لبنانی خاندان کی جرمنی میں 77 جائیدادیں کیوں ضبط کی گئیں؟

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 21st July 2018, 11:55 AM | عالمی خبریں |

برلن 21جولائی ( ایس او نیوز؍آئی این ایس انڈیا ) جرمن حکام نے کئی درجن رہائشی اپارٹمنٹس بحق سرکار ضبط کر لئے ہیں۔ ان جائیدادوں کے بارے میں جرمن حکام کا دعوی ہے کہ یہ شہر میں سرگرم "مجرموں کے ایک نیٹ ورک" کی ملکیت ہیں۔

جرمنی میڈیا کے مطابق ملک میں منظور کئے جانے والے ایک نئے قانون میں پولیس کو ایسی جائیداد ضبطی کا اختیار ہے جو ناجائز ذرائع سے حاصل کردہ آمدن سے خریدی گئی ہو۔

برلن کے سرکاری استغاثہ نے دعوی کیا ہے کہ انہوں نے دارلحکومت میں سرکردہ جرائم پیشہ خاندان کے خلاف آپریشن کیا ہے۔ یہ خاندان لبنانی الاصل ہے۔ ویب سائٹ کے مطابق نجی معلومات کے تحفظ سے متعلق قانون کی پاسداری کرتے ہوئے حکام نے گرفتار "قبیلے" کو "آر" کے نام سے شناخت کرائی ہے۔

حکام نے جن 77 جائیدادوں کو ضبط کیا ہے ان کی مالیت تقریباً 9.3 ملین یورو [10.8ملین ڈالرز] بنتی ہے۔

برلن کے چیف سیٹ پراسیکیوٹر جاگ راپاک نے جمعرات کے روز ایک نیوز کانفرنس کو بتایا کہ 16 افراد سے منی لانڈرنگ کے شبہہ میں تفتیش کی جا رہی ہے۔ تمام کا تعلق "آر قبیلے" سے ہے۔ان میں کسی کو ابھی باقاعدہ طور پر گرفتار نہیں کیا گیا۔

ذرائع کے مطابق متذکرہ خاندان کے خلاف کارروائی مالیاتی جرائم کی تفتیش کرنے والے حکام کی جانب سے کمرشل جائیدادوں اور 13 اپارٹمنٹس کی گذشتہ جمعہ کے روز تلاشی کے بعد عمل میں آئی۔

برلن سیٹ پولیس نے بتایا ہے کہ فلیٹس کے متعدد بلاک، سنگل مکانات، اپارٹمنٹس اور الاٹ کردہ درجنوں جائیدادیں لبنان الاصل خاندان کی ملکیت ہیں۔

حالیہ جائیداد ضبطی 2014ء میں برلن کے میری ینڈوف ڈسٹرکٹ میں بینک لوٹنے کے حوالے سے کی جانے والی تحقیقات کے سلسلے کی تازہ ترین کارروائی ہے۔ "سپارکاسے" نامی بینک لوٹنے کی اس کارروائی میں زوردار دھماکے سے بینک کی پوری عمارت تباہ ہو گئی تھی جبکہ اس میں سے رکھے گئے 9.16 ملین یورو بھی چرا لئے گئے تھے۔

ویب سائٹ کے مطابق "آر قبیلے" کا توفیق آر نامی ایک شخص بینک لوٹنے کی کارروائی کا مجرم قرار پایا تھا، تاہم چوری شدہ رقم واپس نہیں مل سکی تھی۔ تاہم بعد تفتیش کاروں کو بعد ازاں معلوم ہوا کہ سزا یافتہ توفیق آر کا ایک بھائی شہر میں جائیداد خریدنے میں مصروف تھا حالانکہ وہ ظاہری طور پر ریاستی وظیفے پر گذر بسر کر رہا تھا ۔

آر قبیلے سے تعلق رکھنے والے افراد حالیہ چند برسوں میں برلن کے اندر ہونے والے بینک چوری کی وارداتوں میں ملوث پائے گئے ہیں۔ گذشتہ برس اسی نیٹ ورک سے منسلک چار افراد، جن کی عمریں اٹھارہ سے بیس برس کے درمیاں تھیں، کو مارچ 2017 میں شہر کے بوڈے میوزیم سے 100کلوگرام کینڈین گولڈ کوائن چرانے کے شبہے میں گرفتار کیا گیا تھا۔ اب تک اس چوری کی ایف آئی آر نہیں کاٹی گئی، تاہم بعد ازاں گرفتار ملزماں کو رہا کر دیا گیا۔ چرائے گئے قیمتی سکے برآمد نہیں کرائے جا سکے۔

ایک نظر اس پر بھی

امریکا کا پاک بھارت وزرائے خارجہ کی مجوزہ ملاقات کا خیرمقدم

امریکا نے پاک بھارت وزرائے خارجہ کی مجوزہ ملاقات کو خوش آئند قرار دیا ہے۔ امریکی محکمہ خارجہ کی ترجمان ہیدر نوریٹ نے پریس بریفنگ کے دوران پاک بھارت وزرائے خارجہ کی ملاقات کو دونوں ممالک کے لیے خوش آئند قرار دیتے ہوئے کہا کہ ملاقات سے دونوں ملکوں کو مل کر بیٹھنے اور بات کرنے کا ...

اعتراف شکست یا پھر کچھ اور؟ داعش اور القاعدہ اپنے عزائم میں اب بھی پختہ: امریکی اہلکار

 انسداد دہشت گردی سے وابستہ امریکی اہلکاروں نے کہا ہے کہ داعش اور القاعدہ جیسے دہشت گرد گروہوں سے لڑائی اور اْن کے زیر قبضہ علاقے وارگزار کرانے کے سلسلے میں اہم پیش رفت حاصل ہونے کے باوجود، دہشت گردی کی صورت حال پیچیدہ تر ہو گئی ہے۔

چین: عیسائی گرجا گھر کے خلاف سخت کارروائی

حالیہ دِنوں کے دوران بیجنگ کا سب سے بڑا چرچ بند کر دیا گیا ہے، جب کہ چین کے دوسرے شہروں میں مذہبی اجتماعات کے خلاف سخت کارروائی کی گئی ہے۔ مسیحی قائدین، دانشور اور شہری حقوق کیوکلا کا کہنا ہے کہ یہ کارروائیاں مذہب کو حکمراں کمیونسٹ پارٹی کے مکمل ضابطے میں لانے کی وسیع تر کوشش کا ...

امریکی ریاست میری لینڈ میں فائرنگ، چار افراد ہلاک

امریکہ کی شمال مشرقی ریاست میری لینڈ میں ادویات کی ایک کمپنی رائٹ ایڈ کے ڈسٹری بیوشن مرکز میں جمعرات کی صبح فائرنگ کے ایک واقعہ میں تین افراد ہلاک ہو گئے۔ رائٹ ایڈ کی ایک ترجمان پیٹ سیٹریلا نے بتایا کہ ویئر ہاؤس میں تقریباً 1000 افراد کام کرتے ہیں اور یہاں سے 2500 سے زیادہ اسٹوروں ...

عمران خان کے خط کے بعد اب ہند۔ پاک کے وزراء خارجہ کی نیویارک میں ہوگی میٹنگ

 ہندوستان اور پاکستان کے وزراء خارجہ کے درمیان نیویارک میں اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کے دوران الگ سے ملاقات ہوگی۔ وزارت خارجہ کے ترجمان رویش کمار نے آج یہاں پریس کانفرنس میں یہ اطلاع دیتے ہوئے بتایا کہ میٹنگ کی تاریخ اور وقت دونوں فریقوں کے درمیان باہمی رضامندي سے بعد میں طے ...