ہمت ہے تو مجھے پارٹی سے برطرف کرکے دکھائیں،یڈیورپاکو ایشورپا کا کھلا چیلنج

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 12th January 2017, 11:13 AM | ریاستی خبریں |

بنگلورو۔11؍جنوری(ایس او نیوز ) سینئر بی جے پی لیڈر اور ریاستی لیجسلیٹیو کونسل کے اپوزیشن لیڈر کے ایس ایشورپانے سنگولی راینا برگیڈ کے جلسہ میں شرکت کی پاداش میں شہر کے سابق میئر ڈی وینکٹیش مورتی کو بی جے پی سے معطل کئے جانے پر شدید برہمی کا اظہار کیا ہے اور ریاستی بی جے پی صدر بی ایس یڈیورپا کو چیلنج کیا ہے کہ ہمت ہے تو انہیں بی جے پی سے نکال کر دکھائیں۔ اخباری نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے انہوں نے یڈیورپا پر رکیک حملے کرتے ہوئے کہاکہ چاہے جو بھی ہوجائے سنگولی راینا برگیڈ کی سرگرمیاں اب رکنے والی نہیں ہیں۔ انہوں نے کہاکہ وینکٹیش مورتی کو بی جے پی سے معطل کرکے یڈیورپا نے سنگولی راینا برگیڈ پر بہت بڑا احسان کیا ہے ، جس کیلئے وہ ان کے ممنون رہیں گے۔ انہوں نے کہاکہ 26 جنوری کو کوڈلا سنگم میں سنگولی راینا برگیڈ کے بہت بڑے جلسے کی تیاریاں کافی تیزی کے ساتھ جاری ہیں۔ ایشورپا نے سوال کیا کہ سنگولی راینا برگیڈ کے ساتھ اپنی شناخت وابستہ رکھنے میں غلطی کیا ہے؟۔ یہ پارٹی مخالف سرگرمی قطعاً نہیں ہے، اگر اسے پارٹی مخالف سرگرمیوں سے تعبیر کرکے بی جے پی قیادت انہیں معطل کرنا چاہتی ہے تو اس کی جرأت دکھائے۔ برگیڈکی سرگرمیاں اس کے بعد بھی رکنے والی نہیں ہیں۔ انہوں نے کہاکہ جیسے ہی یڈیورپا کو ریاستی بی جے پی کا صدر منتخب کیاگیا انہیں دوبارہ وزیر اعلیٰ بنانے کے مقصد سے دلتوں اور پسماندہ طبقات کو متحد کرنے سنگولی راینا برگیڈ کی تشکیل عمل میں آئی، لیکن اب یڈیورپا نے خود سنگولی راینا برگیڈ کی کسی بھی سرگرمی کی شدت سے مخالفت کررہے ہیں۔ ایسے میں یڈیورپا کو وزیراعلیٰ بنانے کا کوئی فائدہ نہیں ہوگا۔ انہوں نے کہاکہ 26جنوری کے کنونشن میں لاکھوں کی تعداد میں لوگ شریک رہیں گے اور اس میں سنگولی راینا برگیڈ اپنی طاقت کا مظاہرہ بڑے پیمانے پر کرے گی۔ یہ برگیڈ ریاست کے غریب طبقات کی فلاح وبہبود کیلئے قائم کی گئی ہے۔ اسے سمجھے بغیر یڈیورپا اگر انہیں نشانہ بنانا چاہتے ہیں تو اس سے کوئی ڈرنے والا نہیں ہے۔ سابق میئر وینکٹیش مورتی نے کہا کہ معطلی سے وہ خوفزدہ ہونے والے نہیں ہیں۔ اب اگر یڈیورپا بھی ان کی منت سماجت کریں تو وہ پارٹی میں لوٹنے والے نہیں ہیں۔ انہوں نے کہا کہ بی جے پی کیلئے ایشورپا کی قربانیاں ناقابل فراموش ہیں ۔ متعدد الزامات کے باوجود دوبارہ یڈیورپا کو ہی وزیراعلیٰ کے عہدہ کا دعویدار بنانا درست نہیں ۔اس بار بی جے پی کو اگر اقتدار حاصل کرنا ہے تو ایشورپا کو وزیراعلیٰ کے عہدہ کا دعویدار بناکر پیش کرنا چاہئے۔

ایک نظر اس پر بھی

وشواناتھ کسی بھی پارٹی میں شامل ہونے کیلئے آزاد: کمار سوامی

سابق وزیر اعلیٰ اور ریاستی جنتادل (ایس) صدر ایچ ڈی کمار سوامی نے کانگریس کے برگشتہ لیڈر ایچ وشواناتھ کی جنتادل (ایس) میں شمولیت کے متعلق کل ہی دئے گئے بیان سے انحراف کرتے ہوئے کہاکہ وشواناتھ کسی بھی سیاسی جماعت میں شامل ہونے کیلئے آزاد ہیں، ان پر جنتادل (ایس) کی طرف سے کسی طرح کا ...

ریاست میں کانگریس کا اقتدار پر برقرار رہنا یقینی: پرمیشور

وزیر داخلہ اور کرناٹک پردیش کانگریس کمیٹی صدر ڈاکٹر جی پرمیشور نے ایک بار پھر یہ یقین ظاہر کیا ہے کہ آنے والے اسمبلی انتخابات میں کانگریس ریاست کے اقتدار پر واضح اکثریت کے ساتھ قبضہ کرے گی۔ ارکلگوڈ میں اخباری نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے انہوں نے کہاکہ وزیر اعلیٰ سدرامیا کی ...

ریاستی بی جے پی کے انتشار میں مز ید شدت کے آثار، ایشورپاکو اپوزیشن لیڈر کے عہدہ سے بے دخل کرنے یڈیورپا کی تیاری

ریاستی لیجسلیٹیو کونسل کے اپوزیشن لیڈر کے ایس ایشورپا کی قیادت میں ریاستی بی جے پی میں جو طوفان بغاوت اٹھا ہے اس پر قابو پانے کیلئے سابق وزیراعلیٰ او رریاستی بی جے پی صدر بی ایس یڈیورپا کے حامیوں نے ایشورپا کو لیجسلیٹیو کونسل کے اپوزیشن لیڈر کے عہدہ سے ہٹانے کی مہم شروع کردی ...

اسپتالوں میں غریبوں کے علاج کیلئے یکساں نظام، جسٹس وکرم جیت سین کی رپورٹ قطعی مراحل میں، قانون میں ترمیم جلد

ریاست کے سرکاری اور نجی سمیت تمام اسپتالوں میں غریب مریضوں کے مناسب شرحوں پر علاج کیلئے ریاستی حکومت 2007کے قانون میں ترمیم لانے پر سنجیدگی سے غور کررہی ہے۔اس سلسلے میں سابق چیف جسٹس وکرم جیت سین کی قیادت میں تشکیل شدہ کمیٹی نے مجوزہ ترمیم کے متعلق اپنی سفارشات پر مشتمل رپورٹ کو ...

باغیوں کے جلسہ میں یڈیورپا اور ایشورپا کے حامیوں میں ٹکراؤ

شہر کے پیالیس گراؤنڈ میں آج باغی بی جے پی لیڈر کے ایس ایشورپا کی طرف سے طلب کی گئی بی جے پی باغی لیڈروں کی میٹنگ یڈیورپا اور ایشورپا کے حامیوں کے درمیان مارپیٹ کا مرکز بن گئی۔ جس کی وجہ سے کچھ دیر کیلئے کشیدگی پھیل گئی۔

کمارا سوامی نے بھی وسط مدتی انتخابات کا اشارہ دیا

سابق وزیر اعلیٰ اور ریاستی جنتادل(ایس) صدر ایچ ڈی کمار سوامی نے ریاستی اسمبلی کیلئے قبل از وقت انتخابات کی پیشین گوئی کی ہے ، حالانکہ کل وزیر اعلیٰ سدرامیا نے خود واضح کیا کہ اسمبلی انتخابات قبل ا ز وقت نہیں ہوں گے اور حکومت اپنی میعاد مکمل کرلے گی۔