اگر گھر پر رہ گیا ہے آپ کا ڈرائیونگ لائسنس ، تو بھی اب نہیں کٹے گا چالان

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 10th August 2018, 9:05 PM | ملکی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

نئی دہلی ،10؍اگست(ایس او نیوز؍آئی این ایس انڈیا)اگر آپ جلدی جلدی میں ڈرائیونگ لائسنس اور گاڑی کی آر سی گھر پر بھول آئے ہیں تو بھی آپ کو پریشان ہونے کی ضرورت نہیں ہے ، کیونکہ پولیس اب آپ کا چالان نہیں کاٹ سکتی ہے ۔ دراصل حکومت نے لائسنس کی ہارڈ کاپی رکھنے کی لازمیت کو ختم کردیا ہے ، اس کیلئے بس آپ کو اپنے دستاویز کی کاپی ڈیجیٹل لاکر میں رکھنی ہوگی ۔ ٹریفک پولیس یا دیگر ایجنسیاں ان دستاویزات کی ضرورت پڑنے پر ڈجی لاکر ایپ کے ذریعہ تصدیق کرسکیں گی ۔

مرکزی حکومت نے ریاستوں کے ٹرانسپورٹ ڈیپارٹمنٹ اور ٹریفک پولیس کو ہدایت دی ہے کہ وہ تصدیق کیلئے دستاویز کی اصلی کاپی نہ لیں ۔ آئی ٹی ایکٹ کی شقوں کا حوالہ دیتے ہوئے وزارت ٹرانسپورٹ نے ٹریفک پولیس اور ریاستوں کے ٹرانسپورٹ محکموں سے کہا ہے کہ ڈرائیونگ لائسنس ، رجسٹریشن سرٹیفکیٹ اور انشورینس پیپر جیسے دستاویزات کی اوریجنل کاپی تصدیق کیلئے نہ لی جائے ۔

وزارت کی طرف سے کہا گیا ہے کہ ڈجی لاکر یا ایم پریوہن ایپ پر موجود دستاویز کی الیکٹرانک کاپی اس کیلئے قابل قبول ہوگی ۔ اس کا مطلب یہ ہوا کہ ٹریفک پولیس اب اپنے پاس موجود موبائل سے ڈرائیور یا گاڑی کی معلومات ڈیٹابیس سے نکال کر استعمال کرسکتی ہے ، اسے اوریجنل دستاویز لینے کی ضرورت نہیں ہوگی۔

کیا ہے ڈیجیٹل لاکر

ڈیجیٹل لاکر میں دستاویز رکھنے اور انہیں جاری کرنے کی سہولت مرکزی حکومت مہیا کرا رہی ہے ۔ اس سہولت کا استعمال کرکے لوگ مختلف سرکاری اداروں کے ذریعہ جاری دستاویز کا ضرورت پڑنے پر استعمال کرسکتے ہیں ۔ ان کو اپ لوڈ کرسکتے ہیں ، ای سائننگ کے ذریعہ خود سے تصدیق کرسکتے ہیں اور شیئر بھی کرسکتے ہیں ۔موجودہ وقت میں ڈجی لاکر سے دستاویز جاری کرنے والے 31 تنظیمیں اور 9 رکیویسٹر تنظیمیں جڑی ہوئی ہیں ۔ ڈجی لاکر پر 76 لاکھ افراد رجسٹرڈ ہوچکے ہیں ۔

ڈیجیٹل لاکر یا ڈجی لاکر کا استعمال کرنے کیلئے آپ کو

https://digitallocker.gov.in,digilocker.gov.in

پر اپنا اکانٹ بنانا ہوگا ۔ اس کیلئے آپ کو اپنے آدھار کارڈ کے نمبر کی ضرورت پڑے گی ۔

ایک نظر اس پر بھی

جے پی سی سے جانچ کرانے کا راستہ ا بھی کھلا ہے، عام آدمی پارٹی نے کہا،عوام کی عدالت اورپارلیمنٹ میں جواب دیناہوگا،بدعنوانی کے الزام پرقائم

آپ کے راجیہ سبھا رکن سنجے سنگھ نے کہا ہے کہ رافیل معاملے میں جمعہ کو آئے سپریم کورٹ کے فیصلے کے باوجود متحدہ پارلیمانی کمیٹی (جے پی سی) سے اس معاملے کی جانچ پڑتال کرنے کا اراستہ اب بھی کھلا ہے۔

رافیل پر سپریم کورٹ کے فیصلے کے بعد ، راہل گاندھی معافی مانگیں: بی جے پی

فرانس سے 36 لڑاکا طیارے کی خریداری کے معاملے میں بدعنوانی کے الزامات پر سپریم کورٹ کی کلین چٹ ملنے کے بعد کانگریس پر نشانہ لگاتے ہوئے بی جے پی نے جمعہ کو کہا کہ کانگریس پارٹی اور اس کے چیئرمین راہل گاندھی ملک کو گمراہ کرنے کیلئے معافی مانگیں۔

بھٹکل کے مرڈیشور میں دو لوگوں پر حملے کی پولس تھانہ میں دو الگ الگ شکایتیں

تعلقہ کے مرڈیشور میں کل جمعرات کو  دو لوگوں پر حملہ اور پھر جوابی حملہ کے تعلق سے آج مرڈیشور تھانہ میں دو الگ الگ شکایتیں درج کی گئی ہیں اور پولس نے دونوں پارٹیوں کی شکایت درج کرتے ہوئے چھان بین شروع کردی ہے۔