مینگلور کے قریبی تعلقہ بیلتنگڈی اور پُتور میں زبردست بارش؛ راستے جھیل اور تالاب میں تبدیل؛ اسکولوں میں چھٹی کا اعلان؛ وزیردیشپانڈے کا متاثرہ علاقوں کا دورہ

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 14th June 2018, 5:50 PM | ساحلی خبریں |

مینگلور 14/جون (ایس او نیوز) ضلع دکشن کنڑا کے  بیلتنگڈی، سولیا اور پُتور میں آج جمعرات کو  ہوئی زبردست بارش سے  کئی راستے جھیل اور تالاب میں تبدیل ہوگئے ہیں اور کئی علاقوں میں سیلاب کی سی صورتحال پیداہوگئی ہے۔  بارش نے عام زندگی کو درہم برہم کردیا ہے، جبکہ اکثر سڑکیں پانی میں ڈوب جانے کی وجہ سے سواریوں کی آمد ورفت  میں زبردست رکائوٹ پیدا ہوگئی ہے۔

زبردست بارش اور سیلابی صورتحال کو دیکھتے ہوئے اسکولوں اور کالجوں میں چھٹی کا اعلان کیا گیا ہے ۔جبکہ شدید بارش سے کھیت کلیان کو زبردست نقصان پہنچا ہے۔

 بارش سے ہوئے نقصانات کا جائزہ لینے اور بارش سے متاثرہ علاقوں کا دورہ کرنے  ریاست کے  مالگذاری  وزیرآر وی دیش پانڈے مینگلور پہنچ گئے ہیں اور متاثرین کو امدادی چیک فراہم کی ہے۔

بارش متاثرین کو امدادی چیک تقسیم:  مینگلور میں گذشتہ کچھ دنوں سے جاری بھاری بارش کے نتیجے میں جن مکانات کو نقصان ہوا تھا اور جن لوگوں کے مکانات مکمل طور پر منہدم ہوگئے تھے ، اُن متاثرین کو آر وی دیش پانڈے نے امدادی چیک تقسیم کئے  انہوں نے کہا کہ ضلع   دکشن کنڑا  میں کئی مکانوں کو نقصان پہنچا ہے، ہر ایک کو سرکار کی طرف سے امداد دی جائے گی، اسی طرح  بارش سے دیگر اضلاع کے متاثرین کو بھی امداد فراہم کی جائے گی۔ دیش پانڈے نے کہا کہ جو لوگ کرائے کے مکانوں پر رہتے ہیں اُن متاثرین کو بھی سہولیات فراہم کی جائے گی۔ دیش پانڈے نے مزید کہا کہ  ضلع جنوبی کینرا اور اُڈپی میں اب تک تین کروڑ روپیوں کی امداد ریلیز کی گئی ہے۔

دیش پانڈے نے بتایا کہ چارماڑی گھاٹ پر متعدد مقامات پر چٹانیں کھسکنے کی وجہ سے سڑک فی الحال بندکردی گئی ہے اور  راستوں کو صاف کرنے کا کام جاری ہے۔کام مکمل ہونے کے بعد راستوں کو سواریوں کے لئے دوبارہ کھولا جائے گا۔

 

ایک نظر اس پر بھی

اُترکنڑا سے چھٹی مرتبہ جیت درج کرنے والے اننت کمار ہیگڑے کی جیت کا فرق ریاست میں سب سے زیادہ؛ اسنوٹیکر کو سب سے زیادہ ووٹ بھٹکل میں حاصل ہوئے

پارلیمانی انتخابات میں شمالی کینرا کے بی جے پی امیدوار اننت کمار ہیگڈے نے پوری ریاست کرناٹک میں سب سے زیادہ ووٹوں سے کامیابی حاصل کی ہے۔ انہوں نے 479649 ووٹوں کی اکثریت سے کانگریس  جے ڈی ایس مشترکہ اُمیدور  آنند اسنوٹیکر  کو شکست دی ۔

ریاست میں کبھی ہار کا منھ نہ دیکھنے والے سیاسی لیڈروں کی ذلت بھری شکست

ریاست کرناٹکا میں انتخابی میدان میں کبھی ہار کا منھ نہ دیکھنے والے چند نامورسیاسی لیڈران جیسے ملیکا ارجن کھرگے، دیوے گوڈا، ویرپا موئیلی اورکے ایچ منی اَپا وغیرہ کو اس مرتبہ پارلیمانی انتخاب میں انتہائی ذلت آمیز شکست سے دوچار ہونا پڑا ہے۔ 

منگلورو:کلاس میں اسکارف پہننے پر سینٹ ایگنیس کالج نے طالبہ کو دیا ٹرانسفر سرٹفکیٹ۔طالبہ نے ظاہر کیاہائی کورٹ سے رجوع ہونے اور احتجاجی مظاہرے کاارادہ

کلاس روم میں اسکارف پہن کر حاضر رہنے کی پاداش میں منگلورومیں واقع سینٹ ایگنیس کالج نے پی یو سی سال دوم کی طالبہ فاطمہ فضیلا کو ٹرانسفر سرٹفکیٹ دیتے ہوئے کالج سے باہر کا راستہ دکھا دیا ہے۔

بھٹکل میں رمضان باکڑہ کی نیلامی؛ 40 باکڑوں کے لئے میونسپالٹی کو 1126 درخواستیں

رمضان کے آخری عشرہ کے لئے بھٹکل  میں لگنے والے رمضان باکڑہ کی آج میونسپالٹی کی جانب سے  نیلامی کی گئی۔ بتایا گیاہے کہ 40 باکڑوں کی نیلامی کے لئے  میونسپالٹی کے جملہ 1126 درخواست فارمس فروخت ہوئے تھے۔