ملک میں تجارت نہیں زراعت کو آسان بنانے کی ضرورت: دیوے گوڈا

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 1st December 2018, 12:03 AM | ریاستی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

بنگلورو،30؍نومبر(ایس او نیوز) سابق وزیراعظم اور جے ڈی ایس کے قومی صدر ایچ ڈی دیوے گوڈا نے مرکزی حکومت کی طرف سے کسانوں کے مسائل کو نظر انداز کرنے پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہاہے کہ جو حکومت کسانوں کے مسائل نہیں سمجھتی وہ کبھی باقی نہیں رہے گی۔

قرضوں کی معافی، فصل کے عوض بہتر تائیدی قیمتوں کا تعین اور دیگر مسائل کی یکسوئی پر زور دینے کے لئے ملک بھر کے کسانوں کے لئے دہلی میں جاری احتجاج کی حمایت کرتے ہوئے دیوے گوڈا نے ان کی ریلی میں شرکت کی اور وہاں خطاب کرتے ہوئے ان کسانوں کو یقین دلایا کہ جے ڈی ایس کسانوں کی تحریک کے ساتھ ہے۔

انہوں نے کہاکہ پچھلے ساڑھے چار سال کے دوران مرکزی حکومت نے کسانوں کے کسی بھی مسئلے پر توجہ نہیں دی، ہر بار مرکزی حکومت کو متوجہ کرانے کے لئے کسانوں نے جو آواز دی اس پر کوئی توجہ نہیں دی گئی۔ وزیر اعظم مودی پر نکتہ چینی کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ ہزاروں کی تعداد میں کسانوں نے قرضوں کے بوجھ کی وجہ سے خود کشی کرلی۔ لیکن ان کا مرکزی حکومت میں کوئی پرسان حال نہیں۔ دہلی کے رام لیلا میدان میں ہزاروں کی تعداد میں کسان کل سے احتجاج پر ہیں۔آج ان لوگوں نے پارلیمان کی طرف اپنے مارچ کی شروعات کی، دیوے گوڈا نے کہاکہ کرناٹک میں کانگریس جے ڈی ایس مخلوط حکومت غالباً ملک کی پہلی حکومت ہے جس نے کسانوں کے تمام قرضے معاف کردئے ہیں۔

انہوں نے کہاکہ وزیر اعظم مودی بارہا تاجروں کو آسانی فراہم کرنے کی باتیں کرتے ہیں، دراصل اس ملک میں جس کی معیشت کا 70 فیصد حصہ زراعت پر مبنی ہے، یہاں زراعت میں آسانیاں فراہم کرنی چاہئے، لیکن مرکزی حکومت نے اس پر کوئی توجہ نہیں دی۔ دیوے گوڈا نے کہاکہ انہیں اپنے بیٹے کمار سوامی پر فخر ہے کہ اپنے قول کے مطابق کسانوں کے قرضے معاف کرنے میں کامیاب رہے۔ 

ایک نظر اس پر بھی

توہم پرستی کے مخالفین کومذہب دشمن قراردیاجارہاہے: ملیکارجن کھرگے

پارلیمان میں کانگریسی رہنما ملیکارجن کھرگے نے کہاکہ آج سماج میں توہم پرستی کی مخالفت کرنے والوں کومذہب کے دشمن کے طورپر پیش کیاجارہاہے ،یہاں کونڈجی بسپاہال میں اکھل بھارت شرن ساہتیہ پریشد اورماچی دیواسمیتی کی جانب سے اشوک دوملور کی تین مختلف زبانوں میں تحریرکردہ کتابوں ...

22دسمبر کو کابینہ میں ضرور توسیع ہوگی: دنیش گنڈو راؤ

پردیش کانگریس کمیٹی ( کے پی سی سی ) صدر دنیش گنڈو راؤ نے بتایا کہ 22دسمبر کوریاستی کابینہ میں توسیع ضرور ہوگی۔کے پی سی سی دفتر میں نامہ نگاروں سے انہوں نے کہا کہ کابینہ میں توسیع سے متعلق وزیراعلیٰ ایچ ڈی کمار سوامی ،نائب وزیراعلیٰ ڈاکٹر جی پرمیشور سمیت دونوں پارٹیوں کے لیڈروں ...

بی جے پی الزام عائد کرنے سے پہلے سی اے جی رپورٹ کاجائزہ لے: سدرشن

کے پی سی سی نائب صدر قانون سازکونسل کے سابق چیرمین وی آر سدرشن نے کہاکہ بی جے پی رہنما ؤں کو سابق وزیراعلیٰ سدارامیا کے دورمیں 35ہزار کروڑ روپئے کاگھپلہ ہونے کالزام لگانے سے پہلے سی اے جی رپورٹ کاجائزہ لینا چاہئے ۔

بلگام :پروفیسر خواجہ فرازؔبادامی کو  کرناٹکا یونیورسٹی دھارواڑ سے فن عروض کے موضوع پر پی ایچ ڈی کی سند تفویض  

گوکاک  جے ایس ایس ڈگری کالج کے شعبہ اردو کے صدر پروفیسر خواجہ بندہ نواز انڈیکر فرازؔبادامی کو کرناٹکا یونیورسٹی دھارواڑ کی طرف سے  ’’اردو عروض اور ہندی پنگل کا تقابلی مطالعہ ‘‘کے موضوع پر ڈاکٹر آف فلاسفی (پی ایچ ڈی ) کی سند تفویض کی گئی ہے۔

بنگلور میں منعقدہ APCR کارگاہ میں دہشت گردی کے نام پر بے گناہوں کی گرفتاریوں پر سخت تشویش؛سابق چیف جسٹس اور معروف وُکلا نے کی، یو اے پی اے کی سخت مخالفت

اسوسی ایشن فور پروٹیکشن آف سیول رائٹس (اے پی سی آر) کرناٹک چاپٹر کے زیراہتمام ریاستی سطح کے ورکشاپ میں دہشت گردی کے نام پر بے گناہ مسلمانوں کی گرفتاریوں پر سخت تشویش کااظہار کیا گیا اور سابق چیف جسٹس آف انڈیا مسٹر وینکٹ چلیّا سمیت معروف وُکلاء نے یو اے پی اے اسپیشل قانون کی سخت ...

کاروار : نجومی اور جوتشی سے اپنے مستقبل کو معلوم کرنے کے بجائے اپنی سوچ وفکر کو بدلیں  : کروالی اتسوا میں کرشماتی ماہر ڈاکٹر ہولیکل نٹراج  

دنیا میں فریب،دھوکہ عام بات ہے مگر دھوکہ کے جال میں پھنسنا بڑی بےو قوفی اور غلط بات ہے۔ گھر توڑ کر واستو(توہم پرستی کے چلتے گھر کے دروازے اور کھڑکیوں کے رخ کو متعین کرنےو الا نجوم ) صحیح کرنے کے بجائے اپنی ذہنی سوچ وخیال کو بدل لیجئے۔ کرشموں کا کچا چٹھا نکالنےمیں ماہر ڈاکٹر ...