نئے تعلقہ جات کے قیام کو عملی شکل دینے اسمبلی میں مطالبہ

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 10th July 2018, 10:48 AM | ریاستی خبریں |

بنگلورو10؍جولائی(ایس او نیوز) ریاست میں 50نئے تعلقہ جات کے قیام کا اعلان صرف اعلان بن کر رہ گیا ہے ،کسی بھی نئے تعلقہ کے قیام کے لئے عملی طور پر کوئی قدم اٹھایا نہیں گیا۔ یہ موضوع آج ریاستی اسمبلی میں کچھ دیر موضوع بحث بنارہا۔ وقفۂ سوالات میں بی جے پی کے سنیل کمار نے یہ سوال اٹھایا کہ ان نئے تعلقہ جات میں انتظامیہ کب وجود میں آئے گا اور یہاں پر منی ودھان سودھا کی تعمیر کب ہوگی۔ اس مرحلے میں وزیر مالگذاری آر وی دیش پانڈے نے جواب دیا کہ متعدد تعلقہ جات میں منی ودھان سودھا کی تعمیر کے لئے جگہ کی نشاندہی کی گئی ہے اور اس کا تخمینہ تیار کرکے ریاستی حکومت کو روانہ کرنے کی ہدایت بھی دی گئی ہے۔ انہوں نے کہاکہ منی ودھان سودھا کی تعمیر کو انتظامی منظوری کے فوراً بعد اس کی تعمیر شروع کردی جائے گی۔ تعلقہ جات میں انتظامیہ کی شروعات کے لئے ہر تعلق کو دس لاکھ روپیوں کا گرانٹ متعلقہ ضلع کے ڈپٹی کمشنر کے ذریعے جاری کیا گیا ہے۔ انہوں نے کہاکہ جو نئے تعلقہ جات وجود میں آئے ہیں وہاں کے اراکین اسمبلی کو چاہئے کہ انتظامیہ کے قیام میں جو دشواریاں حائل ہیں ان سے حکومت کو باخبر کرائیں اس مرحلے میں اسپیکر رمیش کمار نے بھی اراکین اسمبلی کو ہدایت دی کہ نئے تعلقہ جات کے قیام میں اگر کسی طرح کی پریشانی ہے تو انہیں آگاہ کرائیں وہ حکومت تک اس پریشانی کو پہنچائیں گے۔

ایک نظر اس پر بھی

ریاستی حکومت اقلیتوں کی ترقی کی پابند: کمارسوامی، بجٹ میں اقلیتوں کے گرانٹس میں پانچ سو کروڑ کے اضافے کا اعلان

ریاست کی مخلوط حکومت کا منشاء ہے کہ اقلیتوں کو اس قدر تعلیمی ، سماجی اور معاشی طور پر مضبوط کیا جائے کہ وہ ملک کے دیگر طبقوں کے شانہ بہ شانہ ملک کی ترقی کے حصے دار بنیں۔

چھٹویں پے کمیشن کی سفارشات زیر غور: کمار سوامی

سرکاری ملازمین کی تنخواہوں پر نظر ثانی کے متعلق ریاستی حکومت کو چھٹویں پے کمیشن کی جو رپورٹ پیش کی گئی ہے اس کی پہلی اور دوسری جلد میں شامل سفارشات پر حکومت سنجیدگی سے غور کررہی ہے،

کابینہ میں توسیع کے ساتھ وزارت میں ردوبدل بھی ممکن، پانچ تا چھ وزراء کو ہٹانے پر غور: دنیش گنڈو راؤ

رناٹکا پردیش کانگریس کمیٹی صدر دنیش گنڈو راؤ نے آج اشارہ دیا کہ ریاستی کابینہ کی 22 دسمبر کو توسیع کے مرحلے میں وزارت میں بڑے پیمانے پر ردوبدل بھی ہوسکتی ہے اور ردوبدل کے مرحلے میں پانچ چھ وزراء کو ہٹایا بھی جاسکتا ہے۔

ریاست کرناٹک میں22 دسمبر کو کابینہ توسیع 

کرناٹک میں ایچ کمار سوامی کی قیادت والے کابینہ میں توسیع 22 دسمبر کی جائے گی ۔ کابینہ میں توسیع نہ ہونے سے پارٹی کے اندر کافی عدم اطمینان کی افواہیں گردش کر رہی ہیں ۔