رمن سنگھ کے گڑھ میں بی جے پی اور کانگریس دونوں واجپئی کے نام پر مانگ رہے ہیں ووٹ

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 8th November 2018, 10:10 PM | ملکی خبریں |

راج ناندگاؤں 8نومبر (ایس او نیوز؍آئی این ایس انڈیا )اکثر یہ کہا جاتا ہے کہ نام میں کیا رکھا ہے؟ جی ہاں، نام میں ہی کافی کچھ ہوتا ہے، خاص طور پر چھتیس گڑھ کے اس حلقہ میں جب انحصار کرنے کے قابل نام اٹل بہاری واجپئی کا ہو، جہاں بی جے پی کے امیدوار وزیر اعلی رمن سنگھ کا کانگریس کی امیدوار سابق وزیر اعظم کی بھتیجی ارونا شکلا سے انتخابی مقابلہ ہے۔ دونوں ہی پارٹیاں واجپئی کے نام پر ووٹ بٹورنے کی ممکن حد تک کوشش میں لگے ہیں۔

حکمراں پارٹی بی جے پی کے رہنما کہتے ہیں کہ بی جے پی اور واجپئی ایک دوسرے کے مترادف ہیں۔ ادھر شکلا کا الزام ہے کہ وزیراعلیٰ بی جے پی کے ان قدآور لیڈر کے نظریات کی پیروی کرنے کا دعویٰ کرکے اپنادوہرامعیاردکھا رہے ہیں ؛کیونکہ ریاستی حکومت سابق وزیر اعظم کے نظریات سے میلوں دور ہے۔ انتخابی مہم میں مصروف شکلا نے کہاکہ بی جے پی نے اپنی چال، کردار اور چہرہ تبدیل کر لیا ہے۔ اب وہ ویسی پارٹی نہیں ہے جس کا تصور اٹل بہاری اور اڈوانی نے کی تھی اور ریاست کے لوگ یہ جانتے ہیں۔سال 2013 میں بی جے پی چھوڑنے سے پہلے پارٹی کی مرکزی عہدیدار رہ چکیں شکلا نے کہاکہ اس سے کوئی انکار نہیں کیا جا سکتا کہ میں اٹل جی کی بھتیجی ہوں۔ ان کی سیکھ اور ان کی توانائی میرے خون میں ہے ،میں ان اصولوں سے متصف ہوتی ہوں۔ راج ناندگاؤں کے لوگ جانتے ہیں کہ اگر کانگریس الیکشن جیت گئی تو میں نے بدعنوانی میں ڈوبی اس ریاست میں گڈ گورننس کے مثالی قائم کروں گی۔ تیس سال تک منسلک رہنے کے بعد بی جے پی سے نکل کر شکلا فروری، 2014 میں کانگریس میں شامل ہو گئی تھیں۔انہوں نے کانگریس کے ٹکٹ پر انتخاب لڑا لیکن وہ ہار گئیں۔

بی جے پی لیڈر کے طور پر انہوں نے 2004 میں جانجگیر سے لوک سبھا انتخاب جیتا لیکن 2009 میں وہ کوربا سے ہار گئیں۔ کانگریس نے اب انہیں وزیراعلیٰ کے گڑھ راج ناندگاؤں سے انتخابی میدان میں اتارا ہے۔ شکلا نے کہاکہ رمن سنگھ مجھے اپنی بہن کہتے ہیں۔ وہ دعویٰ کرتے ہیں کہ وہ اٹل بہاری واجپئی کے نظریات پرچلتے ہیں۔جہاں تک میں جانتی ہوں کہ یہ حکومت اٹل جی کے نظریات سے میلوں دور ہے۔ یہ ان کا (وزیر اعلیٰ کا)دوہرامعیارہے۔بی جے پی نے سنگھ کے حلقہ میں انتخابات کو مقامی بمقابلہ بیرونی کے مقابلے کے طور پر پیش کیا ہے۔ صوبہ بی جے پی کے سینئر لیڈر سنجے شریواستو نے کہا کہ شکلا بیرونی ہیں اور ووٹر یہ بات جانتے ہیں۔ ایک اور سینئر بی جے پی لیڈر نے کہا کہ بی جے پی گڈ گورننس اور ترقی کے نام پر ووٹ مانگ رہی ہے۔ اٹل جی سمیت پارٹی کے تمام رہنما اور ان کی وراثت یقیناًپارٹی کی مہم کاحصہ ہے۔

ایک نظر اس پر بھی