احمدی نژاد کے کاغذات نامزدگی مسترد، روحانی کے منظور

Source: S.O. News Service | Published on 21st April 2017, 5:13 PM | عالمی خبریں |

تہران،21اپریل(ایس او نیوز/آئی این ایس انڈیا)ایران کی دستوری کونسل نے سابق صدر محمود احمدی نڑاد کے صدارتی انتخابات کے لیے جمع کرائے کاغذات نامزدگی مسترد کردیے ہیں جب صدر حسن روحانی سمیت چھ اہم شخصیات کے کاغذات منظور کیے گئے ہیں۔ایران کے سرکاری ٹی وی نے الیکشن کمیشن اور دستوری کونسل کے ذرائع کے حوالے سیبتایا ہے کہ آئین کے آرٹیکل 60 کے تحت ملک میں 12 صدارتی انتخابات کے لیے امیدواروں کے کاغذات نامزدگی کی جانچ پڑتال جاری ہے۔دستوری کونسل امیدواروں کی اہلیت کی جانچ پڑتال کے بعد انہیں انتخابات کے لیے اہل یا نا اہل قرار دینے کا عمل جاری رکھے ہوئے ہے۔ گذشتہ روز چھ امیدواروں سد مصطفیٰ آقا میر سلیم، اسحاق جہانگیری کوشائی،حسن روحانی، ابراہیمی رئیسی ساداتی، محمد باقر قالیباف اور مصطفیٰ ھاشمی طبا کے کاغذات نامزدگی منظور کرلیے گئے ہیں۔دستوری کونسل نے سابق صدر محمود احمدی نڑاد، ان کے سابق نائب صدر حمید بقائی اور سابق صدر ہاشمی رفسنجانی کے بھائی محمد ہاشمی کے کاغذات نامزدگی مسترد کردئے گئے ہیں۔خیال رہے کہ ایران میں آئندہ ماہ ہونے والے صدارتی انتخابات کے لیے 1636 امیدواروں نے کاغذات نامزدگی جمع کرائے تھے۔ ان میں سے صرف چھ شخصیات کے نام منظور کیے گئے ہیں۔

ایک نظر اس پر بھی

جرمنی: میونخ میں چاقو سے حملہ، 4 افراد زخمی

جرمنی میں پولیس نے ہفتے کے روز اعلان کیا ہے کہ میونخ شہر میں چاقو سے وار کر کے چار افرد کو زخمی کر دیا گیا۔پولیس کا کہنا ہے کہ نامعلوم شخص کی جانب سے کیے جانے والے حملے کی وجوہات ابھی تک معلوم نہیں ہو سکیں۔

کرکوک پر کنٹرول کے باوجود متنازع علاقوں کی حیثیت تبدیل نہیں ہوئی: امریکا

امریکی وزارت خارجہ نے شمالی عراق میں پرشدد واقعات پر اپنی تشویش کا اظہار کرتے ہوئے عراقی حکومت سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ کرکوک کے نزدیک اپنی نقل و حرکت پر روک لگائے جو بغداد اور عراقی کردستان کی حکومتوں کے درمیان متنازع علاقہ ہے۔

نئی امریکی پابندیاں ایران اور حزب اللہ کی راہ دیکھ رہی ہیں

امریکی ایوانِ نمائندگان میں ریپبلکن رہ نماؤں نے انکشاف کیا ہے کہ آئندہ چند روز میں ایوان میں ایرانی بیلسٹک میزائل پروگرام اور تہران نواز لبنانی ملیشیا حزب اللہ پر نئی پابندیاں عائد کرنے کے لیے رائے شماری ہو گی۔