ڈراپ آؤٹ بچوں کے داخلے کیلئے خصوصی مہم،18ہزار اساتذہ کے تقرر کا فیصلہ، اردو کو ترجیح: تنویر سیٹھ

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 18th May 2017, 10:28 AM | ریاستی خبریں |

بنگلورو،17؍مئی(ایس او نیوز)وزیر برائے بنیادی وثانوی تعلیمات، اوقاف واقلیتی بہبود تنویر سیٹھ نے آج بتایاکہ چھ تا چودہ سال کے تمام بچوں کو لازمی اور مفت تعلیم فراہم کرنے کے مقصد سے حق تعلیم قانون نافذکیاگیا ہے۔ جس کے تحت رواں تعلیمی سال کے دوران ڈراپ آؤٹ بچوں کے داخلوں کیلئے ریاست گیر سطح پر خصوصی مہم چلانے کا فیصلہ لیاگیا ہے۔ اخباری کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے بتایاکہ پانچ سال دس ماہ مکمل کرنے والے تمام بچوں کو قریبی اسکول میں پہلی جماعت میں داخل کرانے کے علاوہ ڈراپ آؤٹ بچوں کے داخلے کیلئے گرام پنچایت سطح سے میونسپل کارپوریشن تک مہم چلائی جائے گی۔ اسی طرح داخلے لینے والے بچوں کی حاضری پر خصوصی نظر رکھنے کیلئے اقدامات کئے جائیں گے۔ اس مہم کو کامیاب بنانے کیلئے محکمۂ تعلیمات کے تمام افسران کوبذریعہ ویڈیو کانفرنس احکامات جاری کئے گئے ہیں۔ محکمۂ کی جانب سے مفت نصابی کتابیں ، یونیفارم ، دوپہر کاکھانا ، دودھ ، شو اور موزے کے علاوہ سائیکلوں کی تقسیم اور اسکالر شپ وغیرہ سے متعلق تفصیلات پر مشتمل پوسٹر ، ہینڈ بلس وغیرہ تقسیم کئے جائیں گے۔ یہ مہم 31، مئی تک چلے گی، جس میں اساتذہ کے علاوہ ایس ڈی ایم سی اراکین ، این جی اوز اور دیگر کے علاوہ طلبا حصہ لیں گے اور جتھہ نکالیں گے۔ اسی طرح مہاجرین اور مزدور طبقے کے والدین سے ملاقات کرتے ہوئے بچوں کو اسکول میں داخل کرنے کی درخواست کی جائے گی۔ علاوہ ازیں یکم تا 30جون جنرل داخلوں کیلئے مہم چلائی جائے گی اور حکومت کی جانب سے فراہم ہونے والے نصابی کتب ، یونیفارم ، اسکول بیاگ ، شو وغیرہ تقسیم کئے جائیں گے۔اس مہم کو صرف ایک ماہ تک محدود نہ رکھتے ہوئے سال بھر چلانے کیلئے اقدامات کئے جائیں گے۔انہوں نے بتایاکہ امسال نصابی کتابوں کی نظر ثانی کی گئی ہے اور بروقت ان کی فراہمی کیلئے اقدامات کئے جائیں گے۔ اسکول سے اگر کوئی طالب علم مسلسل غیر حاضر رہے تو اسے واپس لانے کیلئے اساتذہ ،ایس ڈی ایم سی اراکین ، والدین کے علاوہ منتخب نمائندوں پر مشتمل ٹاسک فورس تشکیل دی جائے گی۔ تنویر سیٹھ نے بتایا کہ آدرش اسکولوں میں تعلیمی معیار کو بلند کرنے کیلئے اقدامات کے نتیجہ میں اس مرتبہ یہاں پر 93.7 فیصد طلبا دسویں جماعت میں کامیاب ہوئے ہیں جس کے پیش نظر ہوبلی سطح پر ماڈل اسکول بناتے ہوئے تعلیمی معیار کو بلند کرنے کی کوشش کی جائے گی اور کیندریہ ودیالیہ کے طرز پر آدرش اسکولوں کو چلانے کیلئے کیندریہ ودیالیہ سے معاہدہ کیا جارہا ہے۔ ان کے مطابق خستہ حال عمارتوں کو منہدم کرنے کے اقدامات جاری کئے گئے ہیں، تاکہ طلبا کو کوئی نقصان نہ ہوپائے۔انہوں نے واضح کیاکہ کسی بھی حال میں سرکاری اسکول بند نہیں کئے جائیں گے اور نہ ہی اس کی نج کاری عمل میں آئے گی۔ انہوں نے بتایاکہ آرٹی ای کی خلاف ورزی کرنے والے اسکولوں کے خلاف کارروائی کی جائے گی اگر مالدار طبقے کے ذریعہ آر ٹی ای میں داخلے لئے گئے ہوں تو ان کے خلاف فوجداری مقدمات درج کرنے کے احکامات جاری کئے گئے ہیں۔وزیر موصوف نے بتایاکہ وزیراعلیٰ سدرامیا کی قیادت میں صبح منعقدہ کابینہ اجلاس میں 18؍ ہزار اساتذہ کے تقرر کا فیصلہ لیاگیا ہے، جس کے تحت رواں سال دس ہزار اساتذہ کا تقرر عمل میں آئے گا۔اگلے دو برسوں تک سالانہ چار ہزار اساتذہ کے تقررات عمل میں آئیں گے، انہوں نے واضح کیا کہ اساتذہ کے تقررات کے موقع پر اردو کی مخلوعہ اسامیوں کو بھی پر کیاجائے گا۔

ایک نظر اس پر بھی

قمرالاسلام اور امیرشریعت کے انتقال پر غلام نبی آزاد کے تعزیتی کلمات

سینئر کانگریس رہنما اور راجیہ سبھا کے اپوزیشن لیڈر غلام نبی آزاد نے کرناٹک کی دو قد آور مسلم شخصیتوں امیر شریعت کرناٹک مفتی محمد اشرف علی صاحب اور سابق ریاستی وزیر و اے آئی سی سی سکریٹری ڈاکٹر قمر الاسلام کی رحلت پر اپنے گہرے صدمہ کا اظہار کیا ہے۔

سرکاری اعزازکے ساتھ قمرالاسلام سپردخاک، ہزاروں غمخواروں نے پرنم آنکھوں سے اپنے محبوب لیڈر کو وداع کیا

حیدرآباد کرناٹک علاقہ کے ممتاز قائد الحاج قمرالاسلام رکن اسمبلی وسابق ریاستی وزیر کے جسد خاکی کو آج بعدنماز عصر کلبرگی میں سرکاری اعزاز کے ساتھ سپرد خاک کردیا گیا۔

الحاج قمرالاسلام کی وفات پرمولانااسرارالحق قاسمی کااظہارتعزیت

عالم دین وممبرپالیمنٹ مولانااسرارالحق قاسمی نے کرناٹک کے معروف سیاسی رہنمااورگلبرگہ سے ممبراسمبلی الحاج قمرالاسلام کے انتقال پر اپنے دلی رنج وغم کا اظہار کرتے ہوئے اپنے تعزیتی بیان میں کہاکہ مرحوم ایک سرگرم سیاسی رہنماہونے کے ساتھ مسلمانوں کے ملی مسائل سے بھی دلچسپی رکھتے ...

بھٹکل میونسپالٹی عمارت پر پتھرائو کا معاملہ؛ بی جے پی لیڈرس گوند نائک اور کرشنا نائک سمیت چارگرفتار

 بھٹکل میونسپالٹی عمارت پر پتھرائو ، توڑپھوڑ اور پولس عملہ پر حملہ کے تعلق سے پولس نے ایک بڑی کاروائی کرتے ہوئے بی جے پی لیڈر گوند نائک کو آج  گرفتار کرلیا ہے۔ ذرائع سے ملی اطلاع کے مطابق پولس  ہبلی کے ایک مکان سے تین لوگوں کو گرفتار کرنے میں کامیاب ہوئی ہے، جبکہ ایک سنگھ کا ...

بھٹکل میونسپالٹی عمارت پر پتھرائو کا معاملہ؛ایم پی شوبھا کرندلاجے نے پولس سے کہا؛ بی جے پی کارکنان کی گرفتاری بند کی جائے؛ لیڈران کو گرفتار کرنے کی صورت میں دی دھمکی

بی جے پی لیڈر شوبھا کرندلاجے نے آج منگل کو بھٹکل ٹائون پولس تھانہ پہنچ کر بھٹکل ڈی وائی ایس پی سے نہایت ترش لہجہ میں کہا کہ وہ بی جے پی کارکنان کی گرفتاری کا سلسلہ فوری طور پر بند کرے۔ شوبھا نے کہا کہ پولس نے اب تک 9 لوگوں کو گرفتار کیا ہے، اگر پولس مزید لوگوں کو گرفتار کرتی ہے تو ...

بی جے پی لیڈر شوبھا کرندلاجے کا بھٹکل دورہ ؛ کانگریس پر بھٹکل سے ہندووں کو بھگانے کی کوشش کا الزام؛ مزید گرفتاریوں پربرے نتائج کی دھمکی

ریاست کی کانگریس حکومت کے وزیر اعلیٰ سدرامیا کی سرکار ہندؤوں کو بھٹکل سے بھگانے کی کوشش کئے جانے کا ریاستی بی جے پی کی جنرل سکریٹری اور اُڈپی چک مگلورو حلقہ کی رکن پارلیمان شوبھا کرندلاجے نے الزام لگایا۔