بارش کے متاثرین کی بھرپور مدد کرنے شیوکمار کا مطالبہ

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 18th August 2018, 10:05 PM | ریاستی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

بنگلورو،18؍اگست(ایس او نیوز) ریاستی وزیر برائے آبی وسائل ومیڈیکل ایجوکیشن ڈی کے شیوکمار نے کہا ہے کہ ریاست کے کورگ ، ملناڈ اور پڑوسی ریاست کیرلا میں مسلسل بارش کے سبب سیلاب کی جو صورتحال پیدا ہوئی ہے اس سے متاثرہ خاندانوں کی مدد کے لئے ریاستی عوام کو فراخدلی سے قدم بڑھانا چاہئے۔

اپنی رہائش گاہ پر ایک اخباری کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہاکہ کورگ اور منگلور کے علاوہ کئی علاقوں میں لوگوں نے اپنے تمام اسباب گنوا لئے ہیں ، ان لوگوں کے پاس کھانے پینے کی قلت پیدا ہوگئی ہے، فوری طور پر ان لوگوں کو بنیادی سہولت فراہم کرنے کے لئے ضروری قدم اٹھانے ہوں گے۔ وزیر موصوف نے کہاکہ بنگلور رورل اور رام نگرم ضلع کے علاوہ ہباگوڈی، پینیا ،نلمنگلا ، بڑدی اور ہاروہلی کے انڈسٹریل ایریا میں کام کرنے والے صنعت کاروں سے زیادہ مدد طلب کی جائے گی۔

انہوں نے کہاکہ ریڈی میڈ کارخانوں میں بغیر فروخت رہ چکے کپڑے بطور عطیہ دینے کی گزارش صنعت کاروں سے کی گئی ہے۔ ان سے کہاگیا ہے کہ امداد ی اشیاء رام نگرم کے ڈپٹی کمشنر تک پہنچا دی جائیں۔ انہوں نے کہاکہ محکمۂ آب پاشی کے انجینئروں سے کہا گیا ہے کہ حکم کے سبھی کنٹراکٹروں سے گز ارش کی جائے کہ متاثرہ لوگوں کی مدد کے لئے بڑھ چڑھ کر حصہ لیں۔ اس موقع پر ڈی کے شیوکمار نے بتایاکہ بارش کی زیادتی اور پڑوسی ریاست کیرلا سے بارش کا پانی بہا دئے جانے کی وجہ سے ریاست کے بعض آبی ذخائر میں درڑایں پڑ گئی ہیں۔

انہوں نے بتایاکہ کاویری طاس میں آنے والے کرشنا راجہ ساگر، کبنی اور ہیماوتی آبی ذخائر میں واضح دراڑ دیکھی گئی ہے۔اس کے علاوہ تنگا بھدرا ڈیم میں بھی دراڈ کی اطلاع ملی ہے۔ بارش کا پانی کم ہوتے ہی ان کی مرمت کا کام جنگی پیمانے پر شروع کردیا جائے گا۔ انہوں نے کہاکہ جن آبی ذخائر زیادہ پانی جمع ہے وہاں باہر بہاؤ بڑھا کر آبی ذخائر کو بچانے افسروں کو ہدایت دی گئی ہے۔

انہوں نے کہاکہ اس بار ریاست کے آبی ذخائر میں جتنا پانی جمع ہوا ہے وہ اپنے آپ میں ایک ریکارڈ ہے، ماضی میں اس قدر زیادہ مقدار میں پانی جمع ہونے کا کوئی ریکارڈ محکمے کے پاس موجود نہیں ہے۔ مہادائی آبی تنازعے کے متعلق ٹریبونل کے قطعی فیصلے کے بارے میں ایک سوال کا جواب دیتے ہوئے ڈی کے شیوکمار نے بتایا کہ ریاستی حکومت نے اس سلسلے میں ٹریبونل کی طرف سے جاری کئے گئے فیصلے کا جائزہ لیا ہے اور ماہرین قانون سے بھی گزارش کی ہے کہ اس فیصلے کا تفصیلی جائزہ لے کر حکومت کے سامنے اپنی رائے پیش کریں۔

بیشتر ماہرین نے فیصلے کا جائزہ لینے کے بعد یہی رائے دی ہے کہ ٹریبونل کے فیصلے کا عدالت میں چیلنج کیا جائے ۔ وزیر موصوف نے کہاکہ اس سلسلے میں آنے والے دنوں میں بھی ریاستی حکومت کی طرف سے جلد بازی میں کام نہیں لیا جائے گا بلکہ تمام سے مشوروں کے بعد مہادائی مسئلے سے متاثرہ کسانوں کو راحت پہنچائی جاسکے ایسا قدم اٹھایا جائے گا۔

ایک نظر اس پر بھی

سیلاب زدہ کورگ کیلئے اضافی تعاون کا اعلان فی کنبہ 50ہزار روپئے رقم دینے کا فیصلہ

ورگ ضلع میں حال ہی میں ہوئی موسلا دھار بارش اور سیلاب کی وجہ سے کئی گھر تباہ وبرباد ہوگئے ۔ متاثرہ کنبوں کیلئے کپڑے اور روز مرہ کی ضروریات کی خریداری کے مقصد سے وزیر اعلیٰ ریلیف فنڈ کے تحت فی کنبہ 50ہزار روپئے اضافی رقم جاری کرنے کا ریاستی حکومت نے فیصلہ کیا ہے۔

سدارامیا کے دست راست ضمیر احمد خان حکومت کی حفاظت کی خاطر ناراض اراکین اسمبلی کو منانے میں سرگرداں

سابق وزیر اعلیٰ سدارامیا کی ترغیب پر جے ڈی ایس کو خیر باد کہتے ہوئے کانگریس میں شمولیت اختیار کرنے والے بی زیڈ ضمیر احمد خان مخلوط حکومت کی حفاظت پر مامور دکھائی دے رہے ہیں، سدارامیا کے ناراض اراکین اسمبلی کو منانے کی کوشش میں بی زیڈ ضمیر احمد خان سرگرم ہوگئے ہیں، ناراضی کی لہر ...

ریاستی مخلوط حکومت کو گرانے میں بی جے پی بری طرح ناکام لوک سبھا انتخابات پر توجہ مرکوز کرنے کی ہدایت ، آخری دم تک فرقہ پرستی کے خلاف لڑتا رہوں گا:سدارامیا

ریاستی مخلوط حکومت میں ساجھیدار کانگریس اور جے ڈی ایس کے اراکین اسمبلی کے درمیان جن اختلافات کا فائدہ اٹھا کر اپوزیشن بی جے پی نے پچھلے دو ہفتوں سے آپریشن کنول کے ذریعہ مخلوط حکومت کو گرانے کی جو کوشش کی تھی ،اب وہ ناکام ہوچکی ہے۔

ویمن انڈیا موؤمنٹ کی جانب سے 23 ستمبر کو بنگلور سے شروع ہورہی ہے خواتین کے تحفظ کو لے کر ملک گیر مہم

ویمن انڈیا موؤمنٹ (Women India Movement) نے 23ستمبر 2018تا 8 مارچ 2019 " خواتین پر تشدد بند کرو " اور "ّ آئیے ہمارے تحفظ کیلئے لڑائی لڑیں " کے نعروں کے تحت  ایک ملک گیر مہم  شروع  کرنے کا اعلان کیا ہے جس کے لئے  ملک کی خواتین سے اپیل کی گئی  ہے کہ وہ اس ملک گیر تحریک میں شامل ہوکر اپنے حالات ...

جنوبی ہند کے مشہور ومعروف عالم دین حضرت مولانا زکریا والا جاہی کا انتقال

نوبی ہند کے مشہور ومعروف،ممتاز جیدعالم دین زکریا صاحب والا جاہی طویل علالت کے بعد آج صبح 10؍بجے اپنے مالک حقیقی سے جاملے۔ مولانا کو شیواجی نگرکے براڈوے کی ان کی رہائش پر آخری دیدار کے لئے رکھا گیا تھا۔

پٹرول ڈیزل کی قیمتوں میں اضافہ بدستور جاری

پٹرول ڈیزل کی قیمتوں میں آج ایک بار پھر اضافہ ہوا ہے۔پٹرول 17 پیسے اور ڈیزل 10 پیسے مہنگا ہوا ہے۔اضافے کے بعد راجدھانی دہلی میں ایک لیٹر پیٹرول کی قیمت 82.61 روپے فی لیٹر ہو گئی ہے۔وہیں ڈیزل 73.97 روپے فی لیٹر ہو گئی۔ راجدھانی دہلی میں کل پٹرول 82.44 روپے فی لیٹر اور ڈیزل 73.87 روپے فی لیٹر ...

روپے کی قدر میں گراوٹ:سستاحج کرانے کادعویٰ بھی فرضی؟ حجاج کرام پر بوجھ میں اضافہ ،مزید پیسے وصولے جاسکتے ہیں

سرکارایک طرف دعویٰ کررہی ہے کہ اس نے اس بارسستاحج کرایاہے ۔لیکن اب روپیے کی گراوٹ کی وجہ سے پھرحاجیوں سے وصولی کی جائے گی ۔عالمی بازار میں ڈالر کے مقابلے ہندوستانی کرنسی کی قدر میں ہورہی گراوٹ کی وجہ سے اب حجاج کرام پر مزید بوجھ پڑنے والاہے۔