دہلی کی آب وہواکامعیار ’بہت خراب‘ کے زمرے میں ،مزیدخراب ہونے کا انتباہ

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 6th November 2018, 9:09 PM | ملکی خبریں |

نئی دہلی،06؍ نومبر (ایس او نیوز؍آئی این ایس انڈیا) دہلی کے ہوا کا معیار منگل کو’بہت خراب‘ کے زمرے میں درج کیاگیا جہاں پرالی جلائے جانے والے علاقوں سے مسلسل ہوا بہہ کر ادھر آ رہی ہے۔حکام نے یہ معلومات دیتے ہوئے آگاہ کیا کہ اس دیوالی پر گزشتہ سال کے مقابلے کم آلودگی پھیلانے والی آتش بازی سے بھی آلودگی کی سطح بہت زیادہ بڑھ سکتی ہے۔مرکزی آلودگی کنٹرول بورڈ کے اعداد و شمار کے مطابق مجموعی طور پر ہوا کے معیار انڈیکس (اے کیو آ:ی) 394 کی سطح پر ریکارڈ کیا گیا جو ’بہت خراب’ کے زمرے میں آتا ہے۔بورڈ نے کہا کہ پیر کو اے کیو آئی 434 کی سطح پر ’سنگین ‘زمرے میں ریکارڈ کیا گیا تھا جو اس سیشن میں سب سے زیادہ تھا۔منگل کو دہلی میں پی ایم2.5 ذرات کی سطح 243 وہیں پی ایم 10 کی سطح 372 درج کی گئی۔سی پی سی بی کے اعداد و شمار کے مطابق دہلی قومی دارالحکومت علاقہ میں پی ایم 2.5 کی سطح 237 اور پی ایم 10 کی سطح 366 درج کی گئی۔دہلی میں 12 علاقوں میں ہوا کا معیار ’سنگین‘ کے زمرے درج کیاگیا وہیں 13 علاقوں میں ’بہت خراب‘ درج کی گئی۔افسر مسلسل آلودگی کی وجہ ہوا کی سمت کو بتارہے ہیں جو پنجاب اور ہریانہ کے ان علاقوں سے بہہ رہی ہے جہاں پرالی جلائی جاتی ہے۔مرکزی حکومت کی ہوا کے معیار کی پیشن گوئی اور تحقیق کے مطابق دیوالی کے بعد دہلی کی ہوا کا معیار خراب ہوکر ’سنگین اور ایمرجنسی کے زمرے میں جا سکتاہے۔

ایک نظر اس پر بھی

اعظم خان کے سامنے بی جے پی کا کوئی بھی ہتھکنڈہ کارگر نہیں ہوگا: مایاوتی

اترپردیش کے رامپور پارلیمانی سیٹ سے سماجوادی کے قدآور لیڈر و پارٹی امیدوار اعظم خان کی حمایت میں ووٹروں سے ووٹ کرنے کی اپیل کرتی ہوئیں بی ایس پی سپریمو مایاوتی نے کہا کہ مرکز میں برسراقتدار پارٹی لاکھ ہتھکنڈے اپنائے لیکن رامپور سے اتحاد کے امیدوار اعظم خان کی جیت یقینی ہے۔

مودی چنندہ صنعت کاروں کے چوکیدار، عوام دوسرا موقع نہیں دے گی: راہل گاندھی

کانگریس صدر راہل گاندھی نے آج کہاکہ ملک کی چوکیداری کرنے کا دعویٰ کرنے والے وزیراعظم نریندر مودی حقیقت میں انیل امبانی سمیت کچھ چنندہ صنعت کاروں کے چوکیدار ہیں اس لئے عوام نے انہیں ڈیوٹی سے ہٹانے کا من بنا لیا ہے۔

فلم کے بعد پی ایم مودی پربنی ویب سیریز کے نشریات پربھی الیکشن کمیشن نے لگائی روک

وزیر اعظم نریندر مودی کے ساتھ منسلک ایک ویب سیریز کو الیکشن کمیشن کی جانب سے جھٹکا لگا ہے۔دراصل الیکشن کمیشن نے اس ویب سیریز کو ریلیز کر رہے پلیٹ فارمس ارس ناؤ کو نوٹس جاری کر اسے فوری اثر سے ہٹانے کا حکم دیا ہے۔