سی وی سی کی سفارش پر چھٹی پر گئے تھے سی بی آئی کے سینئر افسر:ارون جیٹلی

Source: S.O. News Service | By Jafar Sadique Nooruddin | Published on 9th January 2019, 12:07 AM | ملکی خبریں |

نئی دہلی:8/جنوری (ایس او نیوز/آئی این ایس انڈیا)  وزیر خزانہ ارون جیٹلی نے منگل کو کہا کہ سی بی آئی کے دو سینئر افسران کو چھٹی پر بھیجنے کا حکومت کا فیصلہ مرکزی ویجلنس کمیشن (سی وی سی)کی سفارش پر لیا گیا تھا۔سپریم کورٹ کی طرف سے سی بی آئی ڈائریکٹر آلوک ورما کو عہدے پر بحال کرنے کا فیصلہ سنائے جانے کے بعد پارلیمانی احاطے میں نامہ نگاروں سے جیٹلی نے کہا کہ حکومت عدالت کے احکامات کی تعمیل کرے گی۔ورما اور سی بی آئی کے اسپیشل ڈائریکٹر راکیش استھانہ کو چھٹی پر بھیجے جانے کے فیصلے کا حوالہ دیتے ہوئے انہوں نے کہا کہ حکومت نے یہ فیصلہ سی بی آئی کی خودمختاری کو بچائے رکھنے کے لئے کیا،حکومت نے سی بی آئی کے دو سینئر افسران کو چھٹی پر بھیجنے کی کارروائی سی وی سی کی سفارش پر کی گئی تھی ۔جیٹلی نے کہا کہ سی بی آئی کی غیر جانبدارانہ اور امتیاز سے صاف طریقہ کار کے وسیع مفاد کو دیکھتے ہوئے عدالت نے واضح طور پر سی بی آئی ڈائریکٹر کو ملی سیکورٹی کو مضبوط کیا ہے۔وہیں عدالت نے احتساب کے نظام کا راستہ بھی نکالا ہے،عدالت کی ہدایات کو ضرور یقینی بنایا جائے گا۔ورما کے حقوق واپس لے لینے کے مرکز کو فیصلے کو درکنار کرتے ہوئے سپریم کورٹ نے ورما کی بحالی کر دی لیکن ان پر لگے بدعنوانی کے الزامات کی سی وی سی کی انکوائری ختم ہونے تک انہیں کوئی بھی بڑا پالیسی فیصلہ لینے سے روک دیا۔سپریم کورٹ نے کہا کہ ورما کے خلاف کسی بھی فیصلے کو بااختیار کمیٹی کی طرف سے لیا جاسکتا ہے جو سی بی آئی ڈائریکٹر کا انتخاب کرتا ہے۔واضح رہے کہ ورما کو 23اکتوبرکو مرکزی حکومت کے فیصلے کے بعدچھٹی پربھیج دیا گیا تھا اوروہ 31جنوری کو ریٹائرمنٹ بھی ہونے والے ہیں۔

ایک نظر اس پر بھی

پی پی ای کِٹ گھوٹالہ میں یوگی حکومت بے نقاب: اجے للو

  اترپردیش کانگریس کے صدر اجے کمار للو نے پیر کو بتایا کہ کورونا سے نمٹنے کے لئے خریدے گئے پی پی ای کٹ میں کئے گئے کروڑوں روپئے کے گھپلے کے ملزم افسران کی ایس آئی ٹی جانچ رپورٹ عوامی پلیٹ فارم پر رکھے بغیر کی گئی تعیناتی سے بدعنوانی پر زیرو ٹولرنس کا دعویٰ کرنے والی یوگی حکومت ...

کانپور لو جہاد: جبری تبدیلی مذہب اور بیرونی فنڈنگ کا کوئی ثبوت نہیں ملا، ایس آئی ٹی

  لو جہاد کے نام پر اس وقت ملک بھر میں ہنگامہ برپا ہے، کہیں قانون سازی ہو رہی ہے تو کہیں بیان بازی کی جا رہی ہے۔ دریں اثنا، کانپور میں مبینہ لو جہاد کے معاملات کی تفتیش کر رہی اسپیشل انویسٹی گیشن ٹیم (ایس آئی ٹی) نے کہا ہے کہ اسے ان معاملات میں سازش اور منظم طریقہ سے تبدیلی مذہب ...

کسان زرعی قوانین کیخلاف جمعرات کو دہلی مارچ پر مصر

مودی سرکار کے ذریعہ پاس کئے گئے ۳؍ زرعی بلوں کے خلاف احتجاج کو ملتوی کرنے کی تمام اپیلوں کو ٹھکراتے ہوئے کسانوں نے متنبہ کیا ہے کہ جمعرات 26؍ نومبر کو وہ اپنے اعلان کے مطابق دہلی کیلئے مارچ کریں گے اور اگر انہیں روکنے کی کوشش کی گئی تو دہلی جانے والی تمام سڑکوں کو جام کردیا ...

کراچی بعد میں جائیں گے پہلے مقبوضہ کشمیر تو واپس لو

ممبئی میں کراچی بیکری  کے نام پر تنازع کے بیچ سابق وزیراعلیٰ دیویندر فرنویس کے اس بیان  کہ ’’کراچی بھی ایک دن ہندوستان کا حصہ ہوگا‘‘ سنجے راؤت نے طنز کرتے ہوئے پیر کو کہا کہ ’’کراچی بعد میں جائیں گے، پہلے وہ کشمیر تو واپس لے لو جس پر  پاکستان نے قبضہ کررکھا ہے۔‘‘ 

عمر خالد اور شرجیل امام کے خلاف چارج شیٹ داخل

دہلی پولیس نے جے این یو کے سابق طالب علم  عمر خالد اور شرجیل امام پر دہلی فساد کی ’وسیع ترسازش‘ رچنے کا الزام عائد کرتے ہوئے   سپلمنٹری چارج  شیٹ داخل کردی ہے جس میں دونوں نوجوان لیڈروں پر یو اے پی اے جیسے ظالمانہ قانون کے تحت سنگین الزامات عائد کئے گئے ہیں۔