وزیر اعظم کے قتل کی سازش معمولی بات نہیں، اس کے ملزمین کو سخت سزا ملنی چاہئے: یوٹی قادر

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 2nd September 2018, 11:59 AM | ریاستی خبریں |

بنگلورو2؍ستمبر(ایس او نیوز) ریاستی وزیر ہاؤزنگ یوٹی قادر نے کہا ہے کہ ہر تین ماہ میں ایک بار یہ دعویٰ کہ وزیر اعظم مودی کی جان کو خطرہ ہے، انہیں مارنے کی سازش رچائی گئی ہے اس سے ملک کی سیکورٹی ایجنسیوں کی ساکھ مجروح ہوتی ہے، اگر واقعی کسی نے وزیراعظم کو مارنے کی سازش رچی ہے تو اس کی نشاندہی کرکے اے کے خلاف سخت کارروائی کی جائے۔ غیر ضروری طور پر ہر دو تین ماہ میں ایسا ڈرامہ کرنا وزیراعظم کو زیب نہیں دیتا۔

اخباری نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے انہوں نے کہاکہ وزیراعظم کو جان سے مارنے کی سازش رچانا معمولی بات نہیں ہے اس کی سخت الفاظ میں نہ صرف مذمت کرنی چاہئے بلکہ تمام سیاسی پارٹیوں کو یہ مطالبہ کرنا چاہئے کہ ایسی حرکت کرنے والوں کو سخت سے سخت سزا دی جائے تاکہ لوگوں کو معلوم ہوسکے کہ کون ہے وہ ملک کا دشمن جو وزیر اعظم کو قتل کردینا چاہتاہے۔ اس سازش کے پیچھے کونسی طاقتیں کار فرما ہیں ۔

انہوں نے کہاکہ وزیراعظم کی سیکورٹی کے لئے جو ایجنسی ذمہ دارہے اس کا شمار دنیا کی اعلیٰ ترین سیکوریٹی ایجنسیوں میں کیا جاتاہے ، اگر ایسی ایجنسی وزیر اعظم کو قتل کرنے کی سازش کا پتہ لگانے میں ناکام ہے تو اسے سیکوریٹی ایجنسی کی کمزوری سے تعبیر کیا جائے گا۔بارہا اس طرح کی خبریں اڑائی نہ جائیں۔

انہوں نے کہاکہ وقفے وقفے سے اس قسم کی خبریں عام کرکے اگر کوئی یہ سمجھتا ہے کہ عوام سے ہمدردی مل جائے گی تو وہ خام خیالی ہے۔ دراصل اس طرح کی خبریں اڑانے سے عوام پر یہ ظاہر ہوا ہے کہ جس حکومت میں وزیر اعظم ہی محفوظ نہیں وہاں عوام کیوں کر محفوظ ہوں گے؟۔ 

ایک نظر اس پر بھی

منگلورو:آر ایس ایس پرچارک تربیتی کیمپ میں امیت شاہ کی شرکت۔ سرخ دہشت گردی ، رام مندر، سبریملا اور انتخابات پر ہوئی خاص بات چیت

ملک کی مختلف ریاستوں میں اسمبلی انتخابات کی مصروفیت کے باوجود بی جے پی کے صدر امیت شاہ نے منگلورو میں آر ایس ایس ’ پرچارکوں‘ کے لئے منعقدہ 6 روزہ تربیتی کیمپ کے اختتام سے ایک دن پہلے ’سنگھ نکیتن‘ میں پہنچ نے کے لئے وقت نکالااور تربیتی کیمپ کے شرکاء سے خطاب کیا۔

مشاعروں کو با مقصد بنا کر نفرت کے ماحول کو پیار اور محبت میں بدلا جاسکتا ہے : سید شفیع اللہ

مشاعرے اردو زبان اور ادب کی تہذیب کے ساتھ ساتھ امن اور اتحاد کو فروغ دینے کا ذریعہ بھی ہیں۔ ملک اور سماج کے موجودہ حالات کو بہتر بنانے کیلئے زیادہ سے زیادہ مشاعروں کا انعقاد کیا جائے۔ بنگلورو میں بزم شاہین کے کل ہند مشاعرے میں ان خیالات کا اظہار کیا گیا۔

ٹیپوجینتی منسوخ کرنے کی کوئی تجویز نہیں ہے جواہر لال نہروکی جنم دن تقریب سے وزیراعلیٰ کااظہار خیال

کسانوں کی طرف سے حاصل کردہ زرعی قرضہ معاف کئے جانے کے سلسلہ میں شکوک وشبہات کا شکار نہ ہوں۔ قرضہ وصولی کیلئے کسانو ں کوغیر ضروری طور پر اذیت دی گئی تو بینک منیجرکو بھی گرفتار کیا جاسکتا ہے ۔