گئے ہیں۔خیال رہے کہ ایران میں آئندہ ماہ ہونے والے صدارتی انتخابات کے لیے 1636 امیدواروں نے کاغذات نامزدگی جمع کرائے تھے۔ ان میں سے صرف چھ شخصیات کے نام منظور کیے گئے ہیں۔

ایک نظر اس پر بھی

کیوبا کی صدارت راؤل کاسترو سے ڈیاز کانیل کو منتقل

بحیرہ کریبیین کی جزیرہ ریاست کیوبا میں کاسترو خاندان سے باہر نیا صدر منتخب ہو گیا ہے۔ اس انتخاب کے بعد راؤل کاسترو نے منصب صدارت کو چھوڑ دیا ہے۔کیوبا کی اسمبلی نے صدر راؤل کاسترو کے جانشین کے کے طور میگوئل ڈیاز کانیل کو نیا صدر منتخب کر لیا ہے۔

نیپال میں مسافر طیارہ رن وے سے اتر گیا

نیپال میں ملائیشیا کی ایک ایئرلائن کا ایک مسافر طیارہ ہوائی اڈے کے رن وے سے اتر گیا تاہم اس واقعے میں کوئی شخص زخمی نہیں ہوا۔ کھٹمنڈو ایئر پورٹ پر پیش آنے والے اس واقعے کے بعد بین الاقوامی مسافر پروازیں بحال ہو چکی ہیں۔

ہاتھ نہ ملانے کے جرم میں مسلم خواتین کو شہریت دینے سے انکار 

فرانس میں ایک مسلم خاتون کو ہاتھ نہ ملانے پر ملک کی شہریت دینے سے انکار کر دیا گیا۔ الجزائر سے تعلق رکھنے والی ایک مسلمان خاتون نے فرانسیسی شہریت ملنے کی تقریب کے دوران عہدیدار سے ہاتھ ملانے سے انکار کر دیا تھا۔

یمنی سکیورٹی فورسز کی کارروائی میں القاعدہ کے دو خطرناک لیڈر ہلاک

یمن کے جنوبی صوبے ابین میں سرکاری سکیورٹی فورسز کی ایک چھاپا مار کارروائی میں القاعدہ کے دو خطرناک لیڈر ہلاک ہو گئے ہیں۔سکیورٹی ذرائع کے مطابق ان دونوں مہلوک لیڈروں کے نام مراد الدوبلی اور حسن ابو سری ہیں اور یہ دونوں انتہائی مطلوب دہشت گرد تھے۔