راجستھان میں پولنگ آج، سیکورٹی کے سخت انتظامات 

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 6th December 2018, 9:05 PM | ملکی خبریں |

جے پور،06؍ دسمبر (ایس او نیوز؍آئی این ایس انڈیا) راجستھان میں اسمبلی کی 199 نشستوں کے لئے جمعہ کو پولنگ ہوگی۔الیکشن محکمہ نے اس کے لئے تمام تیاریاں مکمل کر لی ہیں۔ہندوستان۔پاکستان بین الاقوامی سرحد سے ملحق اس ریاست میں سیکورٹی چاک چوبند ہے۔ریاست میں 20 لاکھ سے زیادہ ووٹر پہلی بار ووٹ ڈالیں گے۔ووٹنگ کے لئے دو لاکھ سے زیادہ ای وی ایم۔وی وی پیٹ کا استعمال کیا جائے گا اور وی ایم کے ساتھ ساتھ پوری ریاست میں وی وی پیٹ مشینوں کا استعمال پہلی بار ہو رہا ہے۔ چیف الیکشن افسر آنند کمار نے بتایا کہ ریاست میں آزاد، منصفانہ اور پرامن انتخابات ختم کرانے کے لئے تمام تیاریاں مکمل ہیں۔پولنگ منصفانہ اور پرامن طریقے سے کروانے کی ذمہ داری 1,44,941جوانوں پر ہوگی جن میں مرکزی سیکورٹی فورسز کی 640 کمپنیاں شامل ہیں۔ریاست میں کل 387 ناکے اور چیک پوسٹ لگائے گئے ہیں۔انہوں نے بتایا کہ 199 اسمبلی حلقوں کے لئے کل 4,74,37,761ووٹر اپنے ووٹ کا حق استعمال کریں گے۔ان میں 2,47,22,365مرد اور 2,27,15,396 خواتین ووٹر ہے۔ان میں سے پہلی بار ووٹ دے رہے نوجوان ووٹروں کی تعداد 20,20,156 ہیں۔ ریاست کے 199 اسمبلی حلقوں سے کل 2,274امیدوار انتخابی میدان میں ہیں۔انڈین نیشنل کانگریس سے 194، بھارتیہ جنتا پارٹی سے 199 امیدوار، بہوجن سماج پارٹی سے 189، نیشنلسٹ کانگریس پارٹی سے 01، بھارتی کمیونسٹ پارٹی سے 16 اور مارکسوادی کمیونسٹ پارٹی سے 28 امیدوار انتخاب لڑ رہے ہیں جبکہ 817 غیر تسلیم شدہ پارٹیوں کے امیدوار اور 830 آزاد امیدوار ہیں۔راجستھان میں اسمبلی کی کل نشستوں کی تعداد 200 ہے لیکن ایک نشست پر الیکشن ملتوی کر دیا گیا ہے۔ کمار نے بتایا کہ الور ضلع کے رام گڑھ اسمبلی حلقہ سے بہوجن سماج پارٹی کے امیدوار لکشمن سنگھ کا 29 نومبر کو انتقال ہو گیا ہے۔وہاں کا انتخابات ملتوی کر دیا گیا ہے۔ریاست کے چار لاکھ سے زیادہ معذور لوگوں کے لئے مخصوص سہولیات فراہم کی گئی ہے۔ ان کوپولنگ کے لئے گھر سے لانے کا انتظام کیا گیا ہے۔ 259 پولنگ مراکز کا ذمہ خواتین کے حوالے ہوگا جہاں پولنگ اہلکار، سیکورٹی وغیرہ تمام خواتین ہوں گی۔اس دوران محکمہ کو سی ویجل ایپ سے اب تک 3,784 سے زیادہ شکایات ملیں جن میں سے 3,098شکایات درست پائی گئی ہیں۔

ایک نظر اس پر بھی

مودی جی کا پرگیہ سنگھ ٹھاکور سے لاتعلقی ظاہر کرنا ایسا ہی ہے جیسے پاکستان کا دہشت گردی سے ۔۔۔۔ دکن ہیرالڈ میں شائع    ایک فکر انگیز مضمون

 وزیر اعظم نریندرا مودی کا کہنا ہے کہ وہ مہاتما گاندھی کے قاتل ناتھو رام گوڈسے کو دیش بھکت قرار دیتے ہوئے ”باپو کی بے عزتی“ کرنے کے معاملے پر پرگیہ ٹھاکورکو”کبھی بھی معاف نہیں کرسکیں گے۔“امیت شاہ کہتے ہیں کہ پرگیہ ٹھاکور نے جو کچھ کہا ہے(اور یونین اسکلس منسٹر اننت کمار ہیگڈے ...

لوک سبھا انتخابات؛ آخری مراحل کے انتخابات جاری؛ 918 اُمیدواروں کی قسمت داو پر؛ ای وی ایم میں خرابی کی شکایتیں؛ بنگال میں دو کاروں پر حملہ

لوک سبھا انتخابات کے ساتویں  اور آخری مرحلہ کے لئے اتوار کی صبح 7 بجے سے ووٹنگ جاری ہے۔جس میں  918 امیدواروں کی قسمت دائو پر لگی ہوئی ہے۔آج جاری انتخابات میں  وزیر اعظم نریندر مودی کا حلقہ انتخاب وارانسی بھی شامل ہے۔ 

دہشت گرد ہر مذہب میں ہیں: کمل ہاسن

تنازعات میں گھرے اداکار لیڈر کمل ہاسن نے جمعہ کو کہا کہ ہر مذہب میں دہشت گرد ہوتے ہیں اور کوئی بھی اپنے مذہب کوبہترین ہونے کا دعویٰ نہیں کر سکتا۔

بی جے پی کو280 سے زیادہ سیٹیں ملیں گی، این ڈی اے کی سیٹیں 300 سے متجاوز ہوں گی: پی مرلیدھر راؤ

بی جے پی لیڈر رام مادھو کے تخمینے کو مسترد کرتے ہوئے پارٹی کے سینئر لیڈر پی مرلیدھر راؤ نے کہا کہ بھگوا پارٹی کو 280 سے زیادہ سیٹیں ملیں گی جبکہ این ڈی اے کے سیٹوں کی تعداد 300 کے پار ہوں گی۔

مالیگاؤں 2008بم دھماکہ معاملہ: اے ٹی ایس کی عدالت سے غیر حاضری کے معاملے میں عدالت کا دخل دینے سے انکار

مالیگاؤں 2008 بم دھماکہ متاثرین جانب سے خصوصی این آئی اے عدالت میں داخل عرضداشت جس میں اس معاملے کی سب سے پہلے تفتیش کرنے والی تفتیشی ایجنسی ATSکی عدالت سے غیرحاضری پر سوال اٹھایا گیا تھا کو عدالت نے یہ کہتے ہوئے خارج کردیا کہ اے ٹی ایس کو پابند کرنا اس کے دائرہ اختیار میں نہیں ہے ...