اروند کیجریوال کے مشیر وی کے جین نے دیا استعفی

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 14th March 2018, 11:11 AM | ملکی خبریں |

نئی دہلی ،13؍ مارچ (ایس او نیوز؍آئی این ایس انڈیا)دہلی کے وزیر اعلی اروند کیجریوال کے مشیر وی کے جین نے ذاتی وجوہات اور خاندانی وعدوں کا حوالہ دیتے ہوئے عہدے سے استعفی دے دیا ہے۔غور طلب ہے کہ چیف سکریٹری انشو پرکاش کے ساتھ ہوئی مبینہ مار پیٹ کے معاملے میں کچھ ہی دن پہلے پولیس نے جین سے پوچھ گچھ کی تھی۔ذرائع میں سے ایک نے بتایاکہ جین نے ذاتی وجوہات اور خاندانی وعدوں کا حوالہ دیتے ہوئے دہلی کے وزیر اعلی کے مشیر کے عہدے سے استعفی دے دیا ہے۔ذرائع نے کہا کہ انہوں نے وزیر اعلی کے دفتر کو اپنا استعفیٰ سونپ کر اس کی ایک کاپی لیفٹیننٹ گورنر کو بھیج دی ہے۔غور طلب ہے کہ دہلی شہری پناہ بہتری بورڈ کے سی ای او کے عہدے سے سروس سے برطرف ہونے کے کچھ ہی دن بعد جین کو ستمبر، 2017میں اس عہدے پر مقرر کیا گیا تھا۔بورڈ کے چیئرمین کیجریوال ہیں۔ذرائع نے بتایا کہ واقعہ کے بعد ہی جین وزیر اعلی کے دفتر نہیں آ رہے تھے اور ایک ہفتے کی میڈیکل چھٹی پر تھے۔وزیر اعلی کی رہائش گاہ پر 19فروری کو ہوئی ایک میٹنگ کے دوران آپ کے ممبران اسمبلی نے پرکاش کے ساتھ مبینہ طور پر مار پیٹ کی تھی۔دہلی پولیس نے گزشتہ ہفتے عدالت کو مطلع کیا تھا کہ تفتیش کے دوران جین نے انکشاف کیا ہے کہ کیجریوال کی رہائش پر آپ ممبران اسمبلی پرکاش جاروال اور امانت اللہ خان نے چیف سکریٹری کو گھیر لیا اور ان کے ساتھ مار پیٹ کی۔جین نے پہلے کہا تھا کہ انہوں نے کچھ نہیں دیکھا ہے کیونکہ واقعہ کے وقت وہ ٹوائلٹ گئے تھے۔پرکاش کے ساتھ ہوئی مبینہ مارپیٹ کے وقت وزیر اعلی کیجریوال اور نائب وزیر اعلی منیش سسودیا بھی موجود تھے۔ پرکاش کے ساتھ یکجہتی کا اظہار کرتے ہوئے آئی اے ایس اور دہلی، انڈمان نکوبار جزائر سول سروس کے افسران نے وزراء کی طرف سے منعقد ملاقاتوں میں حصہ نہیں لے رہے ہیں، اور ان کے ساتھ صرف تحریری بات چیت کر رہے ہیں۔دہلی حکومت کے ملازمین کی مشترکہ پلیٹ فارم نے اس سلسلے میں کیجریوال اور سسودیا کے خلاف کارروائی کا مطالبہ کیا ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

کسانوں کی آمدنی دوگنی کرنے کا نریندر مودی کا وعدہ بھی جملہ: کانگریس

وزیر اعظم نریندر مودی نے 'مودی ایپ' کے ذریعہ آج ملک بھر کے کسانوں کو خطاب کیا۔ اپنے خطاب میں انھوں نے اپنی حکومت کو کسانوں کا ہمدرد بتایا۔ ساتھ ہی وزیر اعظم نریندر مودی نے 2022 تک ملک کے کسانوں کی آمدنی دوگنی کرنے سمیت کئی بڑے وعدے کیے۔