وزیر دفاع کے بیان سے ایچ اے ایل کا وقارمجروح ہوا ہے رافیل طیاروں کا ٹھیکہ ریلائنس کو دے کر ریاست کے ساتھ نا انصافی کی گئی ہے:دنیش گنڈوراؤ

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 6th January 2019, 11:17 AM | ریاستی خبریں | ملکی خبریں |

بنگلورو،6؍جنوری(ایس او  نیوز) مرکزی وزیر دفاع نرملاسیتا رمن کے بیان کی میں پرزور مذمت کرتا ہوں ، لوک سبھا میں انہوں نے جو بیان دیا وہ ناقابل برداشت ہے۔ ان کے بیان سے ملک کی معروف ترین کمپنی ہندوستان ایروناٹیکل لمیٹڈ ( ایچ اے ایل) کا وقار اور اہلیت مجروع ہوئی ہے ۔ یہ مذمتی بیان کے پی سی سی کے صدر دنیش گنڈور راؤ نے دیا ۔

کے پی سی سی دفتر میںآج اخباری کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ رافیل جنگی طیاروں کے خریداری معاملہ میں وزیر دفاع نے لوک سبھا میں جو جواب دیا وہ قابل مذمت ہے ۔ ریاست کے ساتھ نا انصافی ہوئی ہے۔ان کے بیان سے بہت سارے شکوک وشبہات پیدا ہورہے ہیں ۔ دفاعی وسائل سازی میں تجربہ رکھنے والی کمپنی پر سوالات اٹھاتے ہوئے ایک نا تجربہ کار ریلائنس کمپنی کو ٹھیکہ دینے کی حمایت والا بیان ناقابل فہم ہے ۔

وزیر دفاع نے ایچ اے ایل کی قابلیت کاانکار کیا ہے ۔ ایچ اے ایل میں دفاعی اوزار بنانے کی صلاحیت نہیں ہے اور تیار بھی کرلیا جائے تواس کی کوئی قیمت نہیں ہے ۔ یہ بیان نہ صرف ریاست بلکہ ملک کی معروف کمپنی کی توہین ہے ۔ رافیل گھوٹالہ معاملہ میں مناسب جواب نہ دے کرایچ اے ایل کی اہلیت و قابلیت کومجروح کرنے کی کوشش کی گئی ہے۔ گنڈور راؤنے برہمی ظاہر کرتے ہوئے کہا کہ اگرایچ اے ایل میں اہلیت نہیں تو اس کو بند کیوں نہیں کیا گیا ۔ اگروہاں دفاعی سازو سامان تیار کرنے کے لئے درکار تکنیک اور نفری نہیں ہے تو اس کی ضرورت کیا ہے ۔

یو پی اے حکومت کے معاہدہ کے تحت جنگی طیارے ایچ اے ایل میں تیار کیا جانا تھا۔اس سے ایچ اے ایل میں برسرخدمت ملازمین کو جدید ترین تکنیک کی جانکاری حاصل ہوتی ۔اس سے ترغیب پاکر دیگر کمپنیوں کوابھرنے کاموقع فراہم ہوتا ایچ اے ایل کی حالت اب دگر گوں ہوگئی ہے ۔قرضہ لے کر ملازمین کی تنخواہیں ادا کی جارہی ہیں۔ ایچ اے ایل نے اب تک ایک ہزار کروڑ کاقرضہ حاصل کیا ہوا ہے ۔ جنگی طیارے تیار کرانے کا کنٹراکٹ ایچ اے ایل کو ملتا توملازمین برسرروزگار ہوتے ۔ ایچ اے ایل کو بچانے کا کام ہوتا ۔ مرکز میں ہماری حکومت آئی توریلائنس کمپنی کو دیا گیا ٹھیکہ واپس لے کر ایچ اے ایل کو دینے کی کارروائی کریں گے ۔ وزیر اعظم نریندر مودی نے راتوں رات رافیل طیاروں کا معاہدہ ریلائنس کمپنی کے ساتھ کیا ہے ۔ کسی کے بھی علم میں لائے بغیراکیلے مودی نے یہ فیصلہ کیا ہے ۔ ایسی حالت 30سال میں پہلی بار آئی ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

دارالعلوم اسلامیہ عربیہ تلوجہ میں علمائے شوافع کی جانب سے فقہی سمینار کا آغاز؛ علماء فقہائے شوافع نے حقیقتاً حدیث اور فقہ میں بہت نمایاں کام کیاہے: خالد سیف اللہ رحمانی 

بروز سنیچر 19؍ جنوری مجمع الامام الشافعی العالمی کی جانب سے دو روزہ پہلے فقہی سمینار کا آغاز کیا گیا اس سمینار کا افتتاحی جلسہ صبح 10؍ بجے جامعہ دارالعلوم اسلامیہ عربیہ تلوجہ ممبئی میں منعقد کیا گیا

کاروار بحر عرب میں کشتی اُلٹنے کا معاملہ؛ مرنے والوں کی تعداد بڑھ کرہوگئی 16، اب تک 14 نعشیں برآمد

بحرعرب میں کشتی الٹنے سے کل دس سے زائد لوگوں کی ہلاکت کی خبر دی گئی تھی جس میں کئی ایک لاشوں کو برآمد کیا گیا تھا اور راحت اور بچائو کا کام جاری تھا، اس تعلق سے آج مزید چھ لاشیں سمندر سے برآمد کی گئی ہیں اور  بتایا گیا ہے کہ مزید دو   کی تلاش جاری ہے۔ اس طرح کاروار میں کشتی ...

کرناٹک سدھ گنگا مٹھ کے سوامی شیو کمارکا 111 سال کی عمر میں انتقال؛ ریاست بھر میں ماتم؛ کل منگل کو اسکولوں میں چھٹی

ریاست کرناٹک کے معروف سوامی اور سدھ گنگا پیٹھ کے سربراہ 111سالہ شیو کمار سوامی جی آج پیر کو  انتقال کرگئے۔ ان کے انتقال پر پوری ریاست میں ماتم چھا گیا اور  وزیر اعلی ایچ ڈی کمارسوامی نے کل منگل کو  سبھی اسکولوں اور کالجوں میں چھٹی  کا اعلان کیا۔

ہم بے قصور تھے، مگر وہ ہماری زبان سمجھنے سے قاصر تھے، ایرانی حراست سے رہا ہونے کے بعد ماہی گیروں کا بھٹکل میں والہانہ استقبال

دبئی سمندر میں ماہی گیر ی کے دوران ایرانی پولیس کی تحویل میں رہنے کے بعد واپس لوٹنے والے کمٹہ اور بھٹکل کے ماہی گیروں کا کہنا ہے کہ ان کے لئے سب سے بڑا مسئلہ زبان کا تھا۔ ایرانی افسران ان کی زبان سمجھ نہیں رہے تھے ۔ اور ایرانی سمندری سرحد پار نہ کرنے کا یقین دلانے کے باوجود وہ لوگ ...

کاروار: بیچ سمندر میں کشتی اُلٹ گئی؛ دس سے زائد ہلاک ؛ راحت اور بچاو کا کام جاری، 25 سے زائد لوگ تھے کشتی پر سوار

کاروار میں کورم گڑھ جاترا کے لئے نکلی ایک کشتی بیچ سمندر میں ڈوب جانے سے کشتی پر سوار چھ لوگوں کی موت واقع ہونے کی اطلاع موصول ہوئی ہے، بتایا گیا ہے کہ مرنے والوں کی تعداد میں اضافہ ہونے کا خدشہ ہے کیونکہ کشتی پر موجود 25 سے زائد لوگوں میں دو چار لوگوں کو ہی بچانے کی خبر ملی  ہے، ...

اپوزیشن کی جانب سے وزیراعظم کا اُمیدوارکون ؟ راہول گاندھی، مایاوتی یا ممتا بنرجی ؟

آنے والے لوک سبھا انتخابات میں اپوزیشن کی جانب سے وزیراعظم کے عہدے کا اُمیدوار کون ہوگا اس سوال کا جواب ہرکوئی تلاش کررہا ہے، ایسے میں سابق وزیر خارجہ اور کانگریس کے سابق سنئیر لیڈر نٹور سنگھ نے بڑا بیان دیتے ہوئے کہا ہے کہ  اس وقت بہوجن سماج پارٹی (بی ایس پی) سربراہ مایاوتی ...

مدھیہ پردیش میں 5روپے، 13روپے کی ہوئی قرض معافی، کسانوں نے کہا،اتنی کی تو ہم بیڑی پی جاتے ہیں

مدھیہ پردیش میں جے کسان زراعت منصوبہ کے تحت کسانوں کے قرض معافی کے فارم بھرنے لگے ہیں لیکن کسانوں کو اس فہرست سے لیکن جوفہرست سرکاری دفاترمیں چپکائی جارہی ہے اس سے کسان کافی پریشان ہیں،