محکمۂ داخلہ کی اسامیوں کو تیزی سے پر کیا جائے گا: پرمیشور

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 11th July 2018, 11:49 AM | ریاستی خبریں |

بنگلورو،11؍جولائی(ایس او نیوز)نائب وزیراعلیٰ اور وزیر داخلہ ڈاکٹر جی پرمیشور نے آج ریاستی لجسلیٹیو کونسل کو بتایاکہ محکمۂ داخلہ میں 26188 مختلف اسامیوں کو پر کیاگیا ہے۔

وقفۂ سوالات میں بی جے پی رکن کے پی ننجنڈی کے سوال کاجواب دیتے ہوئے انہوں نے کہاکہ سالانہ محکمۂ پولیس میں چار سے پانچ ہزار اسامیاں خالی ہوتی ہیں ، 2008 اور2013 کے درمیان محکمۂ پولیس میں کوئی بھرتی نہیں کی گئی ، جبکہ اس سے پہلے 1582 سب انسپکٹر اور 23104 کانسٹبلوں کا تقرر عمل میں آیا۔ ان تمام کو تربیت دینے کے لئے دس مستقل اور تین عارضی پولیس ٹریننگ اسکول قائم کئے گئے ہیں۔ تربیت کے دوران امیدواروں کی صلاحیت کی بنیاد پر انہیں متعین کیا جاتاہے۔

انہوں نے کہا کہ پچھلی سدرامیا حکومت میں بحیثیت وزیر داخلہ انہوں نے ان اسامیوں کو پر کرنے کی پہل کی تھی۔اب جبکہ دوبارہ انہیں یہی قلمدان ملا ہے، ان کی کوشش یہی ہے کہ پولیس جوانوں کی بھرتی کے مرحلے میں جو قدیم نظام اپنایا جاتاہے اسے ختم کرکے نیا معیار طے کیا جائے۔ انہوں نے کہا کہ محکمۂ پولیس میں کئی اسامیاں خالی ہونے کی وجہ سے عملے پر کام کا دباؤ کافی زیادہ ہے۔ پھر بھی دستیاب عملے کو استعمال میں لاکر ہی تحقیقات کو تیزی سے مکمل کرنے کی طرف توجہ دینے کے ساتھ نظم وضبط کی نگرانی اور دیگر ذمہ داریوں کو پورا کیاجارہاہے۔

انہوں نے کہاکہ عنقریب محکمے میں 31684اسامیاں خالی ہونے والی ہیں ۔ مجموعی طور پر 1.26لاکھ اسامیاں محکمے کے لئے منظور ہوئی ہیں جن میں سے تمام مخلوعہ اسامیوں کی نشاندہی کرکے انہیں پر کیا جائے گا۔ 

ایک نظر اس پر بھی

جنوبی ہند کے مشہور ومعروف عالم دین حضرت مولانا زکریا والا جاہی کا انتقال

نوبی ہند کے مشہور ومعروف،ممتاز جیدعالم دین زکریا صاحب والا جاہی طویل علالت کے بعد آج صبح 10؍بجے اپنے مالک حقیقی سے جاملے۔ مولانا کو شیواجی نگرکے براڈوے کی ان کی رہائش پر آخری دیدار کے لئے رکھا گیا تھا۔

یڈیورپا میرے صبر کا امتحان نہ لیں؛ حکومت کو گرانے کی بارہا کوشش بی جے پی کو زیب نہیں دیتی: کمار سوامی کا بیان

وزیر اعلیٰ ایچ ڈی کمار سوامی نے ریاستی بی جے پی صدر یڈیورپا کو متنبہ کیا ہے کہ بارہا ریاستی حکومت کو گرانے کی کوشش کرکے وہ ان کے صبر کا امتحان نہ لیں۔اگر یہ کوشش جاری رہی تو یڈیورپا کو اس کی بھاری قیمت ادا کرنی پڑے گی۔

ارکان اسمبلی کو خریدنے کی کوشش پرسدرامیا نے کہا؛ اپوزیشن کار ول ادا کرنے کی بجائے بی جے پی بے شرمی پر اتر آئی ہے

سابق وزیر اعلیٰ اور ریاستی  حکمران اتحاد کی رابطہ کمیٹی کے چیرمین سدرامیا نے کہا ہے کہ ریاست میں بی جے پی کو ایک تعمیری اپوزیشن پارٹی کا رول ادا کرنا چاہئے، لیکن ایسا کرنے کے  بجائے انتہائی بے شرمی سے یہ پارٹی ریاستی حکومت کو گرانے کی کوششوں کو اپنا معمول بناچکی ہے۔