ہلیال گناکاشت کاروں کا بند مکمل کامیاب :وکلاء تنظیم کی حمایت ،18ستمبر کو ودھان سودھا گھیراؤ کا فیصلہ

Source: S.O. News Service | By Abu Aisha | Published on 6th September 2018, 9:31 PM | ساحلی خبریں |

ہلیال:6/ستمبر(ایس اؤ نیوز) شکرکارخانے کی انتظامیہ  نے  گنا کاشت کاروں سے کئے گئے وعدے کے مطابق اضافی معاوضہ اداکئے جانےکی مذمت کرتے ہوئے ریاستی حکومت کی مداخلت کا مطالبہ لے کر گنا کاشت کاروں کی طرف سے بدھ کو اعلان کیا گیا ہلیال بند مکمل کامیاب ہواہے۔

کسانوں کی طرف سے اعلان کردہ بند کو دیکھتے ہوئے ہلیال شہر میں کوئی لین دین نہیں ہوا، بازار،ہوٹل، دوکانیں وغیرہ  پوری طرح بندرہیں۔ دیہی علاقوں کے لئے بسوں کا آنا جانا بہت ہی کم رہا۔ علاقے میں چوطرفہ کسی بھی انہونی سے روکنے کےلئے سخت پولس سکیورٹی لگائی گئی تھی۔

اضافی معاوضہ فی ٹن 305روپئے کا مطالبہ لے کر گنا کاشت کاروں نے 6اگست سے کارخانے کے روبرو اپنا مسلسل احتجاج جاری رکھا ہواہے، ایک ماہ گزرنےکے بعد بھی کوئی حل نظر نہیں آیا تو کاشت کاروں نے بند کا اعلان کرتے ہوئے احتجا ج منایا۔ مراٹھا بھون سے نکلی احتجاجی ریلی تعلقہ دفتر اور پولس تھانہ کے سامنے شیواجی سرکل کی قومی شاہراہ پر احتجاجی پروگرام منعقد کیا۔ جہاں گنا کاشت کار سنگھ کے ریاستی نائب صدر ایم وی گھاڑی ، ایس کے گوڈا، یوکے بوباٹے، شنکر کاجگار، اشوک میٹی وغیرہ نے اپنے خیالات کااظہارکیا۔ تحصیلدار ودیا دھر نے کسانوں کے میمورنڈم کو حاصل کیا۔ بدھ کے بند کو شہر کی وکلاء تنظیم نے حمایت کرتے ہوئے عدالتی کارروائیوں کا بائیکاٹ کرتے ہوئے کسانوں کے ساتھ احتجاج میں شامل ہوئے۔ کسانوں نے اضافی معاوضہ ملنے تک اپنا احتجاج جاری رکھنے کا انتباہ دیتے ہوئے کہاکہ 18ستمبر کو بنگلورو میں سنگھ کے ریاستی صڈر کروبرو شانت کمار کی قیادت میں  وزیر اعلیٰ کمار سوامی کی رہائشی کے سامنے احتجاج کرنے کا فیصلہ لیاہے۔

ایک نظر اس پر بھی

ساحلی کرناٹکا میں موسلادھار بارش کا سلسلہ جاری؛ اُترکنڑا میں ریڈ الرٹ؛ ساگرروڈ پر غیر قانونی باکڑوں کو نہ ہٹانے کے پیچھے کیا راز ؟ مینگلور اور اُڈپی میں منگل کو اسکولوں اور کالجوں میں چھٹی

ساحلی کرناٹکا بشمول اُتر کنڑا، اُڈپی اور دکشن کنڑا میں  اتوار سے  جاری زوردار بارش کا سلسلہ آج پیر کو بھی جاری رہا جس سے  کئی علاقوں میں راستے تالاب میں تبدیل ہوگئے،  اس درمیان  محکمہ موسمیات کی جانب سے  بتایا گیا ہے کہ  کل اتوار کو بھٹکل میں جو زبردست بارش ہوئی، اُس کی ...

اترکنڑا ضلع میں مزید بارش کے امکانات کے پیش نظر ریڈ الرٹ جاری :بھٹکل میں ریکارڈ 140ملی میٹر بارش

ضلع کے ساحلی  پٹی کے مقامات پر رات دن  مسلسل برستی بارش کے نتیجےمیں عوامی زندگی بہت بری طرح متاثر ہوئی۔ پیر کی صبح سے شروع ہوئی بارش شام تک لگاتار برستی رہی ۔ ان حالات میں محکمہ موسمیات کی طرف سے ’ریڈ الرٹ ‘ جاری کرتے ہوئے  علاقہ میں مزید بارش برسنے کا امکان بتایا ہے۔ محکمہ ...