لاپتہ پن ہنس ہیلی کاپٹر تباہ، 3 لاشیں برآمد

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 13th January 2018, 9:33 PM | ملکی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

ممبئی، 13؍جنوری ( ایس اونیوز؍آئی این ایس انڈیا ) ممبئی کے جوہو ہوائی اڈے سے پرواز کرنے کے فوراً بعد پون ہنس ہیلی کاپٹر حادثہ کا شکار ہوگیا ۔ ہیلی کاپٹر میں پانچ حکام اور دو پائلٹ سوار تھے ۔ بھارتی بحریہ کے آئی سی جے فورس اور دیگر ایجنسیوں کی طرف سے اس کے لیے تلاشی مہم کا آغاز کیا گیا ۔ تلاشی مہم میں ٹیم کو ہیلی کا پٹر کا تباہ شدہ کچھ حصہ اور تین لاشیں ملی ہیں ۔ بھارتی بحریہ کے آئی سی جی کی ٹیم کو بحر عرب سے پنکج گرگ نامی ایک مسافر کی لاش سمت مزید تین لاش برآمد کرنے میں کامیاب ہوگئی ہے ۔آئی سی جے کے ایک اہلکار نے بتایا کہ حادثہ کا شکار ہیلی کاپٹر کا ملبہ تھانہ ضلع کے بیچ ( ساحل ) کے قریب پایا گیا ۔ ڈافین ہیلی کاپٹر، وی ٹی پی ڈبلیو صبح 10.20 بجے پرواز کیا اور اس کے 15منٹ کے بعد ہی اس کا رابطہ اور ممبئی اے ٹی سی اور او این جی سی دونوں سے ختم ہو گیا ۔ اس وقت اس کے ممبئی کے ساحل سے تقریبا 55 کلومیٹر دور ہونے کا گمان کیا گیا جو یہاں سے شمال مشرق 175 کلومیٹر دور ہے ۔ایک سرکاری ترجمان نے کہا ہے کہ آئی سی جے کی ٹیم نے تلاش اور بچاؤ آپریشن کے لیے جائے وقوعہ کی طرف چار جہاز، ایک ڈورنئر طیارہ اور اس کے علاوہ دو ہیلی کاپٹر بھیجے گئے ہیں ۔ 

ایک نظر اس پر بھی

جے پی سی سے جانچ کرانے کا راستہ ا بھی کھلا ہے، عام آدمی پارٹی نے کہا،عوام کی عدالت اورپارلیمنٹ میں جواب دیناہوگا،بدعنوانی کے الزام پرقائم

آپ کے راجیہ سبھا رکن سنجے سنگھ نے کہا ہے کہ رافیل معاملے میں جمعہ کو آئے سپریم کورٹ کے فیصلے کے باوجود متحدہ پارلیمانی کمیٹی (جے پی سی) سے اس معاملے کی جانچ پڑتال کرنے کا اراستہ اب بھی کھلا ہے۔

رافیل پر سپریم کورٹ کے فیصلے کے بعد ، راہل گاندھی معافی مانگیں: بی جے پی

فرانس سے 36 لڑاکا طیارے کی خریداری کے معاملے میں بدعنوانی کے الزامات پر سپریم کورٹ کی کلین چٹ ملنے کے بعد کانگریس پر نشانہ لگاتے ہوئے بی جے پی نے جمعہ کو کہا کہ کانگریس پارٹی اور اس کے چیئرمین راہل گاندھی ملک کو گمراہ کرنے کیلئے معافی مانگیں۔

بھٹکل کے مرڈیشور میں دو لوگوں پر حملے کی پولس تھانہ میں دو الگ الگ شکایتیں

تعلقہ کے مرڈیشور میں کل جمعرات کو  دو لوگوں پر حملہ اور پھر جوابی حملہ کے تعلق سے آج مرڈیشور تھانہ میں دو الگ الگ شکایتیں درج کی گئی ہیں اور پولس نے دونوں پارٹیوں کی شکایت درج کرتے ہوئے چھان بین شروع کردی ہے۔