سابق ریلوے وزیرجعفرشریف چل بسے۔ پیر کو ہوگی تدفین، وزیراعلیٰ کماراسوامی سمیت سرکردہ لیڈروں نے کیا آخری دیدار

Source: S.O. News Service | By Staff Correspondent | Published on 25th November 2018, 10:11 PM | ریاستی خبریں | ملکی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

بنگلور25نومبر (ایس او نیوز) ہندوستان کے سابق ریلوے وزیرسی کے جعفرشریف  آج انتقال کرگئے، ان کی عمر 85 سال تھی۔ بتایا گیا ہے کہ انہیں بنگلورو کے ایک پرائیویٹ اسپتال میں علاج کے لئے داخل کیا گیا تھا، مگر وہ آج چل بسے۔   بنگلورومیں وزیراقلیتی بہبود ضمیراحمد خان نے بتایا کہ  کل  پیر  کو بعد نماز ظہرمسجد قادریہ میں ان کی نماز جنازہ ادا کی جائے گی اور قدوس صاحب عید گاہ قبرستان میں تدفین عمل میں آئے گی۔

انتقال کی خبر ملتے ہی بنگلور میں ان کی رہائش گاہ پر   سیاسی لیڈروں اورسرکردہ شخصیات کا تانتا لگ گیا جنہوں نے  ان کے انتقال پر اہل خانہ کے ساتھ تعزیت کا اظہارکیا۔ کرناٹک کے وزیراعلی ایچ ڈی کمارسوامی نے اسپتال جاکر آخری دیدارکیا اور تعزیت  پیش کی۔ اس کے علاوہ بی جے پی لیڈروں نے بھی  جعفرشریف کا آخری دیدارکیا۔  بی جے پی کے ریاستی صدراورسابق وزیراعلیٰ بی ایس یدی یورپا، سینئرلیڈرآراشوک، اروند لمباولی نے بھی تعزیت پیش کی اورانڈین ریلوے کی ترقی کیلئے جعفرشریف کی خدمات کا اعتراف کیا۔

 سی کے جعفرشریف کرناٹک کی سیاست میں کانگریس کا اہم چہرہ رہے ہیں، کیونکہ وہ طویل وقت سے کانگریس سے منسلک رہے ہیں۔ کانگریس کے دوراقتدارمیں 1991 سے 1995 تک وہ ریلوے وزیر بھی رہے ہیں۔

پی وی نرسمہا راو کی حکومت میں انہیں وزارت ریل کی ذمہ داری دی گئی تھی۔ 21 جون 1991 سے 16 اکتوبر1995 تک انہوں نے وزیرریل کی ذمہ داری سنبھالی تھی۔ جعفرشریف کی پیدائش 3 نومبر1933 کو ہوئی تھی۔ وہ طویل وقت تک کانگریس سے وابستہ رہے۔

واضح رہے کہ گذشتہ جمعہ کو سی کے جعفر شریف کی طبیعت اُس وقت خراب ہوگئی تھی جب وہ نماز جمعہ کی تیاری کررہے تھے ، جب وہ بیہوش ہوگئے تو فوراً ان کے پوتے وہاب شریف اوررحمن شریف نے انہیں اسپتال پہنچایا ۔ ڈاکٹروں کی ٹیم نے ان کی تشخیص کرنے کے بعد انکشاف کیا کہ انہیں دل کا دورہ پڑا ہے۔ تاہم آج وہ دنیا سے رخصت ہوگئے۔

ایک نظر اس پر بھی

باغی اراکین اسمبلی ایوان کی کارروائی میں حاضر ہونے کے پابند نہیں:سپریم کورٹ عدالت کے فیصلہ سے مخلوط حکومت کو جھٹکا -کانگریس عدالت سے دوبارہ رجوع کرے گی

کرناٹک کے باغی اراکین اسمبلی کے استعفوں سے متعلق سپریم کورٹ نے آج جو فیصلہ سنایا ہے وہ ”آڑی دیوار پر چراغ رکھنے“ کے مصداق ہے- کیونکہ اس سے نہ کرناٹک کا سیاسی بحران ختم ہوگا اورنہ ہی مخلوط حکومت کو بچانے میں کچھ مدد ملے گی-

پاکستان جب تک دہشت گردی کے خلاف مؤثرکاروائی نہیں کرتا، ایئر اسٹرائک جیسے قدم اٹھاتے رہیں گے: وزارت دفاع

وزارت دفاع نے دو ٹوک کہا ہے کہ جب تک پاکستان دہشت گرد گروپوں کے خلاف قابل اعتماد کارروائی نہیں کرتا، تب تک ہندوستان اپنی قومی سلامتی کو یقینی بنانے کے لئے سخت اقدامات اٹھاتا رہے گا۔

سرسی ڈی وائی ایس پی سے کی گئی یلاپور رکن اسمبلی شیورام کوڈھونڈنکالنے کی گزارش

کانگریس اور جے ڈی ایس کے اراکین نے بغاوت کرتے ہوئے اسمبلی اجلاس سے دور رہنے اور وزیر اعلیٰ کمارا سوامی کی جانب سے پیش کی گئی ’اعتماد‘ کی تحریک کے حق میں ووٹ نہ دینے کا جو فیصلہ کیا ہے اس سے مخلوط حکومت گرنا یقینی ہوچلا ہے۔ 

بھٹکل اوراطراف کے  طلبہ وطالبات کے لئے15ڈسمبر کو ہوگا سائنسی وتحقیقی مقابلہ جات کاانعقاد : تعلیمی ادارے توجہ دیں

شہر بھٹکل کا معروف تعلیمی و فلاحی ادارہ تربیت اخوان(شمس اسکول)کے زیر اہتمام  اے جے اکیڈمی فار ریسرچ اینڈ ڈیلوپمنٹ کے اشتراک سے15ڈسمبر 2019 بروز اتوار کو سانتسی و تحقیقی مقابلہ جات کا انعقاد کیا گیا ہے جس میں  بھٹکل‘ مرڈیشور‘ شیرور اور منکی کے سرکاری و  غیر سرکاری‘امدادی ...

مویشی چوروں کے ساتھ ساز باز کرنے کے الزام میں 2پولیس والے ہوئے گرفتار۔4کی تلاش جاری

ایک ہفتے پہلے ساستھان ٹول گیٹ پر 21بھینسوں کی ایک بڑی کھیپ جو ضبط کی گئی تھی، اس تعلق سے گرفتار شدہ ملزمین کے بیانات کی روشنی میں پولیس کی تحقیقاتی ٹیم نے محکمہ پولیس سے ہی وابستہ 2افراد کو گرفتار کرلیا،جبکہ مزید چارمفرور پولیس والوں کو گرفتار کرنے کی کوشش جاری ہے۔ ان پر الزام ...

سون بھدر: زمین کے تنازعہ میں خونیں تصادم، فائرنگ میں 9 افراد ہلاک

  اتر پردیش کے سون بھدر میں زمین کے تنازعہ میں دو فریقین میں زبردست خونیں تصادم ہوا۔ دونوں جانب سے چلی تابڑ توڑ فائرنگ میں تقریباً 9 افراد کی جان چلی گئی، جبکہ تقریباً 20 افراد زخمی بتائے جا رہے ہیں۔ ہلاک شدگان میں 4 خواتین اور 5 مرد شامل ہیں۔

بنٹوال میں ایمبولینس اور ٹرک کا تصادم۔ 1خاتون ہلاک، 4زخمی    

نیرلکٹے کے پاس پیش آنے والے ٹرک اور ایمبولینس کے تصادم میں ایک خاتون موقع پر ہی ہلاک ہوگئے جبکہ ایمبولینس میں موجود مریض سمیت دیگر 4افراد زخمی ہوگئے ہیں، جنہیں علاج کے لئے پتور کے سرکاری اسپتال میں داخل کیا گیا ہے۔