حکومت کی کارکردگی کچھ بھی نہیں لیکن قرضہ بہت بڑا : کمار سوامی

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 17th June 2017, 11:17 AM | ریاستی خبریں |

بنگلورو،16؍جون(ایس او نیوز) سابق وزیر اعلیٰ ایچ ڈی کمار سوامی نے ریاست میں سدرامیا حکومت کے چار سال کو ریاست کیلئے تباہ کن قرار دیتے ہوئے کہاکہ ریاست کے کسی بھی محکمہ نے متوقع پیش رفت حاصل نہیں کی، فنڈز کا مکمل استعمال نہیں کیاگیا ، لیکن اس کے باوجود بھی پچھلے چار سال کے دوران حکومت نے 1.36لاکھ کروڑ روپیوں کا قرضہ کیوں کیا ہے۔ آج اسمبلی میں مختلف محکموں کی مانگوں پر بحث میں حصہ لیتے ہوئے انہوں نے کہاکہ محکمۂ باغبانی کو منظورشدہ بجٹ میں سے آٹھ ہزار کروڑ روپے ،محکمۂ مالیات کے 19؍ہزار کروڑ روپے ، محکمۂ آبپاشی کے 12؍ ہزار کروڑ روپے، محکمۂ تعلیمات کے 10ہزار کروڑ روپے، محکمۂ صحت کے 5700کروڑ روپے، محکمۂ ہاؤزنگ کے 2285 کروڑ روپے، محکمۂ شہری ترقیات کے دس ہزار کروڑ روپے گزشتہ سال استعمال ہی نہیں ہوئے ہیں۔ ریاستی حکومت نے تمام محکموں میں اسی طرح رقم صرف نہیں کی ہے ، اس کے باوجو د بھی 1.36لاکھ کروڑ روپیوں کا قرضہ ہوچکا ہے، یہ رقم کہاں گئی؟۔ انہوں نے کہاکہ ریاستی حکومت نے سرکاری مالیاتی اداروں سے 71 فیصد چھوٹی بچت کے اداروں سے پندرہ فیصد اور مرکزی حکومت سے دس فیصد قرضہ حاصل کیا ہے۔ وہ سمجھ رہے تھے کہ سدرامیا بحیثیت وزیر اعلیٰ بہت اچھا کام کررہے ہیں، کیونکہ بحیثیت اپوزیشن لیڈر سدرامیا مالیاتی نظم وضبط کے متعلق پچھلی حکومت کو بہت اچھی نصیحتیں کرتے رہے ، لیکن اب جو کچھ ہورہا ہے اسے دیکھ کر معلوم ہوتا ہے کہ سدرامیا کے قول وفعل میں تضاد ہے۔ محکمۂ ہاؤزنگ دعویٰ کرتا ہے کہ مختلف اسکیموں کیلئے اسے مرکزی حکومت نے کئی اعزازات دئے ہیں، لیکن اس محکمہ کی کارکردگی سب سے خراب ہے۔ محکمۂ آبپاشی بھی مختلف نہیں ہے۔ 2011 میں کے پی ایس سی کے ذریعہ 362گزیٹڈ پروبیشنر کے تقرر کے تنازعہ کا تذکرہ کرتے ہوئے کمار سوامی نے کہاکہ سدرامیا حکومت نے ان پروبیشنرس کو فٹ بال بنادیا ہے۔ اس کے علاوہ کمار سوامی نے ریاست کے مختلف محکموں کی خامیوں کی طرف نشاندہی کرتے ہوئے حکومت کو نشانہ بنایا۔

ایک نظر اس پر بھی

اسمبلی میں وزیراعلیٰ کا وداعی خطاب، پانچ سالہ کارکردگی کااحاطہ اقتدا ر پر دوبارہ ہم ہی لوٹ آئیں گے، اس میں شک وشبہ نہ کریں: سدارامیا

ریاست کرناٹک میں 14ویں اسمبلی کے آخری سیشن کے آخری دن وزیراعلیٰ سدارامیا اپنی وداعی تقریر کرتے ہوئے کہاکہ پچھلے 5سالوں کے دوران ان کی حکومت کئی عوام دوست پروگراموں کو جاری کرکے ریاست میں ایک اچھا اور شفاف انتظامیہ فراہم کیا اور دعویٰ کیا کہ دوبارہ ہم ہی اقتدار پر لوٹ آئیں گے ...

بنگلور کے ہندو شمشان میں دفن کی گئی مسلم کی نعش کو 21 دن بعد نکالا گیا؛ نمازجنازہ کے بعد کی گئی مسلم قبرستان میں دوبارہ تدفین

شمشان میں دفن کی گئی لاش کو 21 دن بعد باہر نکال کر اُس کوغسل دینے اور نماز جنازہ ادا کرکے  مسلم قبرستان میں دوبارہ دفن کرنے کی واردت  بنگلور میں پیش آئی ہے۔ اس تعلق سے سماجی کارکن صابو لال قریشی کی کوششوں کی ہر کوئی سراہنا کررہا ہے جنہوں نے سرکاری اجازت نامہ کے ساتھ شمشان سے لاش ...

ہوناور میں پریش میستا کے گھر پہنچے امیت شاہ نے دیا سی بی آئی سے تحقیقات کروانے کا بھروسہ؛ عوامی پروگرام میں شرکت کے بغیر ہی واپسی پر ضلع کے عوام کو ہوئی مایوسی

یہاں دسمبر کے مہینے میں ہوئے فرقہ وارانہ فساد کے پس منظر میں پریش میستا نامی نوجوان کی لاش مشکوک حالت میں تالاب سے برآمد ہوئی تھی۔ بی جے پی اس سے سیاسی فائدہ اٹھانے کی مسلسل کوشش کررہی ہے اس لیے پارٹی کے چھوٹے بڑے لیڈر وں کا وقفے وقفے سے پریش  میستا کے گھر جانا ایک معمول بن گیا ...

منگلورو کے کسبا بینگرے میں گروہی تصادم :پولس سمیت 10زخمی ،سواریوں کو نقصان؛ حالات پر قابو پانے لاٹھی چارج کے بعد پولس نے کی ہوائی فائرنگ

ملپے میں بی جے پی کی طرف سے منعقدہ قومی ماہی گیر سماویش ختم ہونے کے بعد بس کے ذریعے لوٹنے والوں اور مقامی لوگوں کے درمیان ’’گروہی تصادم ‘‘ہونے کا واقعہ منگل کی رات کسبا بینگرے میں پیش آیا، جس پر قابو پانے کے  لئے پولس کو پہلے لاٹھی چارج، پھر ہوا میں فائرنگ کرنی پڑی۔ اب حالات ...