جنوبی کینرا کے ساحلی علاقے سمندری طوفان ’تتلی‘ کی لپیٹ میں ۔اونچی اور تیز لہروں سے سمندری پانی گھروں میں گھس آیا

Source: S.O. News Service | By Staff Correspondent | Published on 11th October 2018, 5:36 PM | ساحلی خبریں |

منگلورو11؍اکتوبر (ایس او نیوز) خلیج بنگال میں ہوا کے کم دباؤ کے ساتھ اٹھنے والے سمندری طوفان ’تتلی ‘کی وجہ سے تیز اور اونچی لہروں نے ساحلی علاقے میں بسنے والوں کے لئے خطرے کی گھنٹی بجا دی ہے۔ فی الحال اوچیلا، سومیشور اور الال کے ساحلی علاقے میں سمندری پانی گھروں میں گھسنے لگا ہے۔

محکمہ موسمیات کے مطابق طوفان نے اپنا رخ اوڈیشہ اور آندھرا پردیش کی طرف موڑ دیا ہے جہاں عوام کو چوکنا کرددیا گیا ہے۔اس کے علاوہ ساحلی علاقے میں ماہی گیروں کو مچھلی کے شکار پر نکلنے سے منع کردیا گیا ہے کیونکہ سمند ر کے بیچ موسم بہت ہی زیا دہ خراب ہوگیا ہے۔جنوبی کینرا کے ساحلی علاقوں میں اس سے پہلے بھی طوفان کی وجہ سے جس طرح کے پریشان کن حالات پیدا ہوئے تھے کچھ ایسے ہی خوف کے آثار بدھ کے دن اٹھنے والی تیز لہروں کو دیکھ کر لوگوں کے دلوں میں جاگ اٹھے تھے۔محکمہ موسمیات نے پانمبور ساحل پر خصوصی احتیاط اور چوکسی برتنے کی ہدایات جاری کی ہیں۔اس کے علاوہ ساحلی علاقے میں بھاری برسات ہونے کا خدشہ بھی ظاہر کیا گیا ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

ایران میں گرفتار اُترکنڑا کے ماہی گیروں کی فوری رہائی کا مطالبہ کرتے ہوئے کرناٹکا این آر آئی فورم کا دبئی میں ہندوستانی سفارت کار سے ملاقات

  ریاست کرناٹک کے ضلع اُترکنڑا کے 18 ماہی گیروں کی ایران میں گرفتاری کے بعد اُن کی رہائی کی کوششیں تیز ہوگئی ہیں۔ اس تعلق سے تازہ اطلاع یہ ہے کہ  دبئی میں موجود ماہی گیروں کے رشتہ داروں نے  کرناٹکا این آر فورم کے  اہم ذمہ دار اور قائد قوم جناب ایس ایم سید خلیل الرحمن صاحب سے ...