دبئی: وہائٹ ہاؤس کو بلیک میل کرنے والے ہیکرگرفتار

Source: S.O. News Service | By Afeef Gawai | Published on 3rd April 2017, 5:56 PM | خلیجی خبریں |

دبئی،3اپریل(ایس او نیوز/آئی این ایس انڈیا)دبئی کی پولیس نے سکیورٹی کے حوالے سے ایک اہم کامیابی حاصل کرتے ہوئے ہیکروں کی اْس ٹولی کو پکڑ لیا ہے جس نے امریکی وہائٹ ہاؤس کے کئی سینئر اہل کاروں کے ای میل اکاؤنٹس ہیک کر لیے تھے۔روزنامہ البیان کے مطابق دبئی پولیس کے سینئر اہل کار میجر ڈاکٹر سعود الخالدی نے بتایا کہ وہائٹ ہاؤس میں متعلقہ حکام کی جانب سے انہیں سرکاری طور پر ایک ای میل موصول ہوئی جس میں وہائٹ ہاؤس کے 5 سینئر ذمے داران کے ای میل اکاؤنٹس ہیک ہونے کے بارے میں آگاہ کیا گیا تھا۔ ساتھ یہ بھی بتایا گیا کہ ہیکروں نے خفیہ معلومات حاصل کر لی ہے اور وہ بلیک میلنگ کے پیغامات بھیج رہے ہیں۔ وہائٹ ہاؤس حکام نے شبہ ظاہر کیا تھا کہ ہیکروں کا یہ گروپ اس وقت متحدہ عرب امارات میں موجود ہے۔اس ای میل کے موصول ہونے کے بعد سائبر کرائمز کے شعبے سے متعلق ماہرین کی ایک ٹیم تشکیل دی گئی اور دو گھنٹے کے اندر ہی امارت عجمان میں ایک اپارٹمنٹ میں ہیکروں کے ٹھکانے کا پتہ چلا لیا گیا۔ متعلقہ حکام کے ساتھ جائے مقام پر چھاپہ مارا گیا اور تین افراد کو حراست میں لے لیا گیا۔ بعد ازاں یہ بات سامنے آئی کہ ہیکنگ کی کارروائیوں میں ملوث یہ گروپ حاصل ہونے والی معلومات بھاری رقوم کے عوض فروخت کرتے ہیں۔

ایک نظر اس پر بھی

ولی عہد دبئی کی جانب سے’فٹ نس چیلنج‘ میں شرکت کی دعوت

متحدہ عرب امارات کی قیادت بڑے بڑے چیلنجز کا خود مقابلہ کرنے کے ساتھ مملکت کے عوام اور امارات میں مقیم شہریوں کو نئے چیلنجز کا مقابلہ کرنے اور انہیں زندگی کے ہرشعبے میں آگے نکلنے کی صلاحیت پیدا کرنے کے لیے کوشاں ہے۔

اخوانی پروفیسروں پر سعودی یونیورسٹیوں کے دروازے بند،اخوانی نظریات سے دہشت گرد پیدا ہو رہے ہیں: ڈاکٹر سلیمان ابا الخلیل

سعودی عرب کی ایک بڑی دینی درس گاہ جامعہ الامام کے ڈائریکٹر اور سپریم علماء کونسل کے رکن ڈاکٹر سلیمان ابا الخلیل نے کہا ہے کہ یونیورسٹی نے اخوان المسلمون کے افکار سے متاثر تمام شخصیات سے معاہدے ختم کردیے ہیں۔

ولی عہد کا فلاحی تنظیموں کو 50 لاکھ ریال کا عطیہ

سعودی عرب کے ولی عہد، نائب وزیراعظم اور وزیر دفاع شہزادہ محمد بن سلمان بن عبدالعزیز نے اپنے ذاتی جیب سے حائل کے علاقے میں فلاحی شعبے میں سرگرم تنظیموں کو پچاس لاکھ ریال کی رقم عطیہ کی ہے۔