مینگلور کےقریب بنٹوال میں کانگریس لیڈرپر میبنہ بی جے پی کے غنڈوں کا حملہ

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 11th May 2018, 11:02 AM | ساحلی خبریں | ریاستی خبریں |

مینگلور 11/مئی (ایس او نیوز)  ریاست کرناٹک میں اسمبلی انتخابات کے لئے اب صرف ایک دن باقی رہ گیا ہے ایسے میں ایک طرف کانگریس لیڈران پر مبینہ بی جے پی کے غنڈے حملے کررہے ہیں تو وہیں دوسری طرف کچھ جگہوں پر   انکم ٹیکس کے چھاپے بھی پڑنے کی اطلاعات موصول ہورہی ہیں۔

مینگلور کے قریب بنٹوال میں جمعرات کی شب کانگریس لیڈر سنجیو پجاری کے مکان پر قریب پندرہ شرپسند گھس گئے اور سنجیو پجاری سمیت ان کی اہلیہ اور دیگر ملازمین پر حملہ کردیا اور اُن کی بری طرح پیٹائی کردی۔ واردات میں سنجیو پجاری اور ان کی اہلیہ کو قریبی اسپتال میں داخل کیا گیا ہے۔ سنجیوا پجاری کا کہنا ہے کہ اُن پر حملہ کرنے والے بی جے پی کے کارکن ہیں۔ 

بتایا گیا ہے کہ ضلع دکشن کنڑا کے انچارج وزیر بی رماناتھ رائی کی انتخٰابی مہم کے اختتام کے بعد سنجیوا پجاری اپنے گھر لوٹ آئے تھے، جس کے دوران اچانک کمپائونڈ میں ۱۵ سے زائد شرپسند گھس آئے اور ان کی کار کو نقصان پہنچاتے ہوئے سیدھے گھر کے اندر گھس کر سنجیوا پجاری اور ان کی اہلیہ پر حملہ کردیا۔ موقع پر موجود ملازمین  جب اُن کی مدد کرنے کی کوشش کی تو اُنہیں بھی زودوکوب کیا گیا۔

شرپسندوں نے ان کی کار کو بھی شدید نقصان پہنچایا ہے۔جبکہ کار پر موجود سنجیوا کو چھوڑنے کے لئے آئے ہوئے شنکرا، امّی، اور اقبال نامی ملازمین بھی ان کے حملوں کی زد میں آئے ہیں۔

بلّاوا کمیونٹی کے لیڈرسنجیوا پجاری، بنٹوال کی کانگریس انتخابی تشہیری کمیٹی کے صدر ہیں، وہ برہماشری نارائن گرو مندر کے بھی صدر ہیں۔

واردات کی اطلاع ملتے ہی بی رماناتھ رائی سمیت مقامی کانگریسی لیڈران فورا موقع پر پہنچے اور سنجیوا کوتھمبے اسپتال منتقل کیا۔

ایڈیشنل ایس پی سُجیت، بنٹوال رورل اسٹیشن آفسر اکشے ، سرکل پولس انسپکٹر پرکاش، پی ایس آئی چندرشیکھر اور شری کانت شٹی بھی واقعے کی جانکاری ملتے ہی جائے واردات پر پہنچ گئے  اور جائزہ لیتے ہوئے چھان بین شروع کردی۔

کانگریس لیڈران نے اس حملے کے پیچھے بی جے پی لیڈرس اور کارکنوں کو ذمہ دار ٹہرایا ہے۔

اس تعلق سے بنٹوال پولس اسٹیشن میں چار الگ الگ معاملات درج کئے گئے ہیں۔

اُدھر کاروار کے رکن اسمبلی اور  کانگریس  لیڈر ستیش سئیل کے قریبی سمجھے جانے والے منگل داس کے مکان پر آج جمعہ صبح محکمہ انکم ٹیکس کی جانب سے چھاپہ مارے جانے کی اطلاع موصول ہوئی ہے۔ اسی طرح بنگلور میں بھی ان کی رہائش گاہ چھاپہ مارے جانے کی اطلاع ملی ہے۔ البتہ ان چھاپوں سے  ان کے مکانوں سے کچھ برآمد کیا گیا ہے یا نہیں، اس بات کی تفصیلات ابھی موصول ہونی باقی ہے۔

خیال رہے کہ کل سنیچر 12 مئی کو پورے کرناٹک میں ایک ہی مرحلے میں الیکشن ہوں گے، جس کے لئے تیاریاں مکمل کرلی گئی ہیں۔

ایک نظر اس پر بھی

محکمہ جنگلات کی جانب سے ہونے والی ہراسانیوں کے خلاف 23فروری کو سرسی میں ہوگا سی سی ایف دفتر کا محاصرہ

جنگلاتی زمین پر رہائش پزیر افراد کے لئے حقوق فراہم کرنے والے قوانین کی خلاف ورزی کرنے اور بار بار جنگلاتی زمین پر مکانات یا باغاغبانی کرکے زندگی گزارنے والوں پر محکمہ جنگلات کے افسران کی ہراسانی کے خلاف 23فروری کو سرسی میں واقع چیف کنزرویٹر آف فاریسٹ (سی سی ایف) دفتر کا محاصرہ ...

منگلورو سٹی مال کے فوڈ شاپ میں معمولی آتشزدگی؛ فوری طور پر پایا گیا آگ پر قابو؛ معمولی نقصان

منگلورو سٹی مال کی ایک فوڈ شاپ میں آگ لگنے پر تھوڑی دیر کے لئے افراتفری کا ماحول پیدا ہوگیا۔ مگرپانڈیشور علاقے سے فائر بریگیڈ کے افسران نے موقع پر پہنچ کر جلد ہی آگ پر قابو پالیا ۔

مینگلور اور اُڈپی میں پولس افسران کے تبادلے؛ نیشا جیمس اب اُڈپی کی نئی ایس پی اور سندیپ پاٹل مینگلور کے نئے پولس کمشنر

پارلیمانی انتخابات کو لے کر ریاستی حکومت کی جانب سے بڑے پیمانے پر اعلیٰ آفسران کے تبادلے جاری ہیں، اسی مناسبت سے اب اُڈپی اور مینگلور میں اعلیٰ آفسران کے تبادلے کئے گئے ہیں۔

ہوناور: ہیسکام کے افسران راستہ بھٹک گئے۔ پوری رات جنگل میں گزارنے پر ہوئے مجبور

گیر سوپّا ڈیم کے علاقے میں گھنے جنگل سے گزرنے والی 33کے وی بجلی لائن کا معائنہ کرنے کے لئے نکلی ہوئی ہیسکام افسران اور عملے پر مشتمل ایک ٹیم میں شامل دوافسران جنگل میں راستہ بھٹک گئے جس کی وجہ سے انہیں پوری رات جنگل ہی میں گزارنی پڑی ۔

دہشت گردانہ حملے ہندو مسلم اتحاد کو نہیں توڑ سکتے پلوامہ شہید جوانوں کو خراج عقیدت کے دوران شرکاء کا اظہار خیال

بنگلور وپیس آرگنائزیشن کے محمد رفیع دھارواڑکر، ترنگ میوزک اکیڈمی کی نکہت سلطانہ، نوا کرناٹک آٹو ڈرائیور یونین کے نوید خان کے مشترکہ اہتمام سے چہارشنبہ 20؍فروری کوٹاؤن ہال بنگلورکے سامنے پلوامہ میں ہوئے شہید فوجی جوانوں کو موم بتیاں جلا کر ان کے حق میں عقیدت پیش کی گئی ۔