گجرات انتخابات:راہل گاندھی کے یہ چار کارڈ یا نتیش کمار کا ایک دعوی، کون ثابت ہوگا صحیح؟

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 15th November 2017, 1:12 AM | ملکی خبریں |

گاندھی نگر،14؍نومبر (ایس او نیوز؍آئی این ایس انڈیا) گجرات میں اسمبلی انتخابات کی تاریخوں کے اعلان کے بعد انتخابی مہم عروج پر پہنچ گئی ہے۔اس بار گجرات میں کانگریس جیتنے کے لئے ہر ممکن کوشش کر رہی ہے اور اس کے لئے وہ کسی سے بھی پیچھے نہیں ہے۔وہیں بی جے پی جہاں وہ 22سالوں سے اقتدار پر قابض ہے اسے اپنا گڑھ بچانے کا چیلنج ہے۔اتنے سالوں میں ایسا پہلی بار ہے جب بی جے پی کو گجرات میں اچھا خاصا مقابلہ دیکھنے کو مل رہا ہے۔کانگریس کے نائب صدر راہل گاندھی بھی اپنے سیاسی کیریئر میں پہلی بار اس انداز میں دکھائی دے رہے ہیں۔ ان کے حکمت عملی کا طریقہ ویسا ہی ہے جیسا مودی اپناتے ہیں۔اسٹیج سے نعروں کو گڑھنا، عوام کی چھوٹے چھوٹے مسائل پر ریلیوں میں بولنا اور ساتھ ہی مخالف رہنماؤں پر طنز کسنا۔یہ کتنا فائدے مند ثابت ہوگایہ وقت بتائے گا۔ پاٹیدارو اور دلت لیڈروں کو وہ اپنی طرف لا چکی ہے۔پاٹیدار ابھی تک بی جے پی کا ہی ووٹ بینک مانے جاتے رہے ہیں لیکن اس بار ریزرویشن کی مانگ کو لے کر ناراضگی کو کانگریس ختم کرنا چاہتی ہے۔ماہرین کا کہنا ہے کہ اگر تھوڑا سا بھی ووٹ فیصد میں تبدیلی ہوئی تو کانگریس کو فائدہ ہو سکتاہے۔لوک سبھا انتخابات میں شکست کی وجوہات کو بتانے والی اے کے انٹونی رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ کانگریس کی ہار کی وجہ اس کی ٹوڑنے کی شبیہہ بھی رہی ہے۔اس کے بعد سے راہل نے اس شبیہ کو توڑنے کی پوری کوشش کی ہے۔راہل نے اس بار وی آئی پی اور سیکورٹی گھیرے میں رہنے والے لیڈر کی شبیہ توڑنے کی کوشش کی ہے۔وہ عام لوگوں سے ملتے ہیں۔وہ اسٹیج پر بھیڑ میں سے کسی کو بلاتے ہیں، سیلفی کھنچواتے ہیں، لوگوں کے درمیان جاتے ہیں، ایسا کرنا لوگوں کو اچھا بھی لگ رہا ہے۔دراصل یہ دیکھ کر اس لئے بھی نیا لگا رہا ہے کیونکہ گزشتہ کئی دہائیوں کے بعد پہلی بار کانگریس کا کوئی بڑا لیڈر عوام سے ایسے بات چیت کر رہا ہے۔اس بات کا تجزیہ ہم پہلے بھی کر چکے ہیں، جس میں کہا گیا ہے گجرات اسمبلی انتخابات کے نتائج کچھ بھی آئیں لیکن فائدہ راہل گاندھی کا ہی ہوگا۔کانگریس کو بھی ایسا لگتا ہے کہ لوک سبھا انتخابات آتے آتے ملک کا حال بدلے گا اور جن مسائل کو راہل گاندھی اٹھا رہے ہیں وہ 2019 تک کافی کارگر ثابت ہوں گے۔

ایک نظر اس پر بھی

راہل گاندھی ذاتی مفاد اور قومی مفاد کو الگ الگ رکھنے والے رہنما ہیں : سورا بھاسکر 

نیٹ فلیکس اوریجنل پر دستیاب سیریز سیکریڈ گیمز پر کانگریس صدر راہل گاندھی کے موقف کے ڈائریکٹر انوراگ کشیپ اور اداکارہ سورا بھاسکر نے تعریف کی ہے۔ویب سیریز میں سابق وزیر اعظم راجیو گاندھی پر مبینہ طور پر کچھ قابل اعتراض تبصرہ پر راہل گاندھی نے کہا کہ بی جے پی اور آر ایس ایس کا ...

مانسون سیشن:اپوزیشن کی برسنے کی تیاریاں

بڑھتی مہنگائی اور خاص طور پر پٹرول-ڈیزل کی قیمتوں میں مسلسل اضافہ ، روپے کی گرتی قیمت، جموں و کشمیر کے حالات، آندھرا پردیش اور کسانوں کے مسائل پر اپوزیشن پارٹیوں کے سخت تیوروں کو دیکھتے ہوئے بجٹ سیشن کی طرح پارلیمنٹ کا مانسون سیشن کے بھی ہنگامہ دار رہنے کا امکان ہے۔

سمترامہاجن ایوان چلانے کے لیے راہل گاندھی سے تعاون مانگیں گی

لوک سبھا اسپیکر سمترا مہاجن پارلیمنٹ کے مانسون سیشن کو پرسکون انداز میں کارروائی یقینی بنانے کے واسطے کل جماعتی میٹنگ سے قبل کانگریس صدر راہل گاندھی سمیت مختلف پارٹیوں کے رہنماؤں کے ساتھ الگ الگ میٹنگیں کریں گی

رابعہ اسکول کے خلاف نوٹس، مگر اسکول بند نہیں ہونے دیا جائے گا: اقلیتی کمیشن

پچھلے دنوں پرانی دلی کے رابعہ گرلز اسکول میں کے جی اور پرائمری کے کچھ بچوں کو فیس نہ ادا کرنے کی وجہ سے بیسمنٹ میں گھنٹوں بند کرنے پر دہلی اقلیتی کمیشن نے مذکورہ اسکول کی پرنسپل، ڈائرکٹر آف ایجوکیشن (اسکول برانچ) اور سنٹرل ڈسٹرکٹ کے ڈی سی پی کونوٹس دے کر پوچھا ہے

تلنگانہ کے سکندرآباد سے اگلا لوک سبھا انتخابات لڑنا چاہتے ہیں اظہرالدین

گزشتہ دو لوک سبھا انتخابات میں اتر پردیش اور راجستھان سے قسمت آزمانے کے بعد کانگریس لیڈر اور سابق ہندوستانی کرکٹ کپتان محمد اظہر الدین 2019 کے لوک سبھا انتخابات اپنے آبائی ریاست تلنگانہ کے سکندرآباد سے لڑنا چاہتے ہیں۔