سابق وزیر خزانہ پی چدمبرم نے مودی سرکار کی تنقید: آج ملک میں چہار جانب خوف کا تسلط ہے : پی چدمبرم 

Source: S.O. News Service | By Jafar Sadique Nooruddin | Published on 7th February 2019, 12:58 AM | ملکی خبریں |

نئی دہلی:5 /فروری (ایس اونیوز /آئی این ایس انڈیا) کانگریس کے سینئر لیڈر اور سابق وزیر خزانہ پی چدمبرم نے ایک بار پھر مودی حکومت پر نشانہ لگایا ہے۔ انہوں نے کہا کہ آج ملک میں ہر طرف خوف کا غلبہ ہے۔ اس بات کا بھی ڈر ہے کہ موجودہ حکومت کہیں آئین کو ہندوتوکی جانب سے شہ پاکر ایک دستاویز سے تبدیل نہ کردے ۔پی چدمبرم نے کہا کہ یہ اِس زمین کو سنوارے گئے بانیوں کی جانب سے کئے گئے بھارت کے خواب کو تباہ و برباد کر دے گا اور اسے برقرار رکھنے کے لئے ایک اور تحریک آزادی اور ایک اور مہاتما گاندھی کی ضرورت پڑے گی۔ واضح ہو کہ پی چدمبرم نے یہ تبصرہ اپنی نئی کتاب میں کی ہے ۔ یہ کتاب سالِ گزشتہ ان کے شائع مضامین کا مجموعہ ہے ۔ ان کے مطابق پٹری سے اتری معیشت کو درست کیا جا سکتا ہے، معاشرے میں خلیج کی خندقوں کو پاٹ کر اسے پھر سے جوڑاجا سکتا ہے لیکن ایک چیز جو ٹوٹنے کے بعد درست نہیں کی جا سکتی وہ ہے آئین۔ اور اس دستاویز میں وضع کردہ آئینی اصول ۔ انہوں نے کہا کہ ابھی صورتحال یہ ہے کہ آئین پر ہر طرف سے حملہ ہو رہے ہیں ،چاہے وہ آزادی ہو، مساوات، لبرل ازم، سیکولرازم، پرائیویسی وغیرہ۔ اس کتاب میں چدمبرم لکھتے ہیں کہ اس بات کا واضح اور براہ راست خطرہ ہے کہ ہندوستان کے آئین کو ایک ایسے دستاویزات سے تبدیل کر دیا جائے گا جو دستاویز غالب خدشہ کے مطابق ’ہندوتو‘ کے نظریات سے متاثر ہوگی ۔ انہوں نے کتاب میں کہا ہے کہ مجھے یہ کہتے ہوئے کوئی ہچکچاہٹ نہیں ہے کہ آج بھارت میں خوف کی حکمرانی ہے۔ہر آدمی خوف میں جیتا ہے،پڑوسی کا ڈر، نام نہاد سماج کے ٹھیکیداروں کا ڈر ، ٹیڑھے دماغ سے قانون مسلط کئے جانے کا ڈر، اور سب سے بڑا بھارتی حکومت کی جاسوسی کا ڈر۔ 

ایک نظر اس پر بھی

وزیر اعظم نریندر مودی پہلے چائے و الا، اب چوکیدار بن کر کر رہے تشہیر: مایاوتی

وزیر اعظم نریندر مودی کی طرف سے شروع کی گئی’میں بھی چوکیدار‘ مہم پر بہوجن سماج پارٹی (بی ایس پی) کی سربراہ مایاوتی نے منگل کو طنز کرتے ہوئے کہا کہ گزشتہ انتخابات میں چائے والا اور اب چوکیدار...، ملک واقعی بدل رہا ہے،