ساحلی کرناٹک کی 2سیٹیں جے ڈی ایس کو دینے کی مخالفت ؛ سینئر کانگریس لیڈر جناردھن پجاری کا راہول گاندھی سے ملاقات کرنے کا فیصلہ 

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 16th March 2019, 12:39 PM | ساحلی خبریں | ریاستی خبریں |

منگلورو،16مارچ (ایس او نیوز ) بی جےپی کو شکست دینے کے مقصد سے کئے گئے کانگریس اور جے ڈی ایس کے درمیان سیٹوں کے بٹوارے کے بعد   ساحلی کرناٹکا کی 2سیٹیں جے ڈی ایس کو دینے پر دونوں اضلاع میں  مخالفت کی جارہی ہے۔ اس دوران دکشن کنڑا لوک سبھا حلقے سے دوبارہ انتخاب لڑنے  کی خواہش کا اعادہ کرتے ہوئے کانگریس کے سینئر لیڈر بی جناردھن پجاری نے کہا کہ وہ عنقریب دہلی میں پارٹی صدر راہول گاندھی سے ملاقات کر کے اپنے لیے ٹکٹ طلب کریں گے۔ انہوں نے کانگریس کی جانب سے جے ڈی ایس کے لیے دو لوک سبھا سیٹیں چھوڑنے کے فیصلے کی بھی مخالفت کی ۔

میڈیا سے بات کرتے ہوئے 82سالہ پجاری جو سابق منگلورو لوک سبھا حلقے کی 1977ء اور 1991ء کے درمیان متواتر چار مرتبہ نمائندگی کرچکے ہیں، نے کہا کہ میں دہلی میں دیگر پارٹی قائدین سے بھی ملاقات کروں گا۔ پارٹی جسے بھی ٹکٹ دے گی میں اس کی حمایت کروں گا خواہ وہ (بی رما  ناتھ ) رائے ہوں یا ونئے کمار سورکے ، تاہم اگر ساؤتھ کینرا ڈسٹرکٹ سنٹرل کو آپریٹیو بینک کے چیرمین ایم این راجندر کمار اور ایوان ڈی سوزا ایم ایل سی کو اگر ٹکٹ دیا جاتا ہے تو وہ اس کی مخالفت کریں گے۔ اگر پارٹی انہیں ٹکٹ دیتی ہے تو میں یقیناًاس کی مخالفت کرتے ہوئے بطور باغی امیدوار میدان میں اتروں گا۔ ‘‘

اُڈپی چکمگلو رو اور اُتر کنڑا حلقے کو جے ڈی ایس کیلئے چھوڑنے کے پارٹی کے فیصلے پر اظہار ناراضگی ظاہر کرتے ہوئے پجاری نے کہا کہ دونوں حلقوں میں کانگریس کی اچھی خاصے ووٹرس  موجود ہیں ۔ میں نئی دہلی میں قائدین کو اچھی طرح سمجھاؤں گا اور انہیں اپنے فیصلے پر نظر ثانی کرنے کو کہوں گا۔ چکمگلورو وہ حلقہ ہے جہاں سے سابق وزیر اعظم اندرا اگاندھی منتخب ہوئی تھیں ۔ پارٹی یہ سیٹ جے ڈی ایس کے لیے چھوڑنے کی متحمل نہیں ہوسکتی ۔کرپشن کے خلاف وزیر اعظم مودی کے اقدامات کی ستائش کرتے ہوئے پجاری نے کہا کہ ایسے افراد کو منتخب کیا جانا چاہیے اور ملک کی باگ ڈور ان کے ہاتھ میں ہونی چاہیے مگر یہ میری شخصی رائے ہے ۔ ‘‘ پجاری نے یہ بات اس وقت کہی جب انہیں کانگریس کی جانب سے رافیل طیاروں کی خریدی پر مودی پر سوال اٹھائے جانے سے متعلق پوچھا گیا۔ 

ایک نظر اس پر بھی

جنوبی کینرا ایم پی نلین کمار کٹیل نے کی مہاتما گاندھی کے قاتل ناتھو رام گوڈسے کی حمایت

بھوپال سے بی جے پی کی پارلیمانی امیدوار پرگیہ سنگھ ٹھاکور نے مہاتما گاندھی کے قاتل ناتھو رام گوڈسے کی ستائش کرتے ہوئے کہا تھا کہ وہ ایک اصلی دیش بھکت تھا۔ اس متنازعہ بیان کی ہرطرف سے مذمت ہورہی تھی مگراس کی حمایت میں اب ضلع جنوبی کینرا کے ایم پی نلین کمار کٹیل اور ضلع شمالی ...

سی پی آئی ایم کارکن قتل معاملے میں آر ایس ایس اور بی جے پی کے 7کارکنان کوسزائے عمر قیداورفی کس 1لاکھ روپے جرمانہ

کمیونسٹ پارٹی آف انڈیا (ماکسسٹ) کے پی پویتھرن نامی کارکن کوقتل کیے جانے کے 12سال بعد اس جرم کا ارتکاب ثابت ہونے پر آر ایس ایس اور بی جے پی سے تعلق رکھنے والے 7کارکنان کو عدالت نے عمر قید کی سزا سنائی ہے۔

بھٹکل میونسپالٹی انتخابات کے لئے51 اُمیدواروں نے داخل کیا پرچہ نامزدگی؛ 9 اُمیدوار بلامقابلہ منتخب ہونا طئے؛ 29 مئی کو ہوں گے انتخابات

بھٹکل میونسپالٹی کے لئے 29 مئی کو ہونے والے انتخابات میں جملہ 23 سیٹوں کے لئے 51 اُمیدواروں نے  53 پرچہ نامزدگیاں داخل کی ہیں۔ جمعرات کو پرچہ داخل کرنے کی آخری تاریخ تھی جس کے ساتھ ہی  یہ صاف ہوگیا ہے کہ جملہ 23 سیٹوں میں  سے 9 سیٹوں پر کوئی مقابلہ نہیں ہوگا کیونکہ ان سیٹوں  پر صرف ...

منکی میں عورت اور اُس کی دو بیٹیوں کی نعشیں ملنے کا معاملہ؛ ہوگئی شناخت ؛ کیا اُس کے شوہر نے ہی ان تینوں کا قتل کرایا ؟

قریبی علاقہ منکی میں گذشتہ روز ایک خاتون اور دو لڑکیوں کی نعشیں  سمندر کنارے برآمد ہوئی تھیں، جس کے تعلق سے شبہ ظاہر کیا جارہا تھا کہ انہوں نے خودکشی کی ہوگی، مگر اس معاملے میں ایک نیا موڑ آگیا ہے جس کے مطابق  گمان کیا جارہا ہے کہ اُسی کے شوہر نے  اُس کا قتل کیا ہے۔

بنگلور میں 23/ مئی کو ووٹوں کی گنتی کے دوران امتناعی احکامات نافذ

23 مئی کو لوک سبھاانتخابات کے نتائج کا اعلان ہورہا ہے۔ انتخابات کے نتائج ظاہر ہونے کے مرحلے میں کوئی ناخوشگوار صورتحال پیدا نہ ہونے پائے اس کے لئے شہر کے پولیس کمشنر سنیل کمار نے 23مئی کی صبح چھ بجے سے شہر بھر میں امتناعی احکامات نافذ کرنے کا اعلان کیا ہے۔

کرناٹک کے کندگول اور چنچولی حلقوں میں آج ہوگی پولنگ؛ 85 پولنگ بوتھوں کو قرار دیا گیا ہے حساس

ریاست کرناٹک  کے دو اسمبلی حلقوں کندگول اور چنچولی کے لئے آج اتوار کو  ووٹ ڈالے جائیں گے۔ دونوں حلقوں پر کامیابی درج  کرنے کے لئے کانگریس جے ڈی ایس اتحاد اور بی جے پی نے ایڑی چوٹی کا زور لگایا ہے۔

محمد محسن کی فرض شناسی کو پھر نشانہ بنانے کی کوشش، الیکشن کمیشن تادیبی کارروائی کے لئے ہائی کورٹ سے رجوع

اڈیشہ میں انتخابی مشاہد کے طور پر متعین کرناٹک کیڈر کے آئی اے ایس افسر محمد محسن نے وزیراعظم مودی کے ہیلی کاپٹر کی تلاشی لے کر جس فرض شناسی کا ثبوت پیش کیا اسے فرض شکنی قرار دیتے ہوئے الیکشن کمیشن نے نہ صرف انہیں معطل کردیا بلکہ اب ایسا لگتا ہے کہ الیکشن کمیشن نے انہیں نشانہ ...