یہ اسلام کی حقانیت ہے کہ تمام مشکلات برداشت کرلی گئیں ، مسلمان کے طور پر زندگی بسر کرناچاہتی تھی اس لیے سپریم کورٹ گئی: ہادیہ 

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 13th March 2018, 11:45 AM | ملکی خبریں |

تراوندپرم 12مارچ(ایس او نیوز؍ آئی این ایس انڈیا )مبینہ لو جہاد معاملے میں سپریم کورٹ کے فیصلے کے بعد اپنے آبائی ریاست کیرالہ پہنچی ہادیہ شافعین نے پیر کو ایک پریس کانفرنس میں کورٹ کے فیصلے پر خوشی کا اظہار کیا اور دعوی کیا کہ ان کے خاندان والوں نے انہیں گھر میں بند کر دیا تھا۔ اس دوران انہیں کافی تشدد سے بھی گزرنا پڑا۔ انہوں نے کہا کہ وہ مسلمان کے طور پر زندگی بسر کرنا چاہتی تھیں، اسی لیے وہ سپریم کورٹ گئیں۔ ہادیہ نے کہا کہ وہ سپریم کورٹ کے فیصلے سے بے حد خوش ہیں۔ انہوں نے کہاکہ مجھے گھر میں بند کر دیا گیا تھا، تو مجھے کچھ بھی معلوم نہیں تھا، باہر نکلی تو پتہ چلا کہ کتنے لوگ میرے لئے کام کر رہے ہیں۔ میں ان تمام لوگوں کا شکریہ ادا کرنا چاہتی ہوں جنہوں نے میری آزادی کے لئے اپنا تعاون پیش کیا، میں اپنی آزادی کے لئے جنگ لڑ رہی تھی، اسی لیے سپریم کورٹ کا دروازہ کھٹکھٹایا۔ انہوں نے کہاکہ میں کسی کے اوپر الزام نہیں لگانا چاہتی ہوں، میرے دو سال صرف قانونی جنگ لڑنے میں گزر گئے۔ اس کے بعد سپریم کورٹ نے مجھے اپنے شوہر سے ملنے کی اجازت دی۔ آخرکار مجھے انصاف ملا ۔ انہوں نے کہاکہ آئین انہیں اپنا شوہر منتخب کرنے کی اجازت دیتا ہے لیکن مجھے اپنے گھر میں بند کر دیا گیا۔ ہادیہ نے کہاکہ مجھے 100 فیصد یقین ہے کہ میں نے کوئی غلطی نہیں کی لیکن مجھے گھر میں قید کر دیا گیا جو اس ملک میں نہیں ہونا چاہئے۔ ہادیہ نے کہا کہ وہ دو وجوہات سے سپریم کورٹ گئیں۔ پہلی وجہ یہ تھی کہ وہ ایک مسلمان کے طور پر زندگی گزارناچاہتی ہیں اور دوسری وجہ یہ تھی کہ وہ اپنے شریک حیات کے ساتھ رہنا چاہتی تھیں۔ ہادیہ نے کہا کہ اب جب بھی میں گھر میں رکتی ہوں اچھا لگتا ہے۔ میں کورٹ کے فیصلے کے بہت خوش ہوں، میری جدوجہد اس وقت شروع ہوئی جب میں نے شادی کی، پھر میں کورٹ پہنچی۔ مجھے کافی تشدد سے گزرنا پڑا۔ 

ایک نظر اس پر بھی

انسانیت پھر ہوئی شرمسار راجدھانی دہلی میں معصوم نابالغہ سے کی گئی عصمت دری؛ ملزم گرفتار

دہلی کے سیما پوری علاقہ سے نابالغ لڑکی کی عصمت دری کے معاملہ سامنے آیا ہے۔ ایک انسان کس قدر حیوان بن سکتا ہے، یہ معاملہ جیتی جاگتی مثال ہے۔ اطلاعات کے مطابق ایک شخص نے نہ صرف نابالغ لڑکی کے ساتھ عصمت دری کی بلکہ اس کے نجی اعضاعہ میں زبردستی کچھ چیزیں ڈالنے کی کوشش بھی کی۔

جمعیۃعلماء ہند کی جاری ممبر سازی مہم میں بھر پور حصہ لینے جمعیۃ علماء کے منتظمین کی مسلمانوں سے اپیل

مسلمانانِ ہند کی سب سے بڑی اور قدیم مذہبی تنظیم جمعیۃعلماء ہندکی دو سالہ مدت کے لئے ممبر سازی کا آغاز ہو چکا ہے،اس مہم میں سارے مسلمان مرد اور عورت بھر پور حصہ لیں ،خود بھی ممبر بنیں ،دوست و احباب اور متعلقین کو بھی ممبر بنائیں ۔جمعیۃعلماء ہند کے دستور اساسی کے مطابق ہر بالغ ...

پاکستان میں اب بھی فوج اقتدار پر مسلط ہے : وی کے سنگھ

مرکزی وزیر وی کے سنگھ نے پیر کو کہا کہ نئے وزیر اعظم کے طور پر عمران خان کے انتخابات کے بعد بھی پاکستان میں فوج کا ہی غلبہ ہے۔انہوں نے عمران خان کا نام لئے بغیر کہا کہ یہ دیکھنا ابھی باقی ہے کہ کیا وہ تبدیلی لا پائیں گے۔