نو ٹ بندی پر این ڈی اے اتحادی شیوسینا نے کہا: عوام وزیر اعظم مودی کو’ سزا‘ دینے کا انتظار کر رہے ہیں

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 10th November 2018, 4:45 AM | ملکی خبریں |

ممبئی 9 نومبر (آئی این ایس انڈیا)  نوٹ بندی کے دو سال پورے ہونے پر نہ صرف اپوزیشن کے نشانے پر مودی حکومت ہے، بلکہ این ڈی اے کی اتحادی شیوسینا کی طرف سے برابر حملے کئے جارہے ہیں ۔

8 نومبر یعنی جمعرات کو نوٹ بندی کے دو سال پورے ہو گئے۔ اس موقع پر این ڈی اے کے اتحادی شیوسینا نے کہا کہ عوام وزیر اعظم کو دو سال پہلے نوٹ بندی کا اعلان کرنے کے لئے سزا دینے کا انتظار کر رہے ہیں ۔

خیال رہے  کہ وزیر اعظم نریندر مودی نے آٹھ نومبر 2016 کو ایک ہزا راور پانچ سو روپے کے نوٹ کو چلن سے باہر کر دیا تھا۔ بی جے پی قیادت این ڈی اے اور ریاستی حکومت میں اتحادی شیوسینا نے دعوی کیا کہ نوٹ بندی بالکل ناکام رہی؛ کیونکہ اس سے کوئی بھی ہدف پورا نہیں ہوا۔ شیوسینا کی ترجمان منیشا کائندے نے جمعرات کو کہا کہ مرکزی وزیر خزانہ کہتے ہیں کہ زیادہ لوگوں کو ٹیکس  کے دائرے میں لایا گیا، لیکن لاکھوں لوگوں کا  اس کی وجہ سے روزگار چلا گیا وہ نوٹ بندی  کے پیچھے کی دلیل دینے میں بھی ناکام رہے  ۔

انہوں نے کہا کہ ایسا کہا گیا تھا کہ دہشت گردی کا خاتمہ ہوگا اور جعلی نوٹوں کا  مسئلہ بھی ختم ہو گا؛ لیکن ایسا نہیں ہو سکا۔ ترجمان نے کہاکہ دو سال کے بعد صورتحال اتنی خراب ہے کہ لوگ وزیر اعظم کو ’سزا‘ دینے کا انتظار کر رہے ہیں۔کائندے نے دعوی کیا کہ مرکزی وزیر خزانہ اور آر بی آئی گورنر کے درمیان’ان بن‘سے ملک میں اقتصادی صورتحال مزید  بدحال ہوگئی جس کی وجہ سے غیر ملکی سرمایہ کار یہاں سرمایہ کاری کرنے کے تئیں فکر مند ہوں گے۔

ایک نظر اس پر بھی

اعظم خان کے سامنے بی جے پی کا کوئی بھی ہتھکنڈہ کارگر نہیں ہوگا: مایاوتی

اترپردیش کے رامپور پارلیمانی سیٹ سے سماجوادی کے قدآور لیڈر و پارٹی امیدوار اعظم خان کی حمایت میں ووٹروں سے ووٹ کرنے کی اپیل کرتی ہوئیں بی ایس پی سپریمو مایاوتی نے کہا کہ مرکز میں برسراقتدار پارٹی لاکھ ہتھکنڈے اپنائے لیکن رامپور سے اتحاد کے امیدوار اعظم خان کی جیت یقینی ہے۔

مودی چنندہ صنعت کاروں کے چوکیدار، عوام دوسرا موقع نہیں دے گی: راہل گاندھی

کانگریس صدر راہل گاندھی نے آج کہاکہ ملک کی چوکیداری کرنے کا دعویٰ کرنے والے وزیراعظم نریندر مودی حقیقت میں انیل امبانی سمیت کچھ چنندہ صنعت کاروں کے چوکیدار ہیں اس لئے عوام نے انہیں ڈیوٹی سے ہٹانے کا من بنا لیا ہے۔

فلم کے بعد پی ایم مودی پربنی ویب سیریز کے نشریات پربھی الیکشن کمیشن نے لگائی روک

وزیر اعظم نریندر مودی کے ساتھ منسلک ایک ویب سیریز کو الیکشن کمیشن کی جانب سے جھٹکا لگا ہے۔دراصل الیکشن کمیشن نے اس ویب سیریز کو ریلیز کر رہے پلیٹ فارمس ارس ناؤ کو نوٹس جاری کر اسے فوری اثر سے ہٹانے کا حکم دیا ہے۔