بھٹکل میں زائد منافع کالالچ دے کر 100کروڑ سے زائد رقم کی دھوکہ دہی کا الزام : کمپنی مالکان کے گھروں کا گھیراؤ اور احتجاج

Source: S.O. News Service | By Abu Aisha | Published on 14th October 2018, 11:15 PM | ساحلی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

بھٹکل:14/اکتوبر(ایس اؤ نیوز) شہر کے آزاد نگر میں واقع فلالیس نامی کمپنی کے مالکان  پر سو کروڑ سے زائد رقم لے کر فرار ہونے کا الزام عائد کرتے ہوئے  سینکڑوں لوگوں نے آج اُن  کے مکانوں  کا گھیراو کیا اور اپنی رقم واپس دینے کا مطالبہ کرتے ہوئے احتجاج کیا۔  احتجاجیوں کا کہنا تھا کہ   فلالیس نامی جعلی کمپنی کی شروعات کرکے اللہ کےنام پر بڑی بڑی باتیں کرتے ہوئے عوام کا اعتماد حاصل کیا گیا پھر  100کروڑ  سے زائد رقم لے کر کمپنی کے مالکان فرار ہوگئے۔

احتجاجیوں نے اخبارنویسوں کو بتایا کہ وثیق ، عمران  ، غفران، انضمام اور عبداللہ نامی افراد نے ’نیو فلالیس ٹریڈ لنک (فیس کریم ) کمپنی کا افتتاح کیا تھا، پھر  زائد منافع کا لالچ دے کر عوام کو شراکت داری کی ترغیب دی گئی  جس پر بھروسہ کرتے ہوئے عوام نے اپنی سخت محنت کی کمائی  اس میں لگا دی تھی ۔گھر کے سامنے جمع بھیڑ نے  ان لوگوں پر الزامات کی بوچھاڑ کرتے ہوئے  بتایا کہ ان لوگوں نے  غریب  عوام  کی رقم لے کر فرار ہوگئے ہیں ۔

عوام نے بتایا کہ  سودی کاروبار سے مکمل اجتناب کرنے والے مسلمانوں سے ملاقات کرتے ہوئے کمپنی مالکان نے انہیں اعتماد دلایا تھا کہ ہم نے جماعت کی منظوری لے کر ہی کمپنی کی شروعات کی ہے۔ 12سے 17فی صد منافع کی تقسیم کرنے کااللہ کے نام پر وعدہ کیا  جس پر بھروسہ کرتے ہوئے ہم نے  گھرمیں جتنی بھی رقومات تھیں سب  کمپنی میں جمع کرادیں۔ احتجاجیوں کے مطابق بھٹکل میں عوام کی طرف سے 100کروڑ سے بھی زائد رقم جمع کی گئی ہیں۔

احتجاجیوں نے بتایا کہ شروعات میں ایک دومہینے تھوڑی رقومات عوام میں تقسیم کی گئی تھی مگر بعد  میں کمپنی مالکان اچانک  غائب ہوگئے۔ احتجاجیوں نے بتایا کہ سوشیل میڈیا کے ذریعے  ان کی جانب سے پیغامات آرہے تھے کہ اُنہیں   آج نہیں تو کل ، کل نہیں تو پرسوں تمام لوگوں کی رقومات واپس دی جائے گی، مگر آج اور کل کا  بھروسہ دلاتے دلاتے آج  7مہینے گزرگئے ہیں ۔ بعض  احتجاجیوں  نے یہ بھی بتایا کہ انہیں اب مالکان نے صاف طور پر بتادیا ہے کہ  پولس بھی ان کےساتھ ہے، اس لئے رقم اب واپس نہیں لوٹائی جائے گی۔ وہ ہمیں اب دھمکی دے  رہے ہیں کہ  تم کو جو کرنا ہے، کرو، اب رقم واپس نہیں کی جائے گی۔

احتجاجیوں نے بتایا کہ ہم لوگ اب سخت  مشکلات میں گھر گئے ہیں ، لہٰذا ہمیں ہماری رقم واپس لوٹائی جائے۔ حالات بدلتے دیکھ کرسرکل پولس انسپکٹر گنیش اپنے عملے کے ساتھ جائے وقوع پر پہنچے اور  حالات کو قابومیں کیا۔ اس سلسلے میں سی پی آئی گنیش نے بتایا کہ کمپنی کے  رجسٹریشن کی ابھی تک تصدیق نہیں ہوئی ہے۔اگرعوام رقم ادا کرنے کے  دستاویزات کے ساتھ پولس تھانہ میں شکایت درج کرتے ہیں  تو ہم کیس درج کرنے تیار ہیں۔

ایک طرف عوام فلالیس نامی کمپنی کے مالکان  کے خلاف اپنے غصے کا اظہار کرتے ہوئے اُن کے مکان میں گھس رہے تھے، تو وہیں گھر پر موجود خواتین بے حد پریشان تھیں، خواتین نے احتجاجیوں کو سمجھانے بجھانے کی کافی کوشش کی، مگر احتجاجیوں کے ریلے کو وہ روکنے میں ناکام رہیں، مگر بعد میں پولس کی مداخلت کے بعد احتجاجیوں کو  وہاں سے ہٹادیا گیا۔ اس موقع پر گفتگو کرتے ہوئے  گھر کی ایک خاتون نے ساحل آن لائن کو بتایا کہ   ہم نے کبھی کسی کو یہ نہیں بتایا کہ ہم لوگ اُن کی رقم واپس نہیں لوٹائیں گے،  خاتون نے یقین دلایا کہ جب تک اُن کے بھائی زندہ ہیں، وہ خوب محنت کرکے عوام کی رقومات کو واپس لوٹائیں گے، لیکن احتجاج کرنے والی   خواتین ہمارے گھر میں آکر ہم پر ٹارچر کریں گی  تو ہم کہاں سے اُن کی رقم واپس لاکر دیں گے۔خاتون نے مزید بتایا کہ ہم یہ بات جانتے ہیں کہ غریب ، مجبوراور محنت کش لوگوں نے   اپنی کمائی اس کمپنی میں  انویسٹ کیا ہے، ہمارے بھائیوں کا ارادہ کسی کو دھوکہ دینے کا نہیں تھا، مگر اُن کی  ٹیم میں شامل  ایک شخص  کے دھوکہ دینے سے   وہ  مشکلات میں گھر گئے ہیں البتہ  ہمارے بھائی برابر اُس شخص کے پیچھے لگے ہوئے ہیں اور رقم واپس حاصل کرنے اپنا  پورا زور لگارہے ہیں۔ خاتون نے عوام سے اپیل کی کہ وہ  برائے کرم اُن کے گھروں میں آکر ہنگامہ نہ مچائیں، ہم خود آپ کی مشکلات سے واقف ہیں، مگر ہم خواتین چونکہ کمانہیں سکتی، آپ   لوگوں کی مدد کرنے سے قاصر ہیں۔

ایک نظر اس پر بھی

ضلع شمالی کینرا میں محکمہ انکم ٹیکس کے چھاپے۔ بی جے پی امیدوار اننت کمار ہیگڈے کے قریبی افراد پر۔87.70لاکھ روپے ہوئے ضبط

ضلع ڈپٹی کمشنر ڈاکٹر ہریش کمار کی طرف سے جاری کی گئی رپورٹ کے مطابق مصدقہ اطلاعات کی بنیا د پر انتخابی ضابطہ اخلاق لاگو کرنے پر تعینات فلائی اسکواڈ اور محکمہ انکم ٹیکس نے سرسی اور سداپور میں بی جے پی امیدوار اننت کمار ہیگڈے کے شناسا افراد پر چھاپہ ماری کی اوراس کے نتیجے میں ...

کانگریس پارٹی نے کیا غیر رہائشی ہندوستانی ووٹروں کے لئے ڈسٹرکٹ کوآر ڈینیٹرکے بطوربھٹکل کے قمر سعدا کا تقرر

بھٹکل کے مشہورغیر رہائشی سماجی خدمت گار اور سعودی عرب کے تاجر قمر سعدا صاحب کو کرناٹکا پردیش کانگریس کی طرف سے پارلیمانی انتخابات کے موقع پر ووٹنگ کے لئے وطن میں تشریف لانے والے این آر آئیز کے لئے’ ڈسٹرکٹ کوآر ڈینیٹر‘ مقرر کیا ہے ۔

مرکزی وزیر اننت کمار ہیگڈے نے دیاجنتادل اورکانگریس کے مشترکہ امیدوار اسنوٹیکر کے الزامات کا جواب (کنڑاروزنامہ کراولی منجاؤمیں شائع شدہ انٹرویو کا ترجمہ )

ضلع شمالی کینرا کی پارلیمانی سیٹ پر موجودہ رکن پارلیمان اننت کمار ہیگڈے کا مقابلہ براہ راست جنتادل ایس اور کانگریس کے مشترکہ امیدوار آنند اسنوٹیکر کے ساتھ ہے۔

ہیبلے گرام پنچایت کے علاقے میں پینے کے پانی کی قلت۔ ایس ڈی پی آئی کی طرف سے دیاگیا میمورنڈم

بھٹکل ہیبلے گرام پنچایت کے جالی کراس، فردوس نگر، نور محلہ ، جامعہ آباد،سیدنا ابوبکرؓ مسجد کے عقب والا رہائشی علاقہ اور دیگر وارڈس میں رہنے والے عوام کو پینے کے پانی کی سخت قلت کا سامنا کرنا پڑرہا ہے۔

ضلع شمالی کینرا میں محکمہ انکم ٹیکس کے چھاپے۔ بی جے پی امیدوار اننت کمار ہیگڈے کے قریبی افراد پر۔87.70لاکھ روپے ہوئے ضبط

ضلع ڈپٹی کمشنر ڈاکٹر ہریش کمار کی طرف سے جاری کی گئی رپورٹ کے مطابق مصدقہ اطلاعات کی بنیا د پر انتخابی ضابطہ اخلاق لاگو کرنے پر تعینات فلائی اسکواڈ اور محکمہ انکم ٹیکس نے سرسی اور سداپور میں بی جے پی امیدوار اننت کمار ہیگڈے کے شناسا افراد پر چھاپہ ماری کی اوراس کے نتیجے میں ...

بی جے پی کا حصہ بن چکی ہیں سرکاری ایجنسیاں:کنی موجھی

گزشتہ چند دنوں میں محکمہ انکم ٹیکس نے ملک کے مختلف حصوں میں چھاپہ ماری کی ہے۔حکام نے منگل کو ڈی ایم کے لیڈر کنی موجھی کے گھر پر چھاپہ ماری کی تھی۔رپورٹوں کے مطابق ان کے پاس سے بڑی مقدار میں نقد رقم جمع ہونے کی اطلاع ملی تھی،اسے لے کر کنی موجھی نے بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) پر ...

کانگریس پارٹی نے کیا غیر رہائشی ہندوستانی ووٹروں کے لئے ڈسٹرکٹ کوآر ڈینیٹرکے بطوربھٹکل کے قمر سعدا کا تقرر

بھٹکل کے مشہورغیر رہائشی سماجی خدمت گار اور سعودی عرب کے تاجر قمر سعدا صاحب کو کرناٹکا پردیش کانگریس کی طرف سے پارلیمانی انتخابات کے موقع پر ووٹنگ کے لئے وطن میں تشریف لانے والے این آر آئیز کے لئے’ ڈسٹرکٹ کوآر ڈینیٹر‘ مقرر کیا ہے ۔

پی یو سی دوم میں مینگلور سینٹ الوسیس کالج کے شاندار نتائج، 98.12 فیصد طلبا کامیاب

مینگلور کی معروف سینٹ الوسیس  پی یو کالج نے گذشتہ سالوں کی طرح امسال بھی شاندار کامیابی درج کی  اور بالجملہ نتائج کی شرح 98.12 فیصد درج کی گئی۔ امسال کالج سے جملہ 1916 طلبا نے پی یو سی دوم کا امتحان دیا تھا جس میں 1880 طلبا کامیاب رہے۔کامیاب ہونے والوں میں 526 طلبا  نے امتیازی نمبرات  ...