سعودی سیکیورٹی اہلکاروں کو شہید کرنے والا مجرم کون تھا 

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 21st April 2018, 12:57 PM | خلیجی خبریں |

ریاض20 اپریل (ایس او نیوز؍ آئی این ایس انڈیا) سعودی عرب کے صوبے عسیر میں جمعرات کے روز ایک چیک پوسٹ پر فائرنگ کے واقعے میں چار سکیورٹی اہل کار شہید اور متعدد زخمی ہو گئے۔ اس مجرمانہ کارروائی میں شریک افراد میں 34 سالہ بندر الشہری بھی شامل تھا جو سعودی شہری دفاع کا اہل کار تھا۔ الشہری سکیورٹی فورسز کی جوابی فائرنگ کے نتیجے میں ہلاک ہو گیا۔ یہ واقعہ عسیر صوبے کے دو ضلعوں المجاردہ اور بارق کے درمیان ہائی وے پر پیش آیا۔۔بندر الشہری جائے وقوع سے ایک گھنٹے کی مسافت پر واقع تنومہ ضلعے میں اپنے والدین اور 11 بہن بھائیوں کے ساتھ سکونت پذیر تھا۔الشہری کے ایک عزیز نے العربیہ ڈاٹ نیٹ کو بتایا کہ وہ غیر متوازن زندگی گزارنے کا عادی تھا۔ گذشتہ برس وہ ریاض میں ٹائر اسکریچنگ کے دوران ایک خطرناک حادثے کا شکار ہو کر دو ماہ تک ہسپتال میں زیرِ علاج رہا۔ الشہری اکثر وبیشتر گھر سے اچانک غائب ہو جاتا اور پھر دو یا تین روز بعد واپس لوٹ آتا تھا۔ موسم گرما میں الشہری کے کزنز جب اس کے گھر قیام کے لیے جمع ہوتے تھے تو اس وقت بھی وہ زیادہ تر وقت اپنے دوستوں کے ساتھ گھر سے باہر گزارتا تھا۔سعودی سکیورٹی حکام نے جمعرات کے روز چیک پوسٹ پر حملہ کرنے والے بقیہ عناصر کے نام نہیں بتائے۔ فائرنگ کے واقعے میں تین سکیورٹی اہل کار فوری طور پر شہید ہو گئے تھے جب کہ چوتھے زخمی اہل کار نے بعد میں دم توڑا۔

ایک نظر اس پر بھی

بھٹکلی نوجوان ابصر محتشم کی شارجہ قبرستان میں ہوئی تدفین؛ جنازے میں کثیر تعداد میں لوگوں نے کی شرکت

بھٹکل کے نوجوان ابصر محتشم  جس کی نعش جمعرات کو  شارجہ میں واقع اُسی کے فلیٹ سے برآمد ہوئی تھی، آج کاغذی کاروائیوں کے بعد میت کو اُس کے بھائی اور رشتہ داروں کے حوالے کردی گئی۔

دبئی میں ملازمت کرنے والے بھٹکل کے نوجوان کی شارجہ میں موت؛ آج کی گئی نوجوان کی شناخت

بھٹکل  گڈلک روڈ کے رہائشی محمد ابصر محتشم (30) جس کی نعش   متغیر  حالت میں  شارجہ میں اُسی کے فلیٹ سے 23اگست کو برآمد کی گئی تھی، آج اُس کے  بھائیوں کی مدد سے شناخت کے بعد اُن کے حوالے کرنے کاغذی کاروائی جاری ہے۔ توقع ہے کہ کل پیر کو میت بھائیوں کے حوالے کی جائے گی اور کل ہی ...

مناسک حج کی ادائیگی کے دوران اردنی خاتون نے بچے کو جنم دے دیا

مزدلفہ میں شب قیام کے بعد حجاج کرام پہلے دن کی رمی کے لئے منیٰ پہنچ گئے ہیں اورقربانی کے بعد حجاج کرام کاسرمنڈوا کر احرام کھولنے کاعمل بھی جاری ہے اورمناسک حج کی ادائیگی کے دوران اردنی خاتون نے بچے کو جنم دے دیا۔

فرش سے عرش تک لبیک اللھم کی صدائیں،مناسک حج کا آغاز؛ عرفات پہنچنے والے لاکھوں افراد میں 175025 ہندوستانی عازمین بھی شامل

دنیا بھر سے ہر قوم و نسل کے تقریبا 30 لاکھ عازمین حج جس میں ہندوستان کے 175025 عازمین بھی شام ل ہیں،  بیت اللہ کیلئے مکہ مکرمہ میں ہیں جو عمرے کی ادائیگی کے بعد رات سے ہی بسوں اور دیگر گاڑیوں میں سوار ہوکر اور پیدل منیٰ پہنچ رہے ہیں۔